تاریخ مرزا

مرزا

 

مصنف : ابو الوفا ثناء امرتسری

 

صفحات: 74

 

اسلامیہ کے مطابق نبوت ورسالت کا سلسلہ سیدنا آدم سے شروع ہوا اور سید الانبیاء خاتم المرسلین حضرت محمد ﷺ پر ختم ہوا ۔ اس کے بعد جوبھی نبوت کادعویٰ کرے گا وہ دائرۂ سے خارج ہے نبوت کسبی نہیں وہبی ہے یعنی تعالیٰ نے جس کو چاہا نبوت ورسالت سے نوازاکوئی شخص چاہے وہ کتنا ہی عبادت گزارمتقی اور پرہیزگار کیوں نہ ہو وہ نبی نہیں بن سکتا ۔اور کی رو سے سلسلہ نبوت اوروحی ختم ہوچکاہے جوکوئی دعویٰ کرے گا کہ اس پر کانزول ہوتاہے وہ دجال ،کذاب ،مفتری ہوگا۔ امت محمدیہ اسےہر گز نہیں سمجھے گی یہ امت محمدیہ کا اپنا خود ساختہ فیصلہ نہیں ہے بلکہ شفیع امت حضرت محمد ﷺ کی  زبانِ صادقہ کا فیصلہ ہے۔قایادنی اور لاہوری مرزائیوں کو اسی لئے غیرمسلم قرار دیا گیا ہے کہ ان کا یہ عقیدہ ہے کہ مرزا غلام احمد نبی تھے ان کو سےہمکلام ہونے اور الہامات پانے کاشرف حاصل تھا۔ مرزا قادیانی کے دعویٰ نبوت کرنے کے آغاز سے ہی اس کی تردید وتنقید میں ہر مکتبۂ فکر کے نے بھر پور کردار ادا کیا ۔ بالخصوص علمائے اہل او ردیو بندی مکتبۂ فکر کے علماء کی قادیانیت کی تردیدمیں ناقابل فراموش ہیں ۔ فرقے کے خلاف سب سے پہلا فتوئ تکفیر مولانامحمد حسین بٹالوی ﷫نے تحریرکیاجس پر برصغیر کے تقریباًدوصد تمام مسالک کے نے دستخط ثبت کیے ۔اس فرقے کے خلاف مناظروں کاسب سے کامیاب مقابلہ شیخ الاسلام مولانا نثاء امرتسری﷫ نے کیا جنہیں بالاتفاق فاتح قادیان کا خطاب دیا گیا ۔تقسیم ملک کے بعدپاکستان میں اس گمراہ فرقے کواقلیت قرار دلوانے کےلیے سب سے پہلے متکلم ِ مولانا ندوی ﷫ کا قلم حرکت میں آیا۔اوراس فرقے کو اپنے منطقی انجام تک پہنچانے کےلیے ایک معرکہ مولانا عبد الرحیم اشرف ﷫ کے قلم سے لڑا گیا۔ یہ سب اکابرین مسلک اہل سے تعلق رکھنے والےتھے۔مختلف انداز میں قادیانیت کی تردید میں علماء کی کاوشیں جاری وساری ہیں۔اکثر علماء نے مرزا غلام احمد ملعون کے عقائد کا محاسبہ کر کے قادیانیوں کو لاجواب کیا ہے ۔ زیر کتاب’’ مرزا‘‘ فاتح قادیان شیخ الاسلام مولانا ثناء امرتسری﷫ کی تصنیف ہے اس مختصر کتاب مں انہوں نے مناظرانہ انداز کی بجائے اند از میں صحیح حوالہ جات کی روشنی میں مرزا غلام احمد کے حالات صحیحہ مصدقہ ازولادت تاوفات درج کیے ہیں ۔یہ کتاب پہلی بار 1919ء میں اور شائع ہوئی موجودہ طبع اس کا چوتھا ایڈیشن ہے جسے 1973ء میں المکتبۃ السلفیہ کے بانی شیخ الحدیث مولانا عطاء حنیف ﷫ نے بعض حوالہ جات کی ممکن چھان بین کر کے شائع کیا تھا۔

 

عناوین صفحہ نمبر
پیش لفظ 4
دیباچہ مرزا 5
تمہید 7
مرزا قبل دعوئے 8
اشتہار انعامی پانسوروپیہ 8
دوسرا اشتہار جواب سوامی دیا مانند 10
اشتہار لفرض متانت اشتہار 11
پیش گوئی 14
اشتہار واجب الاظہار 15
اشتہار صداقت آثار 19
خوش خبری 20
حقانی تقریر 22
براہین احمدیہ کےبعد 28
لیکھر ام پشاوری کےمتعلق ایک پیش گوئی 32
اطلاع عام برائے اہل 39
سید محمد نذیر حسین صاحب دہلوی 43
اشتہار بمقابلہ مولوی سیدنذیر حسین صاحب دہلوی 43
پیر مہر علی شاہ صاحب 49
عجیب نظارہ 50
سہ سالہ معاری پیشگوئی 50
دعوائے نبوت 52
ایک غلطی کاازالہ 53
ڈاکٹر عبدالحکیم پیٹالوی 57
دعوی الوہیت 58
مرزاصاحب کی عنایت خاک پر 59
خاکسار پر آخری عنایت 67
نتیجہ یہ ہوا 70
وفات مسیح 70

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3.2 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...