اسلام میں داڑھی کا مقام (راشدی)

میں کا مقام (راشدی)

 

مصنف : سید بدیع الدین شاہ راشدی

 

صفحات: 48

 

تعالی نے کو جوڑا جوڑا پیدا کیا ہے ،اور مرد وعورت میں ظاہری تمیز کرنے کے لئے مرد کو جیسے خوبصورت زیور سے مزین کیا ہے۔داڑھی مرد کی زینت ہے ،جس سے اس کا حسن اور رعب دوبالا ہو جاتا ہے۔داڑھی خصائل فطرت میں سے ہے ۔ تمام کرام داڑھی کے زیور سے مزین تھے۔یہی وجہ ہے کہ اسلامیہ نے مسلمانوں کو داڑھی بڑھانے اور مونچھیں کاٹنے کا حکم دیا ہے۔ تعالی کی عطا کردہ اس فطرت کو بدلنا اپنے آپ کو عورتوں کے مشابہہ کرنا اوراللہ کی تخلیق میں تبدیلی کرنا ہے ،جو بہت بڑا گناہ ہے۔زیر کتابچہ( میں داڑھی کا مقام) شیخ العرب والعجم ابو محمد بدیع الدین شاہ راشدی کی کاوش علمیہ ہے ،جس میں انہوں نے وسنت کے سے یہ ثابت کیا ہے کہ داڑھی رکھنا فرض اور واجب ہے اور داڑھی کاٹنا یا مونڈنا ناجائز اور حرام عمل ہے۔بارگاہ الہی میں ہے کہ وہ شیخ محترم کی اس جدوجہد کو قبول فرماتے ہوئے ان کے میزان حسنات میں اضافے کا باعث بنائے۔آمین

 

عناوین   صفحہ نمبر
الحدیث الاول والثانی 10
تشریح 11
فائدہ 12
الحدیث الثالث 14
الحدیث الرابع 14
الحدیث الخامس 16
الحدیث السادس 16
الحدیث السابع 17
الحدیث الثامن 17
الحدیث التاسع 18
الحدیث العاشر 21
الحدیث الحادی عشر 22
الحدیث الثانی عشر 26
الحدیث الثالث العشر 27
دھاڑی بڑھانے کے فوائد 36
خاتمہ 38

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
8.2 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...