احکام شرعیہ میں حالات و زمانہ کی رعایت

شرعیہ میں حالات و زمانہ کی رعایت

 

مصنف :

 

صفحات: 308

 

معاشرے کی حالت ہمیشہ یکساں نہیں رہتی،بلکہ اس میں تبدیلی ہوتی رہتی ہے، یہ تبدیلی کبھی معمولی ہوتی ہے جو حالات کے اتار چڑھاو سے رونما ہوتی ہے اور کبھی ہمہ گیر ہوتی ہے  جو ایک دور کے بعد دوسرے دور کے آنے سے ظہور پذیر ہو جاتی ہے۔پہلی صورت میں زیادہ کدوکاوش کی ضرورت نہیں پڑتی، بلکہ چند ومسائل کے موقع ومحل میں تبدیلی سے کام چل جاتا ہے۔لیکن دوسری صورت میں چند پر بات ختم نہیں ہوتی بلکہ اس کے لئے قانونی نظام کو نئے انداز میں ڈھالنے اور نئے وضع کرنے کی ضرورت  ہوتی ہے۔ ایک مکمل ضابطہ اور دستور زندگی ہے ،جس نے عبادت،سیاست ،عدالت اور سمیت زندگی کے ہر شعبہ سے متعلق مکمل فراہم کی ہیں۔اور یہ ایک عالمگیر ہے جو تاقیامت پیش آنے والے کا اپنے پاس رکھتا ہے۔ زیر کتاب” شرعیہ میں حالات وزمانہ کی رعایت ” مسلک دیو بند سے تعلق رکھنے والے معروف عالم مولانا صاحب کی تصنیف ہے جس میں انہوں نے کی روشنی میں اسلام کی اسی عالمگیریت کو بیان کیا ہے۔)

 

عناوین صفحہ نمبر
مقدمہ 17
حکیم سےحالات وزمانہ کی دعایت کاثبوت 26
شرعیہ کی بحث 100
سے حالات زمانہ کی رعایت کاثبوت 119
کی زندگی سےحالات وزمانہ کی رعایت کاثبوت 135

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
6.7 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...