احکام القرآن

القرآن

 

مصنف : چوہدری

 

صفحات: 978

 

مجید بے شمار علوم وفنون کا خزینہ ہے۔اس کے متعدد میں سے ایک اہم ترین مضمون اس کے ہیں۔جو پورے قرآن مجید میں جابجا موجود ہیں ۔احکام القرآن پر مبنی کی تعداد پانچ سو یا اس کے لگ بھگ ہے۔مفسرین کرام نے جہاں پورے قرآن کی تفاسیر لکھی ہیں ،وہیں پر مبنی آیات کو جمع  کر کے الگ سے احکام القرآن  پر مشتمل تفسیری مجموعے مرتب کئے ہیں۔احکام القرآن پر مشتمل کتب میں قرآن مجید کی صرف انہی آیات کی کی جاتی ہے جو اپنے اندر کوئی شرعی حکم لئے ہوئے ہیں۔ان کے علاوہ  قصص ،اخبار وغیرہ پر مبنی کو انداز کر دیا جاتا ہے۔زیر کتاب ’’  القرآن‘‘ بھی اسی طرز بھی لکھی گئی  چوہدری نذر محمد  کی تصنیف ہے۔جس میں انہوں نے تین سو کے قریب موضوعات کے تحت ان موضوعات سے متعلقہ قرآنیہ  کو جمع کر دیا ہے۔انہوں نے آیت قرآنی کا متن اور الفاظ لکھنے کی بجائے اختصار کی غرض سے فقط اس کا دینے پر ہی اکتفاء کیا ہے،اور ساتھ سورۃ اور آیت نمبر لکھ دیا ہے،لیکن اس کا نقصان یہ ہوا ہے کہ کے متن کے بغیر اسے پڑھنا ذرا بوجھل محسوس ہوتا ہے۔چوہدری صاحب  بنیادی طور پر ایک تاجر پیشہ آدمی تھے ،لیکن حوادثات زمانہ نے انہیں مجید کے مطالعہ پر مجبور کر دیا۔ انہوں نے اپنے مطالعہ سے جو کچھ اخذ کیا اسے اپنے جیسے دیگر تاجر حضرات کے لئے جمع کردیا تاکہ وہ بھی قلت وقت کے باوجود قرآن مجید  کے سے واقف ہو سکیں اور اسی کے مطابق اپنی زندگی گزار سکیں۔یہ کوئی یا تحقیقی کتاب نہیں ہے،بلکہ احکام پر مبنی کا ایک مجموعہ ہے۔جو تاجروں جیسے مصروف زندگی گزارنے والے لوگوں کے لئے  روشنی کی ایک کرن ہے۔ تعالی مولف کی اس خدمت کو اپنی بارگاہ میں قبول فرمائے اور ان کے درجات حسنات میں اضافہ فرمائے۔آمین( القرآن)

 

عناوین صفحہ نمبر
سرگزشت احوال 23
مجید کی صفات اور پر غور و فکر 35
تخلیق اور 105
جزئیات ایمان 147
انسانی زندگی کا مقصد 181
رسالت 219
سر چشمہ ہدایت 251
261
کے لیے کوشش 293
331
اخلاقی بیماریاں 373
معاشرتی بیماریاں 35
کافر اور کردار اور اس سے سلوک 451
479
نیک بندوں کے اوصاف 499
دنیاوی دولت اور اسکی حقیقت 571
603
حسن معاشرت 645
سماجی زندگی 673
آپس کے تعلقات 681
اور عدل 697
و تربیت 715
عبادات 733
عائلی 793
831
پردے کے 841
زنا اور قذف 855
قصاص و حدود 865
قوموں کا عروج و زوال 881
893
دفاع 917
سیاسیات 933

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
50.4 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...