دم جھاڑ کی شرعی حیثیت

دم جھاڑ کی شرعی حیثیت

 

مصنف : ڈاکٹر علی بن نفیع العلیانی

صفحات: 95

 

دم کرنے کو عربی میں “رقیہ “کہتے ہیں،جس سے مراد ہے کچھ مخصوص الفاظ پڑھ کر کسی چیز پر اس عقیدے کے تحت پھونک مارنا کہ اس چیز کو استعمال کرنے سے شفا حاصل ہو گی یا مختلف عوراض وحوادثات اور مصائب سے نجات مل جائے گی۔اہل جاہلیت یہ سمجھتے ہیں کہ دم میں تاثیر یا تو ان الفاظ کی وجہ سے ہے جو پڑھ کر دم کیا گیا ہے یا ان الفاظ کی تاثیر ان مخفی یا ظاہری قوتوں کی وجہ سے ہے جن کا نام دم کئے جانے والے الفاظ میں شامل ہے۔ نے جتنے بھی دم سکھائے ہیں اور وسنت سے جن دم کرنے والی سورتوں،آیتوں اور دعاؤں کا ذکر آیا ہے ان سب میں یہ عقیدہ بنیادی اہمیت کا حامل ہوتا ہے کہ رب اکبر ہی ہر طرح کی شفا عطا کرنے والا ہے۔وہی ہر طرح کی مصیبت سے نجات دینے والا ہے،وہی مطلوبہ چیز کو دینے پر قادر ہے،وہی جادو ،آسیب ، وغیرہ کے اثرات متانے والا ہے۔نیز دم کرنے میں نے یہ عقیدہ بھی دیا ہے کہ جو الفاظ پڑھ کر دم کیا جا رہا ہے یہ خود موثر نہیں بلکہ انہیں موثر بنانے والی تعالی کی ذات ہے،جس طرح دوا اثر نہیں کرتی جب تک اللہ نہ چاہے،کھانا فائدہ نہیں دیتا جب تک اللہ نہ چاہے،اسی طرح دم میں تاثیر اللہ کے حکم سے پیدا ہوتی ہے۔ زیر کتاب ” دم جھاڑ کی شرعی حیثیت “عالم کے معروف عالم ڈاکٹر علی بن نفیع العلیانی کی کتاب “الرقی علی ضوء عقیدۃ اھل السنۃ والجماعۃ وحکم التفرغ لھا واتخاذھا حرفۃ” کا ہے۔اردو محترم حافظ ابو بکر صدیق کمیر پوری صاحب نے کیا ہے۔ تعالی سے ہے کہ وہ مولف موصوف کی اس کاوش کو اپنی بارگاہ میں قبول فرمائے اور ان کے میزان حسنات میں اضافہ فرمائے۔آمین

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض مترجم 9
مقدمہ 11
مجمل خاکہ 13
جھاڑ پھونک کی تعریف 14
جھاڑ پھونک لوگوں میں سے قبل بھی موجود تھی 15
جھاڑ پھونک کے سے قبل موجود ہونے کی دوسری دلیل 16
فصل اول
جھاڑ پھونک کا عقائد کے ساتھ تعلق 20
کیا یہ توکل کے منافی ہے؟ 20
پہلی بحث 20
کیا جھاڑ پھونک توکل کے منافی ہے؟ 23
فہرست نامکمل

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
2.5 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Leave A Reply