تاریخ طبری جلد8

طبری جلد8

 

مصنف :

 

صفحات: 545

زیر کتاب کا بہت وسیع ذخیرہ اور تاریخی اعتبار سے ایک شاندار تالیف ہے جس میں مصنف نے بہت عرق ریزی سے کام لیا ہے۔ کو بالاسناد ذکر کیا ہے جس سے محققین کے لیے واقعات کی جانچ پڑتال اور سہل ہو گئی ہے۔یہ کتاب رسول ﷺ اور سیر وتابعین پر یہ تالیف سند کی حیثیت رکھتی ہے اور پر لکھی جانے والی کتب کا یہ اہم ماخذ ہے المختصر نبوی اور سیرت وتابعین پر یہ ایک عمدہ کتا ب ہے ۔جس کا مطالعہ قارئین کو ازمنہ ماضیہ کی یاد دلاتا ہےاور ان عبقری شخصیات کے کارہائے نمایاں قارئین میں دینی ذوق ، محبت اور ماضی کی انقلابی شخصیات کے کردار سے الفت و یگانگت پیدا کرنے کا باعث بنتے ہیں۔لہذا فحش لٹریچر ،گندے اور ایمان کش جنسی ڈائجسٹ کی بجائے ایسی تاریخی کتب کا مطالعہ کرنا چاہیے جو شخصیات میں نکھار ،ذوق میں اعتدال ،روحانیت میں استحکام اور سے قلبی لگاؤ کا باعث بنیں ۔

 

عناوین صفحہ نمبر
باب1:خلیفہ ہارون رشید 33
باب2:زوال برامکہ 77
باب3:خلیفہ  ہارون رشید کی و حالات 133
باب4:خلیفہ محمد الامین 151
باب5:امین و مامون کی جنگ 162
باب6:خلیفہ امین کی معزولی 219
باب7:خلیفہ امین کا قتل 249
باب8:خلیفہ امین کی و حالات 260
باب9:شورش بغداد 306
باب10:علی الرضا کی ولی عہدی 317
باب11:خلیفہ مامون کی عراق میں آمد 335
باب12:خلیفہ  مامون کی وحالات 401
باب13:غلیط معتصم 417
باب14:خلیفہ معتصم باللہ کا 465
باب15:ماز بار اور افشیں کا زوال 487
باب16:خلیفہ ہارون الواثق باللہ 521

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...