Categories
Islam احکام ومسائل اسلام اعمال حج طہارت عقیدہ و منہج علماء عمرہ مالی معاملات معاملات نماز

صحیح فضائل اعمال ( محمد طیب )

صحیح فضائل اعمال ( محمد طیب )

 

مصنف : محمد طیب

 

صفحات: 163

 

انسانی طبیعت کا یہ خاصہ ہےکہ وہ کم سے کم وقت میں زیادہ سے زیادہ نفع حاصل کرنا چاہتی ہے ۔اور شریعتِ اسلامیہ میں دینی احکام ومسائل پر عمل کی تاکید کے ساتھ ساتھ ان اعمال کی فضیلت وثواب بیان کرتے ہوئے انسانی نفوس کو ان پر عمل کرنے کے لیے انگیخت کیا گیا ہے ۔یہ اعمال انسانی زندگی کے کسی بھی گوشہ سے تعلق رکھتے ہوں خواہ مالی معاملات ہوں ، روحانی یا زندگی کے تعبدی معاملات مثلاً نماز، روزہ ، حج زکوٰۃ ودیگر عباداتی امو ر۔انسانی طبیعت کےرجحان کے مطابق انسان ہمیشہ یہ طمع ولالچ کرتا ہے کہ کم سےکم عمل کرکے کم وقت میں زیادہ سے زیادہ ثواب حاصل کرے ، تھوڑے وقت میں تھوڑے عمل سےاپنے خالق ومالک کو خوب خوش کرے اوراس کی رضا حاصل کر کے جنتوں کا پروانہ تھامے اوردل بہار بہشتوں کا مالک بن جائے ۔ تھوڑے وقت میں چھوٹے اعمال جوبہت بڑے ثواب کا عث بنتے ہیں بڑی فضیلتوں کے حامل ہوتے ہیں انسان ان کو ڈھونڈتا پھرتا ہے ۔کیونکہ کسی عمل کی فضیلت،اجروثواب اورآخرت میں بلند مقام دیکھ کر انسانی طبیعت جلد اس کی طرف راغب ہوجاتی ہے اوران پر عمل کرنا آسان معلوم ہوتا ہے دین اسلام میں کئی ایسے چھوٹے چھوٹے اعمال بتائے گئے ہیں جن کا اجروثواب اعمال کی نسبت بہت زیادہ ہوتا ہے ۔مختلف اہل علم نے ایسے اعمال پر مشتمل کتب بھی مرتب کی ہیں یہ کتاب بھی اسی سلسلہ کی کڑی ہے ۔ زیر تبصرہ کتا ب’’ صحیح فضائل اعمال ‘‘ سعودی علماء کی صحیح فضائل اعمال پر مرتب شدہ کتاب کاترجمہ ہے ۔ یہ کتاب اس قدر مختصر اور جامع ہےکہ ہر قاری بآسانی اسے ایک دو مجلسوں میں پڑھ سکتاہے ۔مرتبین نے اس کتاب میں ایسےتمام اعمال کو مہکتے پھولوں کی صورت میں جو ارکان اسلام اور دیگر عبادتی زندگی سے تعلق رکھتے ہیں اکٹھا کر کے صحیح فضائل اعمال کا ایک خوشبو بکھیرتا گلدستہ بنادیا ہے ۔ یہ کتاب اپنی جامعیت وافادیت کےاعتبار سے اس موضوع پر موجود دیگر کئی کتب سے اس اعتبار سے منفرد کہ یہ مختصر بھی ہے اور صحیح احادیث کی روشنی میں صحیح ترین بھی ہے ۔اللہ تعالیٰ اس کے مرتبین ، مترجم وناشرین کی اس عمد ہ کاوش کو قبول فرمائے اور اسے عوام الناس کے لیے نفع بخش بنائے ۔ (آمین)

عناوین صفحہ نمبر
حرف تمناء صحیح فضائل اعمال 13
اخلاص عمل کی فضیلت
کتاب وسنت پر عمل پیرارہنے کی فضیلت 21
نیک کام میں پہل کرنےکی فضیلت 21
علم،حصول علم اوراہل علم کی فضیلت 21
تبلیغ حدیث اوراشاعت علم کی فضیلت 24
نیک کام کی طرف رہنمائی کرنےکی فضیلت 25
بحث ومباحثہ اورجھوٹ  چھوڑنے کی فضیلت 26
پیشاب وپاخانہ کےوقت )قبلہ کی طرف منہ یاپیٹھ نہ کرنے کی فضیلت 26
وضو کی فضیلت 26
وضو کی حفاظت اوراس کی تجدید کی فضیلت 28
مسواک کی فضیلت 28
وضو کےبعدعا پڑھنےکی فضیلت 29
وضو کےبعد دورکعت پڑھنےکی فضیلت 30
اذان اورصف اول کی فضیلت 30
مؤذن کاجواب دینےاوراذان کےبعد دعاپڑھنے کی فضیلت 31
کنواں کھودنے اورمسجد بنانےکی فضیلت 33
نماز باجماعت اورمسجدوں کی طرف جانےکی فضیلت 33
مسجد کےساتھ وابستگی اوراس میں بیٹھنے رہنےکی فضیلت 34
نماز میں فضائل اعمال
پنج وقتہ نمازوں کی فضیلت 39
کثرت وسجود کی فضیلت 40
اول وقت میں نماز پڑھنے کی فضیلت 41
نماز باجماعت کی فضیلت 42
کثرت جماعت کی فضیلت 43
میدان میں نماز اداکرنےکی فضیلت 43
عشاءاورفجر کی نما ز باجماعت اداکرنےکی فضیلت 44
نفل نماز گھروں میں پڑھنے کی فضیلت 44
ایک نماز کےبعد دوسری نماز کےانتظار کی فضیلت 45
صبح اورعصر کی نماز پر محافظت کی فضیلت 46
فجر اورعصر کےبعد اپنی نماز کی جگہ میں بیٹھنے کی فضیلت 47
نماز فجر اورمغرب کےبعد ذکر کرنےکی فضیلت 47
صفوں کو ملانے اورخالی جگہوں کو پر کرنےکی فضیلت 48
اما م کےپیچھے آمین کہنےکی فضیلت 49
نماز میں ’’ربنا ولک الحمد ‘‘کہنےکی فضیلت 49
نماز میں پڑھی جانےوالی چیز کو سمجھنے کی فضیلت 49
دن رات میں بارہ رکعت مؤکدہ سنتوں پر محافظت کی فضیلت 50
نماز میں پڑی جانے والی چیز کو سمجھنے کی فضیلت 50
فجر سےپہلے دورکعت پڑھنے کی فضیلت 51
ظہر سےپہلے اوراس کےبعد نمازپڑھنے کی فضیلت 51
عصرسےپہلے نماز پڑھنےکی فضیلت 51
نماز وتر کی فضیلت 52
انسان کابحالت طہارت قیام کی نیت سےسونے کی فضیلت 52
بستر پر لیٹنے وقت دعائیں پڑھنےکی فضیلت 53
رات کو بیدار ہونےکےوقت ذکر ودعا کی فضیلت 54
قیام اللیل کی فضیلت 55
صبح وشام کےاذکار میں فضائل 60
صبح وشا م کی دعاؤں کی فضیلت
دوگنے ثواب والےذکر کی فضیلت 65
بازار میں’’لاالہ الاللہ ‘‘کہنے کی فضیلت 65
مجلس سےاٹھنے کےوقت دعاکی فضیلت 66
’’لاحول ولاقوۃ الاباللہ ‘‘کی فضیلت 66
نبی کریم ﷺ کی ذات گرامی پر دوردشریف بھیجنے کی فضیلت 67
نماز چاشت کی فضیلت 67
نماز جمعۃ المبارک میں فضائل
نماز جمعہ اورا سکےجانے کی فضیلت 71
جمعہ کےلیے مسجد کی طرف جلدی  جانےکی فضیلت 72
جمعہ کی رات اوردن میں سورہ کہف پڑھنےکی فضیلت 72
روزے اوررمضان المبارک میں فضائل اعمال
مطلق روزے کی فضیلت 75
رمضان کےروزے تروایح اورخصوصا شب قدر میں قیام کی فضیلت 77
شش عیدی روزے کی فضیت 79
جوشخص عرفہ میں نہ ہوا اس کےلیے عرفہ کےدن کےروزے کی فضیلت 79
اللہ کےمہینہ محرم المحرم کےروزے کی فضیلت 79
یوم عشورہ کےروزہ کی فضیلت 80
شعبان کےروزے کی فضیت 80
ہرماہ تین دن کےروزوں کی فضیلت 80
سوموار اورجمعرات کےروزے کی فضیلت 81
صوم داؤدی کی فضیلت 81
سحری کھانے کی فضیلت 81
روزہ دارکوروزہ افطار کرانےکی فضیلت 82
عشرہ ذی الحجہ کی فضیلت 82
حج اوراعمال حج کی فضیلتیں
فضائل حج وعمرہ 85
تلبیہ (لبیک کہنے)کی فضیلت 86
وقوف عرفہ کی فضیلت 86
حجراسود کوچومنے اورکن یمانی کوہاتھ لگانے کی فضیلت 86
طواف کی فضیلت 87
مزدلفہ میں حاجیوں کوکیاملتاہے؟ 87
رمضان میں عمرہ کی فضیلت 87
حج وعمرہ میں سرمنڈانےکی فضیلت 88
آب زمزم کی فضیلت 88
مساجد ثلاثہ اوران میں ہاتھ پڑھنے کی فضیلت 88
مسجد قبامیں نماز کی فضیلت 89
روزمر ہ کےمعاملات میں اعمال کی فضیلت
مزدوری کی فضیلت 93
خریدوفروخت کےمعاملے میں جب بائع اورمشتر ی دونوں سچ بولیں تو 93
بہترین ادائیگی کی فضیلت 94
فسخ بیع کی فضیلت 94
خریدوفروخت میں نرمی کرنےکی فضیلت 94
غلہ ناپنے کی فضیلت 95
صبح سویرے کام کرنےکی فضیلت 95
بکری اوردیگر جانوروں کورکھنے پالنےکی فضیلت 95
غلام آزاد کرنےکی فضیلت 96
منصف قاضی کی فضیلت 96
فضائل قرآن
قرآن پڑھنے اورپڑھانےکی فضیلت 99
ماہر قرآن کی فضیلت 99
اہل قرآن کی فضیلت 100
قرآن پاک پڑھنے کی فضیلت 100
سورہ فاتحہ کی فضیلت 102
سورہ بقرہ اوراآیت الکرسی کی فضیلت 102
سورہ بقرہ کی آخری دوآیتوں کی فضیلت 103
سورہ بقرہ اورآل عمران کی فضیلت 104
سورہ کہف کی فضیلت 106
مسبحات کی فضیلت 106
سورہ ملک کی فضیلت 106
سورہ اخلاص  اورکافرون کی فضیلت 106
معوذتین کی فضیلت 108
والدین کےساتھ حسن سلوک اوراطاعت وفرمانبرداری کی فضیلت
صلہ رحمی کی فضیلت 110
اہل وعیال پر خرچ کرنےکی فضیلت 111
اس آدمی کی فضیلت جس کےپاس دولڑکیاں یادوبہنیں ہوں 112
بیوہ عورتوں اورمسکینوں کےلیے محنت کرنےکی فضیلت 113
یتیم کی کفالت اوراس پر خرچ کرنےکی فضیلت 113
رضائے الہی کی خاطر اپنے مسلمانوں بھائی کی زیارت کرنےکی فضیلت 113
مسلمانوں کی ضرورتوں کو پورا کرنےکی فضیلت 114
بیمار کی مزاج پرسی کی فضیلت 114
بیمار کےپاس اس کےلیے دعا کرنےکی فضیلت 115
حسن خلق کی فضیلت 115
حیاکی فضیلت 116
سچائی کی فضیلت 116
تواضح وانکساری کی فضیلت 117
حلم ودرگزر اورغصہ پر قابو پانے کی فضیلت 117
ظالم اورقصووار کو معاف کرنےکی فضیلت 118
کمزوروں پر شفقت اوررحمدلی کی فضیلت 118
تمام امور ومعاملات میں نرمی برتنے کی فضیلت 119
مسلمان کے پردہ پوشی کی فضیلت 119
لوگوں کےدرمیان مصالحت کرانےکی فضیلت 119
مسلمان بھائی کی غیبت کی تردید اوراس کی عزت کی مدافعت 119
حب فی اللہ کی فضیلت 119
سلام کی فضیلت 120
مصافحہ کی فضیلت 121
خندہ پیشانی اورنیک برتاؤ کرنےکی فضیلت 121
خوش کلامی کی فضیلت 121
امر بالمعروف ونہی عن المنکر کی فضیلت 122
مصائب پر صبر کرنے کی فضیلت 122
بیمار ی وپریشانی کی فضیلت 124
تکلیف دہ چیز کو راستہ سےہٹا دینےکی فضیلت 124
چھپکلی مارنے کی فضیلت 124
اللہ تعالی کےڈرسےشرمگاہ کی حفاظت کرنےکی فضیلت 125
اللہ تعالیٰ کےمحارم سےنگاہ نیچی رکھنے کی فضیلت 126
اسلام میں بال کی سفیدی کی فضیلت 126
زبان  کی حفاظت کی فضیلت 127
توبہ کی فضیلت 128
برائی کےبعد نیکی کرنےکی فضیلت 129
محتادی محتاجوں اورکمزوروں کی فضیلت 130
دنیا سےبے رغبتی اورآخرت کی طف رغبت کی فضیلت 131
اللہ سےامید ورجا اورحسن ظن کی فضیلت 132
خوف وخشیت الہٰی کی فضیت 132
اللہ تعالیٰ کی خشیت سے رونےکی فضیلت 136
جنازہ اورامور جنازہ میں فضائل
میت کو نہلانے اورکفنا نےکی فضیلت 137
نماز جنازہ اورجنازوں کےساتھ چلنے کی فضیلت 138
اس شخص کی فضیلت جس کی اولاد بچپن میں فوت ہوجائے 138
سقط کی فضیلت 139
مصیبت کےوقت ’’انا للہ وانا الیہ راجعون ‘‘کہنے کی فضیلت 139
مصیبت زدہ کو تعزیت وتسلی دینے کی فضیلت 140
بینائی ختم ہونے پر صبر وشکر کااجر 140
صدقات میں فضیلتیں 141
زکوۃ اداکرنےکی فضیلت 143
حلا ل کمائی سے صدقہ کرنےکی فضیلت 143
صدقہ کوچھپا کردینےکی فضیلت 144
استغناء کےباوجود صدقہ کرنےکی فضیلت 145
خرچ کرنے کی فضیلت 145
عورت کااپنے شوہر کےمال سےصدقہ کرنےکی فضیلت 146
دود ھ ولاجانور دینےکی فضیلت 146
درخت لگانے اورکھیتی باڑی کرنےکی فضیلت 146
پانی صدقہ کرنےکی فضیلت 147
نکاح کی فضیلت 147
شوہر کی اطاعت وفرمانبرداری کی فضیلت 148
جہاد اورجہادی امور کی فضیلتیں
اللہ کی راہ میں صبح وشام کو چلنے کی فضیلت 149
جہاد فی سبیل اللہ کی فضیلت 151
اللہ کی راہ میں پہر ہ دینےکی فضیلت 151
اللہ کے راستے میں خرچ کرنےکی فضیلت 153
اللہ کےراستے میں گرد آلود ہونے کی فضیلت 153
للہ کےراستے میں چوکیداری کرنےکی فضیلت 154
اللہ کےراستے میں تیراندازی کی فضیلت 154
اللہ کی راہ میں زخمی ہونےکی فضیلت 154
دریائی جہاد کی فضیلت 155
غازی کو تیار کرنےاوراس کےگھر والوں کی خبرگیری رکھنے کی فضیت 156
اللہ کی راہ میں شہید ہونےکی فضیلت 156
اللہ کےراستے میں گھوڑے باندھنے کی فضیلت 158

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3.6 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam ادب اسلام اعمال اہل حدیث زبان سلفی شروحات حدیث طہارت علماء نماز وضو

صحیح بخاری (داؤد راز)۔جلد 1

صحیح بخاری (داؤد راز)۔جلد 1

 

مصنف : محمد بن اسماعیل بخاری

 

صفحات: 740

 

امام بخاری ﷫ کی شخصیت اور   ان کی صحیح بخاری کسی تعارف کی محتاج نہیں سولہ سال کے طویل عرصہ میں امام   بخاری نے 6 لاکھ احادیث سے اس کا انتخاب کیا اور اس کتاب کے ابواب کی ترتیب روضۃ من ریاض الجنۃ میں بیٹھ کر فرمائی اور اس میں صرف صحیح احادیث کو شامل کیا ۔ جسے اللہ تعالیٰ نے صحت کے اعتبار سےامت محمدیہ میں’’ اصح الکتب بعد کتاب اللہ‘‘ کادرجہ عطا کیا بے شماراہل علم اور ائمہ حدیث ننے   مختلف انداز میں مختلف زبانوں میں صحیح بخاری کی شروحات لکھی ہیں ان میں سے  فتح الباری از ابن حافظ ابن حجر عسقلانی ﷫ کو امتیازی مقام   حاصل ہے ۔اردو زبان میں سب سے پہلے علامہ وحید الزمان ﷫ نے صحیح بخاری کا ترجمہ کیا ہے ان کےبعد کئی شیوخ الحدیث اور اہل علم نے صحیح بخاری کا ترجمہ حواشی اور شروح کا کام سرانجام دیا ۔ان میں سلفی منہج پر لکھی جانے والی فیض الباری ازابو الحسن سیالکوٹی ، توفیق الباری اور   حافظ عبدالستار حماد ﷾ کی شرح بخاری قابل ذکر ہیں ۔ زیر تبصرہ صحیح بخاری کا سلیس ترجمہ مع مختصر فوائد بر صغیر پاک وہند کے مشہور ومعروف عالم دین شیخ الحدیث مولانا   محمدداؤد راز﷫ کا ہے جس کا لفظ لفظ قاری کومحظوظ کرتا ہے اور دامن دل کوکھینچتا ہے۔ مولانا نے اپنی زندگی میں ہی   1392ھ میں اسے   الگ الگ پاروں کی صورت میں شائع کروایا بعد ازاں 2004 ء میں مکتبہ   قدوسیہ نے بڑی محنت شاقہ سے کمپیوٹر ٹائپ کر کے بڑے اہتمام سے آٹھ   جلدوں شائع کیا تو اسے بہت قبول عام حاصل ہوا ۔ پھراس کے بعد کئی مکتبات نےبھی شائع کیا زیر تبصرہ نسخہ مرکزی جمعیت اہل حدیث ۔ہند کی طرف سے طبع شدہ ہے جسے انہوں نے مکتبہ قدوسیہ،لاہور کی اجازت سے ہندوستان سے شائع کیا ۔

 

فہرست مضامین
25 سوانح حیات امام بخاری
43 مقدمہ امام بخاری
149 باب وحی کی ابتداء میں
149 حدیث نیت کی درستگی میں
152 حدیث کیفیت وحی کے بارے میں
169 ابو سفیان اور ہرقل کا مکالمہ
   کتاب الایمان
173    اسلام کی بنیاد پانچ چیزوں پر قائم ہے
187    ایمان کے کاموں کا بیان
190    باب مسلمان کی تعریف میں
191    کون سا اسلام افضل ہے؟
191    کھانا کھلانا بھی اسلام سے ہے
192    اپنے بھائی کیلئے وہ پسند جو اپنے لیے۔۔۔
193    رسول اللہ ﷺ سے محبت ایمان ہے
194    ایمان کی مٹھاس کے بارے میں
197    انصار کی محبت ایمان کی نشانی ہے
198    باب تفصیل مزید
199    فتنوں سے دور بھاگنا دین ہے
200    رسول اللہ ﷺ کا ایک ارشاد۔۔۔
201    باب ایمان کی ایک روش میں
203    اہل ایمان کا اعمال میں دوسرے سے بڑھنا
205    شرم و حیا بھی ایمان سے ہے
206    آیت فان تابوا۔۔۔الخ کی تفسیر
208    ایمان عمل کا نام ہے
210    جب حقیقی اسلام پر کوئی نہ ہو
211    سلام پھیلانا بھی اسلام میں داخل ہے
212    خاوند کی ناشکری کے بیان میں
213    گناہ جاہلیت کے کام ہیں
215    ظلم کی کمی و بیشی کے بیان میں
216    علامات منافق
217    قیام لیلتہ القدر ایمان سے ہے
218    جہاد ایمان سے ہے
219    رمضان کی راتوں کا قیام ایمان سے ہے
219    صوم رمضان بھی ایمان سے ہے
220    دین آسان ہے
220    نماز بھی ایمان سے ہے
221    انسان کے اسلام کی خوبی کے بارے میں
222    اللہ کو دین کا کون سا عمل زیادہ پسند ہے
223    ایمان کی کمی و زیادتی کے بارے میں
225    زکوٰۃ دینا اسلام میں داخل ہے
226    جنازے کے ساتھ جانا ایمان میں داخل ہے
226    مومن کو اعمال کے ضیاع سے ڈرنا چاہئے
229    ایمان اسلام کے بارے میں سوالات
   باب
231    دین کوگناہ سے محفوظ رکھنے والے کی فضیلت
234
235    بغیر خالص نیت کے عمل صحیح نہیں
235    دین خیر خواہی کا نام ہے
   کتاب العلم
237    علم کی فضیلت کے بیان میں
238    کسی سے علم کی بات پوچھنا
239    علمی مسائل کے لیے آواز بلند کرنا
239    الفاظ حدثناواخبرناوانبانا کے متعلق
241    امتحان لینے کا بیان
242    شاگرد کا استاد کے سامنے پڑھنا اور سنانا
248    مناولہ کا بیان
249    وہ شخص جو مجلس کےآخر میں بیٹھ جائے
250    حدیث آگے پہنچانے کا بیان
250    علم کا درجہ قول و عمل سے پہلے ہے
251    لوگوں کی رعایت کرتے ہوئے تعلیم دینا
252    تعلیم کیلئے نظام الاوقات بنانا
252    فقاہت دین کی فضیلت
252    علم میں سمجھداری سے کام لینے کا بیان
253    علم و حکمت میں رشک کرنے کے بیان میں
253    حضرت موسٰی اور خضر ؑ کا بیان
255    فہم قرآن کیلئے دعائے نبوی
255    بچے کا حدیث سننا کس عمر میں معتبر ہے
256    تلاش علم میں گھر سے نکلنے کے بیان میں
257    پڑھنے اور پڑھانے کی فضیلت
258    علم کے زوال اور جہل کی اشاعت کے بیان میں
259    علم کی فضیلت کے بیان میں
260    سواری پر بھی فتویٰ دینا جائز ہے
261    اشارے سے سوال کا جواب دینا
263    وفد عبدالقیس کو ہدایات نبوی
263    مسائل معلوم کرنے کے لئے سفر کرنا
265    طلباء کی باری مقرر کر لینا
267    جب کو ئی مسئلہ درپیش ہو تواس کےلیے سفر کرنا (کیسا ہے؟
267    استاد کے خفا ہونے کے بیان میں
269    شاگرد کا دو زانو ہو کر ادب سے بیٹھنا
270    معلم کا تین بار مسئلہ کو دہرانا
270    مرد کا اپنی باندی اور گھر والوں کو تعلیم دینا
271    عورتوں کو تعلیم دینا
272    علم حدیث کے لئے حرص کا بیان
273    علم کس طرح اٹھا لیا جائےگا
274    عورتوں کی تعلیم کے لئے خاص دن مقرر کرنا
274    شاگرد نہ سمجھ سکے تو دوبارہ پوچھ لے
275    جو موجود ہے وہ غائب کو پہنچا دے
278    جو رسول ﷺ پر جھوٹ باندھے
280    علوم دین کو قلم بند کرنے کے بیان میں
280    رات میں تعلیم دینا اور وعظ کرنا
281    سونے سے قبل علمی گفتگو کرنا
282    علم کو محفوظ رکھنے کے بیان میں
284    علماء کی بات خاموشی سے سننا
285    جب کسی عالم سے پوچھا جائے۔۔۔
288    کھڑے کھڑے سوال کرنا
289    رمی جمار کے وقت بھی مسئلہ پوچھنا
290    فرمان الٰہی کہ تم کو تھوڑا علم دیا گیا ہے
291    بعض باتوں کو مصلحتاً چھوڑ دینا
292    مصلحت سے تعلیم دینا اور نہ دینا
294    طالب علم کے لئے شرمانا مناسب نہیں
295    شرمانے والا کسی کے ذریعے مسئلہ پوچھ لے
296    مسجد میں علمی مذاکرہ کرنا اور فتویٰ دینا
297    سوال سے زیادہ جواب دینا
   کتاب الوضو
298    آیت اذا قمتم الی الصلوٰۃ کی تفسیر
299    نماز بغیر پاکی کے قبول نہیں
299    وضو کی فضیلت کے بارے میں
300    شک کی وجہ سے نیا وضو نہ کرے
300    مختصر وضو کرنے کا بیان
301    پورا وضو کرنے کے بیان میں
303    چہرے کا صرف ایک چلو پانی سے دھونا
305    ہرحال میں بسم اللہ پڑھنا
306    حاجت کو جانے کی دعا
306    پاخانہ کے قریب پانی رکھنا
307    پیشاب اور پاخانہ کے وقت قبلہ رخ نہ ہونا
308    دو اینٹوں پر بیٹھ کر قضائے حاجت کرنا
309    عورتوں کو قضائے حاجت کے لئے باہر نکلنا
310    گھروں میں قضائے حاجت کرنا
310    پانی سے طہارت کرنا بہتر ہے
311    طہارت کے لئے پانی ساتھ لے جانا
311    استنجاء کے لیے نیزہ بھی ساتھ لے جانا
312    دائیں ہاتھ سے طہارت کی ممانعت
312    اپنے عضو کو اپنے داہنے ہاتھ سے نہ پکڑے
313    پتھروں سے استنجاء کرنا ثابت ہے
313    ہڈی اور گوبر سے استنجاء نہ کرے
314    اعضاء وضو کو ایک ایک بار دھونا
315    اعضاء وضو کو دو دو بار دھونا
315    اعضاء وضو کو تین تین بار دھونا
316    وضو میں ناک صاف کرنا ضروری ہے
317    طاق ڈھیلوں سے استنجاء کرنا
317    دونوں پاؤں دھونا اور قدموں پر مسح نہ کرنا چاہیے۔
318    وضو میں کلی کرنا ضروری ہے
319    ایڑیوں کے دھونے کے بارے میں
319    جوتوں کے اندر پاؤں دھونا اور مسح کرنا
320    وضو اور غسل میں دائیں جانب سے ابتداء کرنا
323    پانی کی تلاش ضروری ہے
326    جس پانی سے بال دھوئے جائیں
327    جب کتابرتن میں پی لے
328    وضو توڑنے والی چیزوں کا بیان
330    جو اپنے ساتھی کو وضو کرائے
330    بے وضو تلاوت قرآن وغیرہ
331    بے ہوشی کے شدید دورہ سے وضو ٹوٹنے کا بیان
333    پورے سر کا مسح کرنا ضروری ہے
334    ٹخنوں تک پاؤں دھونا
334    وضو کے بچے ہوئے پانی کا بیان
335    ایک ہی چلو سے کلی اور ناک میں پانی دینا
337    سر کا مسح کرنے کے بیان میں
338    اپنی بیوی کے ساتھ وضو کرنا جائز ہے
339    بے ہوش آدمی پر وضو کا پانی چھڑکنے کا بیان
342    لگن پیالے وغیرہ میں وضو کرنا
337    طشت میں پانی لے کر وضو کرنا
338    ایک مد پانی سے وضو کرنا
339    موزوں پر مسح کرنا
342    وضو کر کے موزہ پہننا
342    بکری کا گوشت، ستو کھا کر وضوضروری نہیں
343    ستو کھا کر صرف کلی کرنا
344    دودھ پی کر کلی کرنا
345    سونے کے بعد وضو کرنے کا بیان
346    بغیر حدث کے بھی نیا وضو جائز ہے
346    پیشاب کی چھینٹوں سے نہ بچنا کبیرہ گناہ ہے
347    پیشاب کو دھونے کے بیان میں
348    باب :۔۔۔
349    ایک دیہاتی کا مسجد میں پیشاب کرنا
350    مسجد میں پیشاب پر پانی بہانا
351    بچوں کے پیشاب کے بارے میں
352    کھڑے ہو کر اور بیٹھ کر پیشاب کرنا
353    اپنے کسی ساتھی سے آڑ بنا کر
354    کسی قوم کی کوڑی پر پیشاب کرنا
355    حیض کا خون دھونا ضروری ہے
356    منی کے دھونے کے بارے میں
357    اگر منی وغیرہ دھوئے اور اس کا اثر نہ جائے
358    اونٹ بکری کے رہنے کی جگہ کے بارے میں
359    جب نجاست گھی اور پانی میں گر جائے
360    ٹھہرے ہوئے پانی میں پیشاب کرنا منع ہے
361    جب نمازی کی پشت پر کوئی نجاست ڈال دی۔۔۔
362    کپڑے میں تھوک اور رینٹ وغیرہ لگ جائے
363    نشہ والی چیزوں سے وضو جائز نہیں
364    عورت کا اپنے باپ کے چہرے سے خون دھونا
365    مسواک کے بیان میں
366    بڑے آدمی کو مسواک دینا
367    سوتے وقت وضو کرنے کی فضیلت
368    کتاب الغسل
369    قر آن حکیم میں غسل کے احکام
370    غسل سے پہلے وضو کرنے کا بیان
371    مرد کا بیوی کے ساتھ غسل کرنا
372    ایک صاع وزن پانی سے غسل کرنا
373    سر پر تین بار پانی بہانا
374    صرف ایک مرتبہ بدن پر پانی ڈالنا

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
14.8 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam احکام ومسائل اسلام روزہ و رمضان المبارک زبان طہارت علماء

روزے کے روحانی اور طبی فوائد قرآن ، حدیث اور میڈیکل سائنس کی روشنی میں

روزے کے روحانی اور طبی فوائد قرآن ، حدیث اور میڈیکل سائنس کی روشنی میں

 

مصنف : ڈاکٹر گوہر مشتاق

 

صفحات: 34

 

روزہ ایک ایسی عبادت ہے جو انسان کی نفسیاتی تربیت میں اہم کراداکرتی ہے ۔ نفس کی طہارت ، اس میں پیدا ہونے والی بیماریوں کی روک تھام او ر نیکیوں میں سبقت حاصل کرنے کی طلب روزے کے بنیادی اوصاف میں سے ہیں۔ اس لیے یہ لازم ہے کہ ہم روزےکو قرآن وسنت کی روشنی میں رکھنے ، افطار کرنے اور اس کے شرائط وآداب کو بجا لانے کا خصوصی خیال رکھیں۔دورِ سلف کی نسبت دورِ حاضر میں بہت سے جسمانی بیماریاں رونما ہورہی ہیں نیز طب میں جدید آلات اور دوا کے استعمال میں گوناگوں طریقے منظر عام آچکے ہیں بوقت ضرورت ان سے فائدہ اٹھانا ایک معمول بن چکا ہے۔روزے کے عام احکام ومسائل کے حوالے سے اردوزبان میں کئی کتب اور فتاوی جات موجود ہیں لیکن روزہ او رجدید طبی مسائل جاننےکےلیے اردو زبان میں کم ہی لٹریچر موجود ہےکہ جس سے عام اطباء او ر عوام الناس استفادہ کرسکیں۔ زیرتبصرہ کتاب ’’روزے کے روحانی اور طبی فوائد ‘‘ڈاکٹر گوہر مشتاق کی تصنیف ہے ۔ جس میں انہوں نے قرآن وحدیث اور جدید میڈیکل سائنس کی روشنی میں یہ واضح کیا ہے کہ روزہ ایک ایسی جامع عبادت کہ جس میں بے شمار روحانی اور طبی فوائد موجود ہیں اور اس کااعتراف مسلمان علماء کےعلاوہ غیر مسلم حکماء اور مفکرین نے بھی کیا ہے ۔ اور آج جدید میڈیکل سائنس نے روزے کے فوائد کے بارے میں مزید ثبوت فراہم کردیئے ہیں بلکہ ایک مغربی ماہر طب ڈاکٹر ایلن ہاس نے تو کہا ہے کہ ’’ روزہ واحد عظیم ترین طریقۂ علاج ہے ‘‘۔ فاضل مصنف اس کتاب کےعلاوہ بھی اسلام اور جدید سائنس کے موضوع پر متعدد کتب تصنیف کرچکے ہیں ۔

 

عناوین صفحہ نمبر
شریعت اسلامی کے تمام احکامات کا مقصد 8
روزے سے مجاہد ہ نفس اور اسکے انسانی کردار پر اثرات 9
رمضان کے لیے چاند کے مہینے کی حکمت 10
رمضان اور اسلام کا فلسفہ نیکی و بدی 11
قرآن اور رمضان کی مناسبت 12
روزے سے مکمل روحانی فوائد کس طرح حاصل کیے جائیں 15
روزے کے طبی فوائد جدید میڈیکل سائنس کی روشنی میں 19
روزے سے جسم میں موجود زہریلے مادوں کی صفائی 20
روزہ رکھنے سے جسم اور خون کی کیمسٹری پر اثرات 22
ایڈز کے مریضوں کا علاج اور روزے 23
ہر سال ایک ماہ روزوں کی Hibernationسے مماثلت 24
روزے رکھنے سے عمر میں اضافہ اور بڑھاپے کے عمل میں کمی 25
کینسر کا علاج اور روزے 28
روزے رکھنے سے بڑھاپے میں دماغی امراض سے بچاؤ 29

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
1.3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam احکام ومسائل روزہ و رمضان المبارک زبان طہارت

روزہ اور جدید طبی مسائل

روزہ اور جدید طبی مسائل

 

مصنف : ام عبد منیب

 

صفحات: 32

 

روزہ ایک ایسی عبادت ہے جو انسان کی نفسیاتی تربیت میں اہم کراداکرتی ہے ۔ نفس کی طہارت ، اس میں پیدا ہونے والی بیماریوں کی روک تھام او ر نیکیوں میں سبقت حاصل کرنے کی طلب روزے کے بنیادی اوصاف میں سے ہیں۔ اس لیے یہ لازم ہے کہ ہم روزےکو قرآن وسنت کی روشنی میں رکھنے ، افطار کرنے اور اس کے شرائط وآداب کو بجا لانے کا خصوصی خیال رکھیں۔دورِ سلف کی نسبت دورِ حاضر میں بہت سے جسمانی بیماریاں رونما ہورہی ہیں نیز طب میں جدید آلات اور دوا کے استعمال میں گوناگوں طریقے منظر عام آچکے ہیں بوقت ضرورت ان سے فائدہ اٹھانا ایک معمول بن چکا ہے۔روزے کے عام احکام ومسائل کے حوالے سے اردوزبان میں کئی کتب اور فتاوی جات موجود ہیں لیکن روزہ او رجدید طبی مسائل جاننےکےلیے اردو زبان میں کم ہی لٹریچر موجود ہےکہ جس سے عام اطباء او ر عوام الناس استفادہ کرسکیں۔ زیر نظر کتابچہ محترمہ ام عبد منیب صاحبہ نےانہی لوگوں کی آسانی کے لیے مختصراً ترتیب دیاہےموصوفہ نے مختلف اہل علم کے فتاویٰ جات سے استفادہ کر کے اسے آسان فہم انداز میں مرتب کیا ہے۔ اللہ تعالیٰ اسے عوام الناس کے لیے نفع بخش بنائے اور محترمہ کی اس کاوش کو قبول فرمائے ۔آمین

عناوین صفحہ نمبر
سخن وضاحت 7
روزے کے احکام مریض کے لیے 9
ٹوتھ برش یا دانتو پر منجن کا استعمال 11
دانتوں کی صفائی کرنا نیز دانت بھروانا یا نکلوانا 12
نیبولائزیشن 12
آکسیجن لینا 13
مریض کو بھاپ کا استعمال کرانا 13
وکس سونگھنا 14
استنشاق (نسوار) لینا یا ان ہیلر لینا 14
غرارے کرنا 14
قے آنا 15
آنکھ میں قطرے ٹپکانا 15
ناک میں قطرے ٹپکانا 16
کان میں قطرے ڈالنا 17
کانوں کی صفائی کروانا 18
نکسیر پھوٹنا یا دانت سے خون نکلنا 18
انجکشن لگوانا 18
ڈرپ لگوانا 19
مرض کی تشخیص کے لیے معدے میں انلی داخل کرنا 20
پیٹ میں اوزار داخل کرنا 21
عورت کی فرج میں آلات داخل کرنا 21
دبر (مقعد) میں آلات داخل کرنا 21
گردوں کی صفائی 22
خون کا عطیہ دینا 23
لیبارٹری ٹیسٹ کے لیے خون دینا 23
دل کی بیماری میں زان کے نیچے ٹکیہ رکھنا 23
تیل، مرہم، مساج، کریمیں استعمال کرنا 24
مسلسل بے ہوشی طاری رہنا 24
اگر مرض سے شفایابی کی امید نہ ہو تو 25
حمل اور رضاعت کی حالت میں روزہ 25
حیض و نفاس اور استحاضہ کی حالت میں روزہ 26
قضا روزے کے احکام 26
فدیے کے احکام 27
ماخذ 29

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3.2 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam جوامع خطبات و محاضرات اور دروس روح زبان سنت طہارت نماز

ریاض الخطبات جلد اول

ریاض الخطبات جلد اول

 

مصنف : حافظ نثار مصطفٰی

 

صفحات: 362

 

خطابت اللہ تعالیٰ کی عطاکردہ،خاص استعداد وصلاحیت کا نام ہے جس  کےذریعے  ایک مبلغ اپنے مافی الضمیر کے اظہار ،اپنے جذبات واحساسات دوسروں تک منتقل کرنے اور عوام الناس کو اپنے  افکار ونظریات  کا قائل بنانے کے لیے  استعمال کرتا ہے ۔ایک قادر الکلام خطیب اور شاندار مقرر مختصر وقت میں ہزاروں ،لاکھوں افراد تک اپنا پیغام پہنچا سکتا ہے  اوراپنے   عقائد ونظریات ان تک منتقل کرسکتا ہے۔خطابت  صرف فن ہی نہیں ہے  بلکہ یہ عظیم الشان سعادت ہے ۔خطباء حضرات  اور مقررین کی سہولت وآسانی کے لیے       اسلامی خطبات  پر مشتمل دسیوں کتب  منظر عام پر آچکی ہیں جن   سے استفادہ کر کے تھوڑا بہت پڑھا ہو ا شخص  بھی  درس  وتقریر اور  خطبہ جمعہ کی تیاری کرکے سکتا ہے ۔زیر نظر کتاب’’ریاض الخطبات جلد اول ‘‘ڈاکٹرحافظ نثار مصطفی(خطیب  جامع مسجد محمدی اگوکی ،سیالکوٹ) کی تصنیف ہے۔یہ کتاب 22 مختلف موضوعات پر مشتمل ہے ۔  جوکہ  ڈاکٹر حافظ نثار مصطفی  کے ان  دروس اور تقاریر کی  کتابی  صورت ہے جو انہوں نے  مختلف مواقع پر مختلف اجتماعات میں بیان فرمائی ہیں۔ ان میں بعض وہ مضامین  بھی  شامل  ہیں جو ہفت روزہ الاعتصام ، ہفت روزہ اہلحدیث اور ہفت روزہ تنظیم  وغیرہ کے صفحات کی زینت بنے۔ان میں ان  کچھ تغیرو اضافہ کےاس کتاب میں شامل کرلیاگیا  ہے۔ یہ  مجموعہ خطبات  منفرد اور جداگانہ انداز  کا  حامل ہے ۔مولانا ابو انس محمد یحی گوندلوی رحمہ اللہ  شارح ترمذی و ابن ماجہ اور حافظ ناظم شہزاد صاحب کی نظر ثانی سے اس کتاب کی افادیت دوچند ہوگئی ہے۔صاحب کتاب اس کتاب کے علاوہ  بھی کئی کتب کے مترجم ومصنف ہیں ۔یہ اس کتاب کا آن لائن ایڈیشن ہے ۔ اللہ تعالیٰ مصنف کی تحقیقی وتصنیفی خدمات کو قبول فرمائے ۔(آمین) 

 

عناوین صفحہ نمبر
خصوصیات اوراسلوب 2
فہرست مضامین 3
خطبہ مسنونہ 20
تقریظ 21
خطبہ نمبر1 25
اثبات توحید 25
سونشانوں میں بے نشان توہے 31
اللہ تعالی کی وحدانیت پرعقلی ،عادی اورفطری دلیل 31
وہی ایک ذات عبادت کےلائق ہے 38
2۔قرآن کریم کی دعوت فکر 42
اللہ کے سوااورکارسازوں کی مثال مکڑی کی سی ہے 42
مچھر کی مثال اورقرآن کی اس پردعوت فکر 45
تسخیر کامفہوم 51
نعمت ہائے الہیہ انسان کےاحاطہ علم سے باہر ہیں 52
قرآن مجید کانظام کائنات سے استدلال 52
خطبہ نمبر3 56
پیارے رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی چند مخصوص صفات ومحاسن 56
ہرچیز سے بڑھ کرپیارے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے ساتھ محبت ایمان کےلئےشرط ہے
پیارے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کو جوامع الکلم عطا کیے جانا 59
پیارے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کےلئے مال غنیمت حلال کیاجانا 59
پیارے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کےلئے زمین کو مسجد اورباعث طہارت بنادیاجانا 60
پیارے رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم کاعرش کی دائیں جانب کھڑا ہونا 67
پیارے رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے جسم اطہر کی نزاکت اورخوشبو 68
نبوت محمدی کےسراج منیر کے بعد کسی بھی نبی کاچراغ نہیں جل سکتا 69
مومنوں میں سے پیارے رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی بعثت،مومنوں پراللہ کااحسان ہے 69
ہر عبادت کی قبولیت کےلئے شرط ہے کہ وہ پیارے رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی سنت کے مطابق ہو 70
پیارے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کامقام ذیشان ساری امت (ساری کائنات)سے اعلی 72
شان مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم 75
جامع مجمل خطبہ احمد صلی اللہ علیہ وسلم 77
سیدنا عبداللہ بن مسعود رضی اللہ عنہ اورشان مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم 78
پیارے نبی صلی اللہ علیہ وسلم امام الانبیاء ہیں 79
سیدہ عائشہ رضی اللہ عنہا اورشان مصطفی 79
سیدناخدیجہ رضی اللہ عنہا اورشان مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم 80
سیدنا ابن عباس رضی اللہ عنہما اورشان مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم 81
چند اعزازات مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم 84
رفعت وعظمت شان مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم 86
اللہ تعالی اورمقام مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم 88
ائمہ کرام رحمہم اللہ اورشان مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم 90
عبداللہ بن عباس ،امام شعبی ،عطاء،مجاہد اورامام مالک بن انس کانظریہ 90
ائمہ اربعہ کے نزدیک پیارے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کامقام 91
اللہ اوررسول صلی اللہ علیہ وسلم کامقام 93
اللہ تعالی اپنے نبی کاخود محافظ ہے 96
اللہ تعالی کا اپنے نبی کو ابو لہب کی بیو ام جمیل سے تحفظ فراہم کرنا 99
نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کا عفریت کوپکڑنا 100
آپ کی جان بچانے والے کی شہادت 101
آپ کی جان بچانے والے کی شہادت 101
2۔ابوجہل کاارادہ قتل 102
3۔عقبہ بن ابی معیط کاارادہ قتل 102
4۔سیدنا عمر کااسلام لانے سے قبل آپ کو قتل کرنا کاارادہ 103
5۔قتل کے ارادہ سے ابوطالب سے سودابازی 104
6۔وہ مشورہ قتل جو آپ کی ہجرت کاسبب بنا 105
7۔ہجرت کےبعد آپ کی گرفتاری  یا قتل پرسو اونٹ انعام کی پیش کش 105
8۔عمیر بن وہب جمحی کاارادہ قتل 2ھ 109
(9)یہود کامنصوبہ قتل4ھ 108
(10)ثمامہ بن اثال کاارادہ قتل 6ھ 109
(11)زہر آلود بکری کےگوشت سے آپ کے قتل کی یہودی سازش 7ھ 110
خسروپرویز شاہ ایران کاارادہ 7ھ 111
جادو کے ذریعہ آپ کو ہلاک کرنے کی یہودی سازش 112
دشمن قبیلہ کے ایک بدوی کاارادہ قتل 112
فضالہ بن عمیر کاارادہ قتل 8ھ 113
منافقوں کی آپ کو قتل کرنے کی سازش 9ھ 113
عامر بن طفیل اوراربد کی سازش قتل10ھ 114
اللہ تعالی کااپنےرسول کی حفاظت بذریعہ انصار کرنا 116
آزمائش اورایمان لازم وملزوم 119
آزمائش کے ساتھ ساتھ اللہ تعالی کے مدد کاحصول 122
آزمائشوں سے گناہوں کی معافی 125
ابراہیم علیہ السلام کی آزمائشیں اوران کاصلہ 126
مصائب دنیا سے نجات 129
خوف وحزن کاخاتمہ 131
اہل ایمان کی آزمائش کاعظیم واقعہ 136
7۔نماز میں خشوع کی اہمیت 139
’’ربط کلام:کامیاب ہونے والوں کی پہلی صفت 140
لغت میں خشوع کامفہوم 140
’’قال بان فارس فی (المقاییس) 141
قرآن کریم میں خشوع کااستعمال 141
نماز میں خشوع کی تعریف 142
روز محشر نماز کے فوائد 144
خشوع کے فوائد 145
نماز میں خیالات کی پراگندگی کاحل 148
خشوع کی فضیلت 151
پیارے رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی خشوع وخضوع سے لبریز نماز 152
ہماری نمازوں کاحال 154
اپنی نمازوں میں خشوع وخضوع پیدا کرنے کےلئےچند تجاویز حاضر خدمت ہیں 155
عبادات کی مقصدیت 157
تخلیق انسان کامقصد اللہ تعالی کی عبادت ہے 166
عبادات کادوسرا نام 170
عبادت یعنی عمل صالح کامقاصد 171
عبادت یعنی عمل صالح کے مقاصد حاصل کرنے میں ناکامی کےاسباب 172
9۔غصہ ضبط کرنے کی فضیلت 174
اسلام ایک ہمہ گیر اورآفاتی دین 174
غیظ وغضب سے احتراز کاحکم 174
غصے کو ضبط کرنے اورعفوودرگزرنے کاحکم 175
غصہ ضبط کرنے کی فضیلت 179
غصہ ہلاکت ہے 180
طاقتورکون 181
ابلیس کےحملہ کے اوقات 182
غصہ زائل کرنے کے طریقے 182
دو عظیم سنتیں 185
10۔صدق وکذب کے اثرات 187
11۔آداب تجارت 200
قریش مکہ اورپیشہ تجارت 200
پیارے رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم کاپیشہ ءتجارت اختیار کرنا 201
تاجر کے ضروری اوصاف 201
وہ اشیاء جن کی تجارت ممنوع ہے 205
جہنم سے نجات دینے والی تجارت 209
12۔حقیقت دنیا 212
دنیا کس کاگھر ہے 217
پیارے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی رہائش گاہ 218
دنیا کے فتنہ سے پناہ مانگنا 221
ہوس،اورعمر کی زیادتی کی تمنا 223
دنیا کی محبت اورموت سے بیزاری کانقصان 225
13۔بہتر مسلمان کون؟ 227
کامل اورسچا مسلمان کون؟ 227
دنیا کامال متاع غرور ہے 228
عیب جو طعنہ زن جہنم کاایندھن بنے گا 229
اللہ اوررسول صلی اللہ علیہ وسلم کے نزدیک بہترین مسلمان کوں؟ 230
مسلمان کو گالی دینا فسق ہے 230
غیبت کی وضاحت 233
بہترین اوربد ترین شخص کون 237
اللہ کامحبوب ترین کون 238
مستحق رحمت کون ہے 239
احادیث کے تناظر میں بہترین کون 240
فتنوں کے دور میں بہترین شخص 248
بہترین شخص کےاوصاف حسنہ 251
حسد!چھٹکارا کیسے 253
حسد کی ممانعت 254
نعمت دیکھ کردعائے برکت کرنا 255
دعائے برکت 255
قابل رشک دوافراد 255
حسدزائل کرنے کاایک طریقہ 256
حسدزائل کرنے کادوسرا طریقہ 257
حسدزائل کرنے کاتیسرا طریقہ 258
حاسد کے شر سے اللہ کی پناہ حاصل کرنا 259
15۔صرف ذکر الہی اطمینانِ قلب کاموثر ذریعہ ہے 261
بے سکونی اورغم سے نجات مختلف طریقے 262
اسلام میں روح کی غذا ذکرالہی ہے 262
بے سکونی سے نجات کادرست طریقہ 263
تم اللہ کو یادکرواللہ تمہیں یادکرےگا 263
ذکرالہی سے اللہ کی بخشش کاحصول 265
ذکرمحفوظ ترین قلعہ ہے 266
ذکرسے معیشت الہی کاحصول 267
ذکرالہی باللسان:ذکرباللسان اللہ تعالی کی معیت کاموثر ذریعہ ہے 268
ذکرافضل ترین عمل ہے 268
ذکرکے چند فوائد 271
16۔اطمینان قلب کےاسباب 273
تمہیدی کلمات 273
تقدیر پرایمان 274
اطمینان قلب کے اسباب میں سے دوسرا سبب ہے 276
ساری امیدیں اکیلے اللہ تعالی سے باندھنا 276
قرآن کریم کی چار آیات باعث طمانیت 279
13۔اپنے سے کم ترلوگوں کو دیکھنا 279
رسول اللہ کی شفاعت کی امید رکھنا 281
ہرقسم کے گناہ بالخصوص ظلم سے بچنا 282
17۔اللہ تعالی کی معیّت خاصہ(ساتھ،نصرت،اوراعانت)حاصل کرنے کے ذرائع 284
اللہ تعالی کی معیت خاصہ(ساتھ)کامطلب 284
18۔کرامات اولیاء اللہ 295
اولیاءاللہ کی شناخت 295
اولیاءاللہ کی تغظیم وتوقیر کے آداب 296
کرامت کامعنی 297
کرامت غیر اختیاری فعل ہے 298
کرامات کی حقانیت 298
اولیاءاللہ کے اختیارات 298
اولیاءاللہ مکلف ہیں 299
ایک باطل نظریہ 299
اولیاءاللہ کاایک سے زائد مقامات پرموجود ہونا 299
اولیاءاللہ کی چند کرامات 300
لاٹھیاں چراغ بن گئیں 300
چھ ماہ لاش محفوظ رہی 301
بددعاقبول ہوئی 302
آگ گلزار بن گئی 303
پیالے نے تسبیح کی 304
زہر بے اثر ہوگیا 304
لاش اوپر اٹھالی گئی 304
ولی اللہ پرجھوٹی تہمت کی سزا 304
بینائی لوٹ آئی 306
حد نگاہ تک قبر کاوسیع ہونا 306
وضو کے وقت اعضاءکادرست ہونا 306
گھوڑا دوبارہ زندہ ہوگیا 306
شیرڈرگیا 310
نظرسے اوجھل 311
ایک کلوسونا مل گیا 312
مدرسے کوریلوے اسٹیشن اورسڑک کاحصول 312
19۔محاسن قرآن کریم 314
قرآن مجید کے نازل کرن کی ضرورت 315
یہ کیسی عقیدت ہے 317
قرآن مجید پڑھنے کی فضیلت 320
قرآن مجید کاسفارش کرنا 321
ماہر قرآن کی فضیلت 322
قرآن سیکھنے اورسکھانے کی فضیلت 322
سورۃ البقرہ کی فضیلت 325
20۔آداب تلاوت 326
خوش آوازی کے ساتھ قرآن پڑھنا 326
تعوذپڑھنا 326
تلاوت کے ساتھ عمل ضروری ہے 326
مومنوں پرتاثیر قرآن 327
کافروں کاقرآن سے تاثر 329
پہاڑوں پرقرآن کی تاثیر 330
حضرت عمر پرقرآن کی تاثیر 331
طفیل بن عمروالدوسی پر قرآن کی تاثیر 332
قرآن کی حیرت انگیز تاثیر 333
شیاطین اورجنات پرآیت الکرسی کی تاثر 333
21۔بہتان ایک سنگین جرم ہے 337
بہتان کیا ہے 337
بہتان باندھنے کی آخرت میں سزا 338
سب سے افضل اسلام 338
مسلمان کون 339
اپنی زبان کی برائی سے اللہ کی پناہ مانگنا 339
رسول کریم صلی اللہ علیہ وسلم کامسلمان مردوں سے بہتان ناباندھنے کی بیعت لینا 339
اپنی زبان کی حفاظت دراصل اپنی عزت کی حفاظت ہے 340
تجسّس اورٹوہ لگانا منع ہے 341
بدگمانی سے بچتے رہوکیونکہ بدگمانی سب سے بڑا جھوٹ ہے 341
22۔سیرت ابراہیم علیہ السلام کا منفرد انداز میں کائنات پرغوروفکر 348
ملکوت کامفہوم 350
انبیاءمعصوم ہوتے ہیں 351
سیدنا ابراہیم کاکائناتی مطالعہ 352
بچہ کے تعلیمی مراکز(مگر انبیاءخاص ہوتے ہیں) 354
خلاصہ گفتگو 358

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
13.4 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam احکام ومسائل بدعت دار الافتاء درود روح طہارت علماء قرض معاملات نماز

قرآن وحدیث کی روشنی میں احکام ومسائل ۔جلد 2

قرآن وحدیث کی روشنی میں احکام ومسائل ۔جلد 2

 

مصنف : عبد المنان نور پوری

 

صفحات: 866

 

فضیلۃ الشیخ  حافظ عبدالمنان نور پوری  حفظہ اللہ  تعالی کی شخصیت محتاج تعارف نہیں ۔آپ زہدو ورع اور علم و فضل کی جامعیت کے اعتبار سے اپنے اقران و اماثل میں ممتاز ہیں۔اللہ تعالی نے جہاں آپ کو علم و فضل کے دروہ عُلیا پر فائز کیا ہے ،وہاں آپ کو عمل و تقویٰ کی خوبیوں اور اخلاق و کردار کی رفعتوں سے بھی نوازا ہے ۔علاوہ ازیں اوائل عمر ہی سے مسند تدریس پر جلوہ افروز ہونے کی وجہ سے آپ کو علوم و فنون میں بھی جامعیت یعنی معقول اور منقول دونوں علوم میں یکساں عبور اور دسترس حاصل ہے ۔تدریسی و تحقیق ذوق ،خلوص وللّٰہیت اور مطالعہ  کی وسعت گہرائی کی وجہ سے آپ کے اندر جو علمی رسوخ ،محدثانہ فقاہت اور استدلال و استنباط کی قوت پائی جاتی ہے ،اس نے آپ کو مرجع خلائق بنایا ہوا ہے۔چنانچہ عوام ہی نہیں خواص بھی،ان پڑھ ہی نہیں علماء فضلاء بھی ،اصحاب منبر و محراب ہی نہیں الہ تحقیق و اہل فتویٰ بھی مسائل کی تحقیق کے لیے آپ کی طرف رجوع  کرتےہیں اور آپ  تدریسی و تصنیفی مصروفیات کے با وصف سب کو اپنے علم کے چشمہ صافی سے سیراب فرماتے ہیں ۔جزاہ اللہ عن الاسلام والمسلمین خیر الجزاء۔
زیر نظر کتاب انہی سینکڑوں سوالات کے جوابات پر مستمل ہے جو ملک کے اطراف وجوانب سے بذریعہ خطوط آپ سے کیے گئے ۔اس میں عقائد سے لے کر زندگی کے تمام معاملات تک کے مسائل شامل ہیں ۔ہر سوال کا جواب قرآن وحدیث کی روشنی میں دیا گیا ہے جس سے فاضل مؤلف کے قرآن و حدیث پر عبور ،نصوص کے استخصا ر ،تفقہ و استنباط کے ملکہ اور قوت استدلال کا اندازہ کیا جا سکتا ہے ۔
یوں شرعی احکام و مسائل پر مشتمل یہ کتاب رہنمائے زندگی بھی ہے اور علوم و معارف کا خزینہ بھی،حکمت و دانش کا مرقع بھی ہے اور اسرار و حکم کا گنجینہ بھی ،فکر و نظر کا گلدستہ بھی ہے اور قدیم و جدید کا حسین امتزاج  بھی۔اس میں مفسرانہ نکتے بھی ہیں اور محدثانہ شان بھی ،فقیہانہ استنباط و طرز استدلال بھی ہے اور متکلمانہ انداز بھی ۔عوام کے لیے بھی ایک نہایت مفید کتاب اور علماء و طلبائے علوم دینیہ کے لیے بھی ایک گوہر نایاب ،معیاری کتابت و طباعت اور خوبصورت جلدان سب پر مستزاد۔گویا پیکر حسن کو لباس جمیل سے آراستہ کر کے اس کے قامت کی زیبائی کو اور رؤئے آبدار کی رعنائی کو خوب سے خوب تر کر دیا گیا ہے ۔جس پر اصحاب المکتبۃ الکریمیۃ بھی مبارک باد کے مستحق اور تحسین و آفرین کے سزاوار ہیں ۔   ایں کار از تو آید و مرواں چنیں کنند
 

عناوین صفحہ نمبر
مقدمہ از حافظ عبدالمنان نور پوری حفظہ اللہ 43
عرض مرتب 44
عرض ناشر 45
1۔ کتاب العقائد …….. عقائد کا بیان
اللہ تعالیٰ کو اللہ میاں کہنا؟ 47
اللہ تعالیٰ کو خدا کہنا 48
خدا کہاں سے آیا؟ 48
خدا کیسے دیکھتا ہے؟ 48
خدا نے یہ دنیا کیسے بنائی؟ 48
خدا ہماری دنیا میں کیوں آیا؟ 48
ایمان کی شاخیں 80
کیا رسول اللہ ﷺ نے اللہ تعالیٰ کو دیکھا ہے؟ 84
کیا فرشتے نوری مخلوق ہیں؟ 86
کیافرشتے انسانوں سے افضل ہیں؟ 87
ہدایت اور گمراہی اللہ کے اختیار میں ہیں تو انسان قصور وار کیوں؟ 87
جاہلیت کفر و شرک بدعت کیا ہے؟ 88
یارسول اللہ ﷺ کہنے میں کیا شرک ہے؟ 89
عقیدہ کےمتعلق دس والات کے جوابات:……. (1) کیا موجودہ دور کے فرقے کافر و مشرک ہیں؟ (2) کیا یاعلی مدد کہنے والا مشرک و کافر ہے؟(3) کیا موجودہ فرقوں میں صحیح العقیدہ لوگ بھی ہیں؟(4) کیا درود نبی ﷺ پر پیش ہوتا ہے؟ (5)کیا قبر پر پڑھا جانے والا درود نبی ﷺ سنتے ہیں؟ 89
کفریہ اور شرکیہ واقعات والی کتابیں شائع کرنا 111
نزول حضرت عیسیٰ ؑ کے متعلق دس سوالوں کے جوابات 113
قبر کا عذاب زمینی قبر میں 120
قبر میں عذاب جسم و روح دونوں کو ہوتا ہے 121
انبیاء کرام کی برزخی زندگی 121
بغیر حساب  کے جنت میں لے جانے والے اعمال 122
کیا قرآن کی قسم کھائی جاسکتی ہے 123
کیا کفر دون کفر حدیث ہے 123
مشرک مرتے وقت کلمہ پڑھے تو کیا جنت میں جائے گا؟ 123
جو صرف جمعہ پڑھے اور کوئی نماز نہ پڑھے تو کیا وہ کافر ہے؟ 124
تمیمہ کا بیان 124
بیرون ملک جانے کے لیے اپنے آپ کو قادیانی ظاہر کرنا 125
جادو کا علاج جادو سے کرنا 126
جادو کا علاج قرآن و حدیث میں 127
جادو اور نظر کی حقیقت 128
آسیب کیا ہے؟ 129
کیا جنوں کو قابو کیا جاسکتا ہے؟ 130
نجومی کا حکم 132
کیا ہر نبی کا حوض ہوگا؟ 132
ظہورمہدی کے بارے میں وضاحت 132
کیا جمہوریت شرک و کفر ہے 136
علم غیب کی تعریف کیا ہے؟ 137
2۔ کتاب الطھارۃ …….. طہارت کے مسائل
غسل کا بیان
کیا بغیر وضوء قرآن پڑھنا۔ ذکر کرنا درست ہے؟ 138
’’نہ چھوئے قرآن کو مگر پاک‘‘ والی روایت حسن صحیح ہے 138
کیا نجاست والے پانی کو استعمال کرنا جائز ہے؟ 145
جس شخص کو مسلسل پیشاب کے قطرے آئیں اس کا حکم 145
غسل یا وضوء کے بعد تولیہ استعمال کرنا 146
کیا کھڑے ہوکر ننگے غسل کرنا جائز ہے؟ 147
غسل کے فرائض و شرائط 147
کیا حائضہ عورت مردہ عورت کو غسل دے سکتی ہے؟ 147
میت کو غسل دینے سے غسل 148
لاعلمی سے غسل جنابت کا رُکن رہ گیا 148
غسل جنابت میں اگر سر پر چار اوک پانی ڈال دیا جائے 149
غسل جنابت میں تین لپ پانی سر پر ڈالنا 149
وضوء یا غسل کرتے ہوئے وہم میں مبتلا ہونا 149
بچے کی پیدائش پر چالیس دن پورے کرنا ضروری نہیں 150
مختلم لاعلمی میں نماز پڑھ لے تو کیا کرے؟ 151
رفع حاجت کے آداب
کھڑے ہوکر پیشاب کرنا 152
جیب میں قرآن پاک ہوتو بیت الخلاء نہ جائے 152
وضوء کا بیان
وضوء سے پہلے بسم اللہ پڑھنے والی حدیث 153
وضوء میں داڑھی اور انگلیوں کا خلال نہ کرنا 153
کانوں کے مسح کے لیے مسح رأس والا پانی کافی ہے 154
وضوء میں ترتیب کا خیال رکھنا چاہیے 154
جرابوں پر مسح کرنا جائز ہے 155
جرابوں پرمسح کرنے کی مدت 155
بغیر وضوء پہنی ہوئی جرابوں پر مسح کرنا 155
جرابوں پر مسح کرنےکے بعد اُتار کرنماز پڑھنا 156
جوتوں اور پھٹی جرابوں پرمسح کرنا 156
اِسباغ الوضوء سے کیا مراد ہے؟ 156
دوران وضوء خنصر سے پاؤں کی انگلیوں کا خلال 157
وضوء تورنےوالی چیزیں
سگریٹ پینے سے دوبارہ وضوء کرنا 157
کپڑا ٹخنوں سےنیچے لٹکانے سے وضوء دوبارہ کرنا 157
عورت وٍضوء کرنے کے بعد اپنے بچے کا استنجا کراتی ہے 158
آدمی کو ہوا خارج ہونے کی بیماری ہو تو کیا کرے؟ 158
3۔ کتاب الصلاۃ …….. نماز کےمسائل
نمازی کا لباس
ننگے سر آدمی جماعت کروا سکتا ہے 159
نماز پڑھتے ہوئے جوتا آگے رکھنے کا حکم 160
ٹخنوں سے نیچے کپڑا لٹکانے سے نماز قبول نہیں ہوتی 160
مساجد کا بیان
زکوٰۃ سے مسجد کا قرض اتارنا 161
ایک مسجد کی چیز دوسری مسجد میں یا کسی کے گھر استعمال کرنا 161
جس مسجد کی قبلہ والی دیوار کی طرف قبریں ہوں اس میں نماز پڑھنا 161
مرد کی فرض نماز گھر میں نہیں ہوتی 162
مسجد کے اوپر رہائش 162
حالات خراب ہونےکے اندیشہ سے الگ مسجد بنانا 162
نقش و نگار والے جائے نماز 163
مسجد کامحراب 163
مسجدکے چندہ سے امام صاحب کو تنخواہ دینا 163
مسجد میں ساز گھنٹی والی گھڑی لگانا 164
تحیۃ الوضوء اور تحیۃ المسجد کابیان 164
اوقات نماز
ظہر کی نماز کو گرمیوں میں ٹھنڈا کرنا 164
دو نمازوں کو جمع کرنا 165
اگر نماز قضاء ہوجائے تو پوری ادا کرنا 167
دوران تعلیم نماز کو وقت پرادا کرنا 167
سخت بھوک کےوقت پہلے کھانا 167
نیند کی شدت میں نماز پڑھنا 168
پریشانی کے وقت نماز پڑھنا 168
اذان و اقامت
اذان کہتے وقت کانوں میں انگلیاں رکھنا 169
اذان تہجد 169
اذان سے پہلے اور بعد میں درود 171
وقت سے پہلے اذان کہنا 171
بیٹھ کر اذان کہنا 173
وضوء کے بغیر اذان کہنا 173
اگر صبح کی اذان میں الصلوٰۃ خیر من النوم بھول جائیں 173
سترہ کا بیان
سترہ مستحب ہے 173
نمازی کے آگے سے گزرنا 176
نماز سےمتعلقہ دیگر احکام
ایک حدیث میں مکمل نماز 177
تکبیر تحریمہ فرض واجب یاسنت ہے 178
تعوذ بسم اللہ کو سراً پڑھنا 179
جہری نمازوں میں افتتاحی  دعا کو سرا پڑھنا 179
زبان کے ساتھ نیت کرنا 180
نماز کی حالت میں’’یااللہ رحم فرما‘‘ کہنا 180
نماز میں احسان 180
نماز میں اگر فرض چیز رہ جائے 180
تلاوت کرتے ہوئے نبی ﷺ کے نام کا آنا 181
کیا ہر رکعت میں تعوذ او ربسم اللہ پڑھی جائے گی 181
نماز کی حالت میں نگاہ 182
نماز کی حالت دروازہ کھولنا 184
قرآن مجید کو اٹک اٹک کر پڑھنا 185
زیرناف ہاتھ باندھنے والے روایت 185
نماز میں وضوء ٹوٹ جائے یا رکوع سجدہ رہ جائے 186
دوران نماز نیت کو بدلنا 187
اپنی زندگی کے روزے او رنمازوں کو ادا کرنا 187

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
19 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam احکام ومسائل اذان و اقامت بدعت بریلوی دار الافتاء روح طہارت علماء معاملات نماز وسیلہ وضو

قرآن وحدیث کی روشنی میں احکام ومسائل ۔جلد 1

قرآن وحدیث کی روشنی میں احکام ومسائل ۔جلد 1

 

مصنف : عبد المنان نور پوری

صفحات: 634

 

فضیلۃ الشیخ  حافظ عبدالمنان نور پوری  حفظہ اللہ  تعالی کی شخصیت محتاج تعارف نہیں ۔آپ زہدو ورع اور علم و فضل کی جامعیت کے اعتبار سے اپنے اقران و اماثل میں ممتاز ہیں۔اللہ تعالی نے جہاں آپ کو علم و فضل کے دروہ عُلیا پر فائز کیا ہے ،وہاں آپ کو عمل و تقویٰ کی خوبیوں اور اخلاق و کردار کی رفعتوں سے بھی نوازا ہے ۔علاوہ ازیں اوائل عمر ہی سے مسند تدریس پر جلوہ افروز ہونے کی وجہ سے آپ کو علوم و فنون میں بھی جامعیت یعنی معقول اور منقول دونوں علوم میں یکساں عبور اور دسترس حاصل ہے ۔تدریسی و تحقیق ذوق ،خلوص وللّٰہیت اور مطالعہ  کی وسعت گہرائی کی وجہ سے آپ کے اندر جو علمی رسوخ ،محدثانہ فقاہت اور استدلال و استنباط کی قوت پائی جاتی ہے ،اس نے آپ کو مرجع خلائق بنایا ہوا ہے۔چنانچہ عوام ہی نہیں خواص بھی،ان پڑھ ہی نہیں علماء فضلاء بھی ،اصحاب منبر و محراب ہی نہیں الہ تحقیق و اہل فتویٰ بھی مسائل کی تحقیق کے لیے آپ کی طرف رجوع  کرتےہیں اور آپ  تدریسی و تصنیفی مصروفیات کے با وصف سب کو اپنے علم کے چشمہ صافی سے سیراب فرماتے ہیں ۔جزاہ اللہ عن الاسلام والمسلمین خیر الجزاء۔
زیر نظر کتاب انہی سینکڑوں سوالات کے جوابات پر مستمل ہے جو ملک کے اطراف وجوانب سے بذریعہ خطوط آپ سے کیے گئے ۔اس میں عقائد سے لے کر زندگی کے تمام معاملات تک کے مسائل شامل ہیں ۔ہر سوال کا جواب قرآن وحدیث کی روشنی میں دیا گیا ہے جس سے فاضل مؤلف کے قرآن و حدیث پر عبور ،نصوص کے استخصا ر ،تفقہ و استنباط کے ملکہ اور قوت استدلال کا اندازہ کیا جا سکتا ہے ۔
یوں شرعی احکام و مسائل پر مشتمل یہ کتاب رہنمائے زندگی بھی ہے اور علوم و معارف کا خزینہ بھی،حکمت و دانش کا مرقع بھی ہے اور اسرار و حکم کا گنجینہ بھی ،فکر و نظر کا گلدستہ بھی ہے اور قدیم و جدید کا حسین امتزاج  بھی۔اس میں مفسرانہ نکتے بھی ہیں اور محدثانہ شان بھی ،فقیہانہ استنباط و طرز استدلال بھی ہے اور متکلمانہ انداز بھی ۔عوام کے لیے بھی ایک نہایت مفید کتاب اور علماء و طلبائے علوم دینیہ کے لیے بھی ایک گوہر نایاب ،معیاری کتابت و طباعت اور خوبصورت جلدان سب پر مستزاد۔گویا پیکر حسن کو لباس جمیل سے آراستہ کر کے اس کے قامت کی زیبائی کو اور رؤئے آبدار کی رعنائی کو خوب سے خوب تر کر دیا گیا ہے ۔جس پر اصحاب المکتبۃ الکریمیۃ بھی مبارک باد کے مستحق اور تحسین و آفرین کے سزاوار ہیں ۔   ایں کار از تو آید و مرواں چنیں کنند
 

عناوین صفحہ نمبر
مقدمہ از عبدالمنان نور پوری حفظہ اللہ تعالیٰ 41
عرض مرتب 42
عرٍض ناشر 43
1۔ کتاب العقائد …….. عقائد کابیان
اللہ تعالیٰ ہر چیز کو دیکھتا ہے 45
نبی ﷺ غیب نہیں جانتے 45
نیک کام کرنے کی ضرورت 46
اللہ خود ہی گمراہ کرتا ہے تو انسان کا کیا قصور ہے؟ 46
نبی ﷺ کی وفات کےبعد نبی ﷺ سے دعاکروانا 47
انبیاء ؑ کی حرمت کاوسیلہ دے کر دعا کرنا 48
نداء لغیراللہ شرک و بدعت ہےیا نہیں؟ 49
کیا اللہ تعالیٰ اپنی صفت کسی کو دیتا ہے 62
کیا نبی اکرم ﷺ قبر میں زندہ ہیں؟ 63
کیا نبی ﷺ ہرآدمی کی قبر میں آتے ہیں؟ 63
نبی کریم ﷺ کی قبر کے پاس سلام کا طریقہ 64
کیا ہرنیک و بد کی روح قبر میں لوٹائی جاتی ہے؟ 64
قبر میں عذاب روح اور جسم دونوں کو ہوتا ہے 65
عذاب قبر کی حیثیت 65
مردہ جوتوں کی آواز سنتا ہے 66
مردہ کو زندہ کرنا 67
سجدہ تعظیمی کیا ہے؟ 67
سجدہ تعظیمی جائز ہے؟ 67
تصوف کا لغوی اور اصطلاحی معنی 68
ابدال والی حدیث کی وضاحت 68
کیا شیعہ کافر ہیں؟ 68
بتوں والی آیات مسلمانوں پر چسپاں کرنا 69
مکہ مدینہ میں بریلوی کا داخلہ 69
شرک کرنے والے کو سلام کہنا 69
اگر مسلمان آدمی مرزائی ہوجائے تو؟ 69
ختم شریف کی وضاحت 69
ختم والی چیز کھانا 70
ایمان میں کمی و بیشی 71
جادو اور نظر بد کی وضاحت 71
کیانبی کریم ﷺ پر جادو ہوا تھا؟ 72
جادو کو ختم کرنا 73
جن اللہ تعالیٰ کی مخلوق ہیں 73
زمین کی ذاتی حق ملکیت اور اسلام 74
جو اللہ کو منظور ہوگا کہنا درست ہے؟ 78
2۔ کتاب الطہارۃ …….. طہارت کے مسائل
وضوء کا بیان
وضوء کے فرائض 79
داڑھی کا خلال 80
وضوء میں پاؤں کا مسح یاغسل 81
پاؤں کی انگلیوں کا خلال 85
جرابوں پر مسح 85
مسواک کرنے سے 70 نمازوں کاثواب 86
طواف کے لیے وضوء 86
اعضائے وضو کو تین سے کم یا زیادہ دفعہ دھونا 86
ایک وضوء سے کئی نمازیں یا عبادتیں 86
وضوء توڑنے والی چیزیں
جسم سے خون نکلے یاکپڑوں پرلگ جائے تو؟ 87
میت اٹھانے سے وضوء 87
حالت وضوء میں کپڑاٹخنوں سےنیچے ہونا 88
ذکریعنی شرمگاہ کو چھونا 89
پیشاب کےقطروں کا مسلسل آنا 90
ہوا خارج ہونے سے وضو کی حکمت 91
آگ پر پکی چیز کھانے سے وضوء 91
اونٹ کے گوشت سےوضوء 91
نماز میں وضوء کاٹوٹنا 92
غسل کا بیان
غسل کےفرائض اور طریقہ 92
حائضہ کا طواف 93
جمعہ کے دن کا غسل 93
جنبی کا تیمم 94
شرمگاہوں کے ملنے سے غسل 94
نومسلم کا غسل 94
جنبی مرد یا حائضہ عورت کا قرآن پڑھنا اور چھونا 95
نفاس کے خون کا غسل 96
رفع حاجت کے آداب
کھڑے ہوکر پیشاب کرنا 97
جیب سے قرآنی آیات نکال کر پیشاب کرنا 97
3۔ کتاب الصلوٰۃ …….. نماز کے مسائل
نماز ی کا لباس
ننگےسر نماز 98
ننگے سر امامت 98
سر پررومال یا ٹوپی رکھنا 98
نماز میں ٹخنوں سےنیچے کپڑا لٹکانا 99
مساجد کابیان
نقش و نگار والی صفیں یا قالین 99
چپس والے فرش پرنماز 99
قبرستان میں نماز 100
مسجد کے مینار بنانا 100
مسجد کو ایک جگہ سےدوسری جگہ تبدیل کرنا 101
نوافل گھر میں ادا کرنا 101
گھر سے دور مسجد میں نماز 102
دوکان میں نماز 102
لکڑی کی جائے نماز 103
مریض کی جائے نماز 103
تحیۃ المسجد کا حکم 103
بوجہ اختلاف دوسری مسجد بنانا 106
مسجدمیں اعلانات کرنا 107
مسجدکی تعمیر میں زکوٰۃ لگانا 107
مسجد کاغسل خانہ 107
مسجد میں’’اگر بتی‘‘ لگانا 108
بیٹے کے نام پرمسجد کانام 108
اوقات نماز
نمازوں کی ترتیب اور سنتوں کی قضاء 108
طلوع و غروب آفتاب کےوقت نماز پڑھنا 110
بارش میں نمازوں کو جمع کرنا 112
خوف و سفر کے بغیر نماز جمع کرنا 112
زوال مثل اوّل معلوم کرنا اور صلوٰۃ عصر کاوقت 114
اذان و اقامت
تہجد کی اذان 115
اذان سے قبل الصلوٰۃ والسلام کہنا 117
اذان کےوقت کتے کاآوازنکالنا 119
اکیلے آدمی کا اذان و اقامت کہنا 119
جفت اذان اور طاق اقامت 120
الصلوٰۃ خیر من النوم کہاں پڑھا جائے؟ 120
دوہری اذان اور دوہری اقامت 120
پانچوں اذانیں دوہری کہنا 120
اذان کے بعد وسیلہ کی دعا 120
دوسری جماعت کے لیے اذان و اقامت 121
مؤذن کا اذان کے بعد مسجد سےنکلنا 121
اذان کا جواب 121
اقامھا اللہ و ادامھا والی روایت 121
بچے کے کان میں اذان و اقامت 121

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
15 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam اسلام پاکستان حج روح طہارت علماء قیامت و آخرت محدثین نبوت

قیامت کی نشانیاں صحیح احادیث کی روشنی میں

قیامت کی نشانیاں صحیح احادیث کی روشنی میں

 

مصنف : حافظ مبشر حسین لاہوری

 

صفحات: 427

 

وقوع  قیامت کا  عقیدہ اسلام کےبنیادی  عقائد میں سےہے اور ایک    مسلمان کے  ایمان کا   حصہ ہے ۔  قیامت آثار  قیامت کو  نبی کریم  ﷺ نے  احادیث میں  وضاحت کےساتھ بیان کیا ہے  جیساکہ احادیث میں  ہے کہ قیامت اس وقت تک قائم نہ ہو گی جب تک عیسیٰ بن مریم ﷤نازل نہ ہوں گے ۔ وہ دجال اورخنزیر کو قتل کریں گے ۔ صلیب کو توڑیں گے۔ مال عام ہو جائے گا اور جزیہ کو ساقط کر دیں گے اور اسلام کے علاوہ کوئی اور دین قبول نہ کیا جائے گااسے زمانہ میں اللہ تعالیٰ اسلام کے سوا سب ادیان کو ختم کر دے گا اور سجدہ صرف اللہ وحدہ کے لیے ہوگا۔ اس سے واضح ہوتا ہے کہ عیسٰی ﷤کے زمانہ میں تمام روئے زمین پر اسلام کی حکمرانی ہوگی اور اس کے علاوہ کوئی دین باقی نہ رہے گا۔قیامت پر ایمان ویقین سےانسان کی دینوی زندگی خوشگوار ہوجاتی ہے اور آخرت سنور جاتی ہے۔ اسی لیے اسلام میں ایمان بالآخرۃ اور روز قیامت پر ایمان لانا فرض ہےاوراس کےبغیر بندہ کاایمان صحیح نہیں ہوسکتا۔علامات قیامت کے حوالے  سے   ائمہ محدثین نے  کتبِ احادیث میں     ابواب بندی بھی کی  ہے اور  بعض  اہل علم نے    اس موضوع پر  کتب  لکھی ہیں ۔ زیر نظر کتاب’’ قیامت کی نشانیاں صحیح احادیث کی روشنی میں ‘‘ڈاکٹر حافظ مبشر حسین  لاہور ی ﷾ (فاضل جامعۃ الدعوۃ الاسلامیۃ،مرید کے ،سابق  ریسرچ سکالرمجلس التحقیق الاسلامی ،لاہور) کی اہم تصنیف ہے جس میں انہوں قربِ قیامت  کی نبوی پیش گوئیوں(شخصیات، حیوانات، ظہور مہدی ونزول مسیح،یاجوج ماجوج، وغیرہ  کے  متعلقہ پیش گوئیاں) کوقرآن واحادیث کی  روشنی میں  بیان کرنے ساتھ ساتھ   پیش گوئیوں  کی تعبیر وتعیین کےحوالےسے بعض معاصر مفکرین کی آراء کاتنقیدہ جائزہ اور صحیح نکتہ نظر بھی پیش کیا ہے ۔اس کتاب کی تیاری میں  حافظ عبد الرحمن مدنی ﷾(مدیر اعلی ماہنامہ محدث،لاہور) کی  کوشش سے مجلس التحقیق الاسلامی کے  زیر اہتمام  منعقد ہونے والے  علمی مذکرہ  (مؤرخہ 26جنوری2003ء) کی  رپورٹ بھی شاملِ اشاعت ہے  جس میں جید علماء کرام نے  شریک ہوکر اپنی علمی آراء پیش کیں۔ کتاب کے  فاضل مؤلف اس کتاب کے علاوہ بھی کئی کتب کے  مصنف ومترجم ہیں  ۔اور تقریبا عرصہ 15 سال  سے ادارہ تحقیقات اسلامی  ،اسلام آباد میں  بطور  ریسرچ سکالر    خدمات  انجام دےرہے ہیں  ۔ اللہ تعالیٰ اشاعتِ دین کےلیے  ان کی  جہود کوشرف ِقبولیت سے نوازے  او راس  کتاب کو  لوگوں کے  عقائد کی اصلاح کا ذریعہ بنائے  (آمین) پاکستان میں یہ کتاب  ’’پیش گوئیوں کی حقیقت اور دورِ حاضرمیں ان کی تعبیر کا صحیح منہج‘‘کے نام سے شائع ہوئی ہے ۔ بعد ازاں  فرید بک ڈپو ،دہلی نےاسے’’قیامت کی نشانیاں صحیح احادیث کی روشنی میں ‘‘ کے نام سے شائع کیا ہے ۔

 

عناوین صفحہ نمبر
پیش لفظ 11
مقدمہ 12
عالم غیب 13
عالم شہادت 14
عالم شہادت میں عالم غیب کی جھلک 15
انسانی معلومات کے ذرائع اور وحی الہٰی 16
حواس خمسہ کی حدود و قیود 17
انسانی حواس جن چیزوں کے تدارک سے عاجز ہوں کیا ان کا انکار درست ہے ؟ 19
ایمان کیا ہے ؟ 23
ایمان بالآخرت 24
قیامت برحق ہے 25
قیامت کا ایک منظر 27
قیامت قریب ہے 28
ایک اشکال کا جواب 30
وقوع قیامت کا علم صرف اللہ تعالیٰ کے پاس ہے 34
منکرین قیامت کی سزا 36
قیامت کے مختلف نام 37
قیامت کی حقیقت 41
قیامت کی نشانیاں ،کیوں؟ 42
قیامت کی علامات صغری و کبری 43
کیا خبر واحد حجت نہیں ؟ 45
خبر واحد 46
خبر واحد کی حجیت قرآن مجید کی روشنی میں 50
خبر واحد کی حجیت احادیث کی روشنی میں 52
عقائد میں بھی خبر واحد حجت ہے 54
لسان نبوت سے وجود دجال کی خبر واحد کی تائید 55
خبر واحد اور ائمہ سلف 55
خبر واحد سے انکار 57
باب: 1
قیامت کی چھوٹی نشانیاں 58
خاتم النبیین کا ظہور 59
انشقاق القمر 63
نبی ؑ کی وفات 65
امت مسلمہ کا ظہور 68
ہرگھر میں اسلام داخل ہو گا 70
لسان نبوت سے وعدہ 72
ہر طرف امن وامان ہو گا 73
ہر طرف امن و امان ہو گا 73
فتنوں کا ظہور 77
حضرت عمر﷜فتنوں کے درمیان رکاوٹ ہیں 79
فتنے مشرق سے ظاہر ہوں گے 81
سالم بن عبد اللہ بن عمر﷜ کا فیصلہ 84
قتل عام ہو گا 85
شہادت عثمان بن عفان 87
جنگ جمل 90
جنگ صفین 95
خوارج کا ظہور 97
جھوٹے نبیوں اور دجالوں کا ظہور 102
مال و دولت کی فراوانی 107
بیت المقدس کی فتح 112
طاعون کی وبا 114
ارض حجاز سے آگ کا روشن ہونا 116
ترکوں سے جنگ 118
امانت مفقود اور خیانت بھر پور ہو گی 125
جابر حکمران 129
فحاشی پھیل جائے گی 132
قرآن مجید کا فیصلہ 133
عورتیں کپڑے پہننے کے باوجود ننگی ہوں گی 134
علم کا خاتمہ او رجہالت میں اضافہ 136
زنا کاری عام ہو گی 139
زنا کاری کے سدباب کے لیے کچھ تجاویز 141
شراب حلال سمجھی جائے گی 142
گانا بجانا رواج پا جائے گا 144
رشتہ داری اور ہمسائیگی 146
لوگ اجنبی بن جائیں گے 148
جھوٹ بکثرت بولا جائے گا 149
جھوٹی گواہی دی جائے گی 151
بدعملی پھیل جائے گی 152
لوگ بخیل ہو جائیں گے 155
امت مسلمہ شرک میں مبتلا 156
مساجد میں زیب و زینت 163
سود اور حرام مال 165
کاروبار میں عورتیں 167
سیاہ خضاب استعمال 169
سیاہ خضاب کی ممانعت 170
قریش کا خاتمہ ہو جائے گا 171
کفار کی تقلید 173
زلزلے بکثرت ہوں گے 176
صورتیں مسخ ہوں گی اور لوگ زمین میں دھنسائے جائیں گے 178
دل کا دورہ بکثرت ہو گا 173
اسلام صرف’’معروف ‘‘ لوگوں کو کیاجائے گا 184
قرآن کو بھیک مانگنے کا ذریعہ بنایا جائےگا 187
دعا اور طہارت میں زیادتی 190
’’نااہل‘‘ عہدے سنبھال لیں گے 192
غریب امیر ہو جائیں گے 196
فلک بوس عمارتیں میں مقابلے بازی ہو گی 199
قرطاس وقلم کا ظہور 201
عقل پرست استاد بن جائیں گے 203
زمانہ قریب ہو جائے گا 205
بازار قریب قریب ہوں گے 208
لونڈی اپنے مالک کو جنم دے گی 209
دنیا سے محبت اور موت سے نفرت ہو گی 211
نیک لوگ معدوم ہو جائیں گے 213
دین الہٰی ہو جائے گا 216
لوگ بدل جائیں گے 219
بارش بکثرت ہو گی مگر خیمے محفوظ رہیں گے 221
بارش بکثرت مگر پیداوار نہیں ہو گی 222
قسطنطنیہ کی فتح 224
روما فتح ہو گا 227
کفار مسلمانوں پر ٹوٹ پڑیں گے 229
ہر گھر میں فتنہ داخل ہوجائے گا 231
عیسائیوں سے مل کر مسلمان تیسرے ملک سے جنگ لڑیں گے اور مسلمانوں سے عیسائیوں کی جنگ 233
رومی کثرت تعداد سے بڑھ جائیں گے 239
دریائے فرات سے سونے کا پہاڑ 241
مرد قلیل اور عورتیں کثیر 244
مصر ،شام اور عراق اپنے پیمانے اورخزانے رو ک لیں گے 246
موت کی تمنا کی جائے گی 248
ایک قحطانی حکمران ہو گا 255
ایک جھجاہ نامی بادشاہ ہو گا 257
حیوانات  و جمادات انسان سے ہم کالمی 258
شجر و حجر پکار اٹھیں گے 261
مؤمن کا ہر خواب سچا ثابت ہو گا 262
عرب کے دشت و صحرا باغات میں بدل جائیں گے 264
مدینہ ویران ہو جائے گا 267
باب : 2
قیامت کی بڑی نشانیاں 272
قیامت کی دس بڑی بڑی نشانیاں 273
قیامت کی علامات کبری کا تسلسل 274
امام مہدی کا ظہور 275
خروج دجال 286
مسیح دجال بڑے غصے سے خروج کرے گا 288
دجال کی شکل و صورت 289
کیا دجال آدمی ہو گا ؟ 293
کیادجال زندہ ہے ؟ 294
کیا نبی کریم ﷺ نے دجال کو دیکھا تھا؟ 298
دجال کی شعبدہ بازیاں 299
دجال دنیا کا سب سے بڑا  فتنا 303
دجال کی جنت اور جہنم 307
دجال کے بچنے کے لیے پہاڑوں سے پناہ 309
دجال مشرق کی طرف خراساں سے نکلے گا 309
جن لوگوں نے پسندیدہ لیڈر دجال 311
دجال خدانی کا دعویٰ کرے گا 313
دجال سے بچاؤ کے طریقے 316
دجال کی بے بسی کا نظارہ 319
اپنے ماتھے پر لکھا کافر نہ مٹا سکے گا 319
آنکھیں  دونوں عیب دار ہوں گی 319
مکہ اور مدینہ میں داخل نہ ہو سکے گا 320
قتل نہیں کر پائے گا 321
دجال سچے اور مخلص مسلمان کو نقصان نہ پہنچا سکے گا 321
دجال کے فتنے سے پناہ مانگنی چاہیے 322
بارگاہ الہٰی میں دجال کی حیثیت 324
دجال کتنے دن زمین پر دندنا پھرے گا 324
دجال مکہ اور مدینہ میں داخل نہیں ہو سکتا 326
دجال کے لیے سب سے سخت لوگ کون سے ثابت ہوں گے؟ 328
دجال بیت اللہ اور بیت المقدس میں داخل نہیں ہوسکتا 329
دجال اوراس  کے لشکر کی ہلاکت 329
دجال ملعون کی جائے قتل 333
ابن صیاد دجال تھا؟ 340
حافظ ابن کثیر کا فیصلہ 346
شیخ الاسلام ابن تیمیہ  کا فیصلہ 347
ابن صیاد کاہن تھا 347
ابن صیاد دجال کےبارے میں معلومات رکھتا تھا 349
ابن صیاد’’حرہ‘‘ کےدن گم ہو گیا 350
کیا ابن صیاد نے تائب ہو کر اسلام قبول کر لیا تھا؟ 350
نزول عیسیٰ قرآن کی روشنی میں 353
نزول مسیح حدیث کی روشنی میں 354
صفت و مقام نزول عیسیٰ 355
وقت نزول عیسیٰ 356
علامات عیسیٰ 357
عیسیٰ جہاد کے ذریعے دین اسلام غالب کر دیں گے 359
حضرت عیسیٰ حج اورعمرہ کریں گے 360
حضرت عیسیٰ کتنی دیر زمین پر قیام فرمائیں گے 364
عیسیٰ کی وفات اور تجہیز و تکفین 365
یاجوج وماجوج قرآن مجید کی روشنی میں 370
یاجوج وماجوج حدیث کی روشنی میں 371
یاجوج وماجوج کی مصروفیت 372
یاجوج وماجوج کا خروج 373
یاجوج وماجوج کا فتنہ فساد 374
دیوار ذوالقرنین میں سوراخ 376
یاجوج وماجوج کی شکل وصورت 376
یاجوج وماجوج کی کثرت 377
یاجوج وماجوج کی ہلاکت 378
امن وامان کا سنہری دور 383
مشرق ، مغرب اورجزیرہ العرب ….. 386
ہر طرف دھواں چھا جائے گا 390
احادیث کی روشنی میں 390
سورج مغرب سے طلوع ہو گا 396
احادیث کی روشنی میں 396
دابۃ الارض 403
احادیث کی روشنی میں 403
ہر بندہ مومن کی روح قبض کر لی جائے گی 406
بیت اللہ کی حرمت پامال کر دی جائے گی 410
زمین پر صرف بدترین لوگ باقی رہ جائیں گے 414
خوفناک آگ ظاہر ہو گی 417
جائے خروج 417
آگ لوگوں کو کس طرح ہانکے گی ؟ 418
ارض محشر 420

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
7 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam اخلاق و آداب اعمال زبان سنت سیرت النبی ﷺ طہارت معاملات نماز

پیارے رسول ﷺ کی پیاری وصیتیں

پیارے رسول ﷺ کی پیاری وصیتیں

 

مصنف : ناصر الدین البانی

 

صفحات: 390

 

ویسے تو نبی کریم ﷺ کی تمام باتیں اور وصیتیں اپنے موقع محل میں نہایت ہی اہمیت کی حامل ہیں او رآ پ کے ارشادات وفرمودات وہ مشعل ہدایت ہیں جن کی روشنی میں انسان کو اپنی فلاح وبہبود کی منزلیں نظر آتی ہیں ۔ آپ کی ہر پند ونصیحت میں اسرار وحکم کے سمندر موجزن ہیں۔ آپ کاکوئی بھی ارشاد حکمت ومصلحت سے خالی نہیں۔ اور کیوں نہ ہو جب کہ آپ ﷺ کی مقدس زبان وحی کی ترجمان ہے ۔ آپ کی زبان مبارک سے وہی باتیں نکلتی ہیں جو اللہ چاہتا ہے۔اس لیے آپﷺ کا ہر قول اور فرمان انسان کےلیے متاع دنیا وآخرت ہے ۔نبی کریم ﷺ کسی تجربہ او رمشاورت کے ساتھ نہیں بلکہ وحیِ الٰہی کی بنیاد پر مخاطبین کووصیت کیا کرتے تھے ۔یہ وصیتیں صرف مخصوص افراد ومخاطبین ہی کے لیے نہیں بیان کی گئیں بلکہ ان کےذریعے سے پوری امت کو خطاب کیا گیا ہے۔ان وصیتوں میں مخاطبین کی دنیا وآخرت دونوں کی سربلندی اور فلاح ونجات کاسامان موجود ہے ۔جو یقیناً تاقیامت آنے والوں کےلیے سر چشمہ ہدایت ونجات ہے ۔اور ان وصیتوں کی ایک نمایاں خوبی الفاظ میں اختصار اورمعانی ومطالب کی وسعت وجامعیت ہے جو نبی کریم ﷺ کے معجزۂ الٰہیہ’’جوامع الکلم‘‘ کا نتیجہ ہے۔ زیر نظر کتاب ’’پیارے رسول ﷺکی پیاری وصیتیں‘‘ محدث العصر علامہ ناصرالدین البانی ﷫ کی کتب سے ماخوذ شدہ ہیں ۔ اس کتاب میں احادیث وسنن سے وصایا نبویہ پر مشتمل احادیث کو جمع کیا گیا ہے۔ان نبوی وصیتوں کا سب سے امتیازی پہلو یہ ہے کہ ان میں اختصار کے ساتھ انتہائی مشفقانہ انداز میں امت مسلمہ کےلیے دنیوی واُخروی فوز وفلاح کے کامیاب اصول اور زریں قوانین بیان کیے گئے ہیں جن پر عمل پیرہو کر ہر مسلمان اپنی دنیوی واخروی نجات کا سامان جمع کرسکتا ہے۔ ان وصیتوں اور نصیحتوں میں عقائد واعمال کےعلاوہ زندگی کے بیشتر معاملات کی اصلاح کے لیے ہدایت وتوجیہات موجود ہیں ۔ جو بلا شبہ ایک مسلمان کےلیے سرمایہ حیات ہیں ۔ان احادیث کو جمع وانتخاب میں محدث العصر علامہ ناصر الدین البانی ﷫ کی تحقیقات وتخریجات پراعتماد کرتے ہوئے صرف معتبر ومستند احادیث ہی کو اس کتاب میں شامل کیاگیا ہے ۔علاوہ ازیں اس کتاب کی ایک نمایاں خوبی یہ ہے کہ تمام احادیث کے ساتھ کبار علمائے امت کی تشریحات کاذکر کا بھی خصوصی التزام کیاگیا ہے ۔ تاکہ نصوص شرعیہ کامعنی ومفہوم سمجھنے میں آسانی ہو اور اس سلسلے میں کسی قسم کی لغزش کا امکان نہ رہے ۔اس اہم کتاب کواردو قالب میں ڈھالنے کا کام حافظ محمد عمر ﷾ (فاضل جامعہ سلفیہ،فیصل آباد ) نے انجام دیا ہے ۔ اللہ تعالیٰ مصنف ،مترجم وناشرین کی اس کاوش کو قبول فرمائے اور اسے عامۃ المسلمین کےلیےباعث ہدایت واصلاح بنائے ۔آمین

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض ناشر 11
حرف اول 13
کتاب الایمان 15
سب سے پسندیدہ اعمال 17
استقامت کی فضیلت 22
تقدیر پر ایمان 26
حسب و نسب پر فخر کرنے کی ممانعت 34
اخلاص 39
عبادت کا معیار 43
ذات الہٰی میں غور و خوض کی ممانعت 49
مبالغہ آرائی شرک کا ذریعہ ہے 55
قبروں کو سجدہ گاہ بنانے کی ممانعت 59
پوشیدہ شرک سےاجتناب 64
دس کاموں کی وصیت 69
عبادات 75
عبادت میں میانہ روی مستحب ہے 77
مسنون نماز سیکھنا واجب ہے 85
اول وقت میں نماز کی فضیلت 89
امام کو آسانی اپنانی چاہیے 95
نفلی نماز گھر میں مستحب ہے 99
نماز چاشت اور وتر کی وصیت 104
قیام اللیل کی ترغیب اور اس کے فوائد 108
جمعہ کےروز طہارت کا اہتمام 117
دوران نماز چند کاموں کی ممانعت 121
رکوع اور سجدے میں تلاوت قرآن کی ممانعت 124
نفلی روزہ مستحب ہے 128
روزے میں وصال 135
اطمینان کےساتھ مقام عرفہ سے واپسی 139
جمرات کو کنکریاں مارنا 142
دعائیں اور اذکار 145
نبی اکرمﷺ کی دعا 147
گناہوں کو مٹانےوالےاعمال 150
اللہ ہی سےمدد مانگنا اوراسی پر توکل کرنا 154
بلندی پرچڑھتے ہوئے ’’اللہ اکبر‘‘ کہنا 156
جنت کا خزانہ 159
چھوٹا عمل … بڑا اجر 164
زبان ہمیشہ اللہ کے ذکر سےتروتازہ رکھو 166
توبہ اور استغفار کی ترغیب 170
موت کو کثرت سے یاد کرو 172
موت سےڈرو 174
آداب ، نیکی اور صلہ رحمی کا بیان 179
حیا کی ترغیب 181
سلام عام کرنے اورکھانا کھلانے کی ترغیب 184
پاکیزہ مال کا صدقہ 187
پڑوسی سے حسن سلوک 191
ہمسائے کے ساتھ نیکی کی صورتیں 194
راستے کے آداب 197
مومن آدمی سے دوستی رکھو 200
غصہ ختم کرنے کی وصیت 202
زبان کی حفاظت کرو 206
فضول کاموں کو چھوڑنا 209
بال سنوارنے کی وصیت 214
نکاح کی ترغیب 216
کتاب الزھد والرقائق 219
کتاب اللہ کومضبوطی سے پکڑنا اور رسول اللہﷺ کی آل کے ساتھ بھلائی سے پیش آنا 221
اتباع سنت کی وصیت 224
ایک عظیم الشان وصیت 232
اللہ سے ڈرنے اور حسن اخلاق کی وصیت 236
سچائی کی ترغیب 240
مصیبت کےوقت صبر کرنا چاہیے 246
اللہ تعالیٰ سے حیاکرو 253
وقف فی سبیل اللہ 256
زیادہ سےزیادہ اعمال کرواگرچہ قیامت قریب آجائے 259
حقیقی غنی 261
جولوگوں کے پاس ہے اس سے لاتعلق ہو جاؤ 264
دنیا سے بےرغبتی 266
سادگی کی ترغیب 269
امانت لوٹانے کی وصیت 271
دنیا میں اجنبی اورمسافر کی طرح رہو 273
پانچ چیزیں 277
ان کلمات کو مضبوطی سے پکڑ لو 281
کتاب المنھیات (ممنوعات ) 287
دین میں غلو اور مبالغہ کرنے سے بچو 289
سات ہلاک کر دینےوالی چیزوں سےبچو 294
کبیرہ گناہوں سےبچو 305
بغض کی مذمت 308
تعریف میں مبالغہ آرائی کی مذمت 310
اختلاف کی مذمت 313
تجارت میں زیادہ قسمیں اٹھانے کی مذمت 319
عورتوں کے پاس جانے سے بچو 321
مظلوم کی بددعا کا اثر 324
کنکر پھینکنے سے بچو 326
راستے کےآداب 328
بد گمانی سے بچو 330
گالی گلوچ کرنا منع ہے 334
جھوٹی حدیث بنانے کا انجام 345
حرام نظر کی ممانعت 347
مشکوک چیز سے بچو 350
دودھ والا جانور ذبح کرنے کی ممانعت 353
حیوانات پر زیادہ بوجھ ڈالنے کی ممانعت 360
بخل سےبچو 363
کتاب الفتن 367
امیر کی اطاعت 369
پہلے خلیفہ کی بیعت 371
فتنوں کا خطرہ 376
نماز میں تاخیر 385
دشمن سےٹکراؤ کی تمنا کرنا مکروہ ہے 388

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
8.4 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam اذکار وادعیہ روح زبان سیرت طہارت عبادات قرض نماز

پیارے رسولﷺ کی پیاری نماز مع مسنون اذکار

پیارے رسولﷺ کی پیاری نماز مع مسنون اذکار

 

مصنف : عبد المنان راسخ

 

صفحات: 114

 

اسلامی تعلیمات کی اساس عقائد وعبادات ہیں ۔ عقائد کی پختگی اور عبادات کے ذوق وشوق سےاسلامی سیرت پیدا ہوتی ہے۔ تمام عبادات اپنے اپنے مقام پر ایمانی جلا اور تعلق باللہ کی استواری اور پائیداری کا باعث ہیں مگر ان میں سے نماز کو دین کا ستون اورآنکھوں کی ٹھنڈک قرار دیاگیا ہے ۔ قرآن مجید میں مسلمانوں کی زندگی کی ہمہ نوع اور تمام ترکامیابیوں کی اساس نماز کو قرار دیا گیا ہے ۔ یہ نصرت الٰہی کے حصول کامؤثر ذریعہ ہے مگرافسوس صد افسوس کہ مسلمان کہلانے والوں کی ایک کثیر تعداد نماز سے میسر آنے والی نعمتوں سے محروم زندگی گزارہی ہے اور جن کو حق تعالیٰ نے نماز ادا کرنے کی توفیق دی ہے ان کی ایک خاص تعداد اسے مسنون طور پر ادا کرنے سے قاصر ہے ۔ زیر تبصرہ کتاب ’’ پیارے رسول کی پیاری نماز مع مسنون اذکار ‘‘ معروف خطیب ومصنف کتب کثیر ہ مولانا عبد المنان راسخ ﷾کی مرتب شدہ ہے ۔انہوں نے اس کتاب میں اختصار سےنماز کا مکمل مسنون طریقہ پیش کرنے کےعلاوہ طہارت کے مسائل کوبھی بیان کیا ہے اور صبح وشام کے اہم ترین اذکار ،اہم اوقات اور جگہوں کی دعاؤں کو اس پاکٹ سائز کتاب میں بحوالہ درج کردیا ہے ۔

 

عناوین صفحہ نمبر
نیند سےبیداری کی دعا 11
بیت اخلامیں جانےکی دعا 11
بیت الخلاسے نکلنے کی دعا 11
غسل جنابت کاطریقہ 12
باوضو رہنےکےفضائل 13
وضو کامسنون طریقہ 14
وضو کافلسفہ اورحکمت 15
وضو کےبعد کی دعا 17
تیمم 17
تیمم کاطریقہ 18
اذان کےکلمات 18
اذان کےبعد کی دعا 20
اقامت کےکلمات 21
اذان اوراقامت کےمسائل 22
نمازکی اہمیت 23
نماز کاطریقہ 26
مرداورعورت کی نماز میں کوئی فرق نہیں 35
نماز کےبعد کےمسنون اذکار 36
نماز تہجد اوروتر 42
دعائے قنوت 43
نماز جمعہ 45
نماز قصر 45
نماز استخارہ 46
نماز اشراق 48
نماز تسبیح 48
نماز جنازہ 49
قبرستان میں داخلے کی دعا 54
میت کو دفن کےوقت کی دعا 54
نمازعیدین 54
الفاظ تکبیرات 55
فرض نمازوں کی رکعات کی تعداد 55
نماز فجر اوراس کی سنتیں 56
نماز ظہر کی سنتیں 57
نماز عصراورسنتیں 57
نماز مغرب اورسنتیں 58
نماز عشاء 59
قضائے عمری کاکوئی تصور نہیں 59
نماز کی کوتاہیاں 59
صبح وشام کےاہم ترین اذکار 63
دن بھر کی عبادت سےزیادہ اجروثواب 64
دن رات کی نعمتوں کاشکراداکرنےکےلیے 64
جنت میں لےجانے والاوظیفہ سیدالاستغفار 65
آفات وبلیات سےبچنے کےاذکار 66
دکھوں اورپریشانیوں سےبچاؤ کےاذکار 68
ایک جامع ترین دعا 70
بےشمار فوائد پر مشتمل وظیفہ 71
نرینہ اولاد کےحصول کی دعا 71
والدین کےلیے قرآنی دعائیں 72
تمام انبیاء ورسل ﷤ کاپسندیدہ ظیفہ 72
سونے سے پہلے کےاذکار 73
ترازومیں بھاری زبان پہ ہلکا وظیفہ 75
اہم اوقات اورجگہوں کی دعائیں 76
گھرسےنکلنے کی دعا 76
گھر میں داخل ہونےکی دعا 76
کسی کو رخصت کرنےکی دعا 77
مسافر کی مقیم کےلیےدعا 77
سفرکی دعا 78
سفرسے لوٹتےوقت کاذکر 79
سواری سےپھسلتے وقت کاذکر 79
سیڑھیا ںچڑھتےاوراترنے کی دعا 80
کھانا کھانے کاذکر 80
کھانا کھانے کےبعد کاذکر 80
دوران مجلس کاذکر 81
مجلس سےاٹھنے کاذکر 81
شادی کی مبارک باد 82
شادی کرنےوالے کی دعا 82
بیوی کےپاس آنےکی دعا 83
طلب بارش کی دعا 83
کانوں اورآنکھوں کی سلامتی کےلیے دعا 84
ہرقسم کےدردکاعلاج 84
حاسدوں اورشریروں سےبچنے کی دعا 85
نعمتوں کےدوام کےلیے دعا 85
نظربد کاعلاج 86
بچوں کادم 87
خواب میں ڈر سےبچنے کی دعا 87
بیوی بچوں کی طرف سےخوشی پانےکی دعا 87
ادائیگی قرض کےلیے 88
بازار میں داخلے کی دعا 89
مصیبت زدہ کودیکھ کر دعا 89
غصے کےوقت کی دعا 90
کلمات استغفار 90
مصیبت اورغم کی خبر سنتےوقت کی دعا 90
چھینک کی دعا 90
روزہ افطار کرنےکی دعا 91
افطاری کروانے والے کو دعا 91
دودھ پینےکی دعا 92
دائمی بیماری کےلیے 92
مریض کی عیادت کرتےوقت 93
مرغ کی آواز سن کر 94
گدھے کی آواز سن کر 94
قرآنی پیکج 95
جادو سےبچاؤ کےلیے آیات 95
سب سے افضل اورپاکیزہ کلام 95
سبحان اللہ کامطلب 96
الحمداللہ کامطلب 96
لاالہ الااللہ کامطلب 96
اللہ اکبر کامطلب 97
جنت کاخزانہ 97
دعائیں کیسے قبول ہوتی ہیں 98
توحیدی کلمات یعنی اسم اعظم 98
دعاکی روح ارواس کافلسفہ 101
لیلۃ القدر کی دعا 102
سجدۃ تلاوت کی دعا 103
رسول اللہ ﷺ کی دومحبوب دعائیں 103
موت کےوقت اچھے انجام کی دعا 104
جددرجہ پر تاثیر دورروحانی نسخے 107
صدقہ وخیرات 107
خاموشی اختیار کرنا 107
ذکر بےاثر کیوں؟ 108
مصنف کی دیگر کتب 109

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
1.9 MB ڈاؤن لوڈ سائز