انکار حدیث کا نیا روپ (جلد اول و دوئم )

انکار کا نیا روپ (جلد اول و دوئم )

 

مصنف : غازی عزیر مبارکپوری

 

صفحات: 371

 

پاک و ہند میں علماء کی خدمت کاروشن باب ہے اہل نے ہر دور میں اس کی تحسین کی پاک وہند سے کتب کے نہایت مستند متون شائع ہوئے اس خطہ زمین میں کتب حدیث کی نہایت جامع ومانع شروح وحواشی تحریر کیے گئے۔بر صغیر میں فتنہ انکار حدیث صدیوں سے زوروں پر ہےاس کی بعض صورتیں ایسے صریح انکار حدیث پر مبنی ہیں جس کے حامل کا ہونا بھی ایک سوالیہ نشان ہے اس فتنہ کے بنیادی اسباب میں سے لاعلمی ،غیر مسلم تہذیب سے مرعوبیت اور سیاسی وفکری محکومی سرفہرست ہے یہ پڑھے لکھے تجدد پسند حضرات کافتنہ ہے جوعلوم اسلامیہ سے ناآشنا ہونے کی وجہ سے اور اس کے اوامر ونواہی سے جذباتی عقیدت رکھتے ہیں ۔فتنہ انکار حدیث  کو واضح کرنے اور عوام الناس کو اس سے متعارف کروانے کےلیے فدائیان کتاب وسنت نے دن رات محنت کی ان میں سے ایک غازی عزیر بھی ہیں جنہوں نے ’’انکار کا نیا روپ‘‘جیسی عظیم اور مفصل کتاب لکھ کر حدیث پر اٹھائے جانے والے تمام سوالات کاحل پیش کردیاہے ۔اس کتاب میں جہاں منکرین وسنت کے تمام اعتراضات کا تفصیلی جائزہ لیا گیا ہے وہاں حجیت حدیث ،حفاظت اور کتابت حدیث جیسے اہم پر غازی صاحب نے اپنی مجتہدانہ بصیرت سے خوب روشنی ڈالی ہے جس کو پڑھنے کے بعد کسی صائب العقل او رسلیم الفطرت شخص کو حدیث کےمتعلقہ شکوک وشبہات دور کرنے میں مجال انکار نہیں رہتی۔یہ کتاب چار جلدوں پر مشتمل ہے۔جس میں  حجیت حدیث ،حفاظت حدیث اور کتابت حدیث جیسی اہم مباحث کی تفصیلی گفتگو کے ساتھ منکر ین حدیث ک افکار کا کتاب وسنت کی روشنی میں جائزہ لیا گیا ہے تاکہ وہ سادہ لوح افراد جوان کے پراپیگنڈے کاشکار ہوجاتے ہیں انہیں حقیقت حال کی خبر ہوسکے اورعامۃ الناس کو بھی اس فتنے سے آگاہی ہوسکے ۔

 

عناوین صفحہ نمبر
حصہ اول
حرفے چند 11
تقریظ 17
احوال واقعی 35
باب اول
کا تعارفی خاکہ 55
اور اقسام وحی 55
متلو 57
غیر متلو 58
متلو اور غیر متلو میں فرق 58
کےکچھ حصہ کو ’’الفاظ‘‘میں اور کچھ کو ’’معانی‘‘میں نازل کئے جانے کی مصلحت 59
رسول ﷺ بحیثیت معلم 60
تعالی نے تاکیداً مکمل اطاعت رسول ﷺ کاحکم فرمایا ہے 64
نبوی ﷺ کا منکر کافرہے 77
میں مذکورہ لفظ ’’الحکمۃ‘‘ کے معنی ’’سنت‘‘ ہیں 78
نبوی بھی پر مبنی ہے 86
نبوی بھی کی  طر ح محفوظ ہے 100
میں کی ثانوی حیثیت ناقابل قبول ہے 111
عدم اتباع انکار رسالت کےمترادف ہے 124
کی ضرور ت واہمیت جناب اصلاحی صاحب کی نظرمیں 127
جناب اصلاحی صاحب کی میں وسنت کا تعلق اور ان کا باہمی نظام عقل وفطرت کے عین مطابق ہے 129
کی چند بنیادی اصطلاحات 130
130
134
أثر 150
خبر 152
اخبار آحاد 154
خبر متواتر 157
وسنت میں فرق اصلاحی صاحب کی میں 176
کسے کہتے ہیں 176
کے ظنی ہونےکی حقیقت 178
خبر واحد کے بیان میں بعض اغلاط واوہام کی وضاحت 183
باب دوئم
وسنت کا باہمی تعلق 219
فہم کامحتاج ہے 224
کی روشنی میں باعتبار مضمون، کی قسمیں 234
نسخ کامسئلہ 275
نسخ کی اقسام 279
نسخ پر تمام اہل شرائع کااتفاق 284
کیا وسنت کی ناسخ ہوسکتی ہے؟ 286
منکرین نسخ کے بعض اوران کاجائزہ 294
بعض آیات جن کانسخ امت کےنزدیک سے ثابت ہے 297
تقیید مطلق اور تخصیص عموم القرآن کا 317
بصورت ’’زیادت علی الکتاب‘‘خبر واحد کو رد کرنے کےبطلان پر محققین کے 321
وسنت کاباہمی تعلق اصلاحی صاحب کی میں 328
استدراكات 363
حصہ دوئم
باب سوئم
کرام رضوان علیہم اجمعین اور شرف صحابیت 9
عدالت رضوان علیہم اجمعین 37
مختصر کوائف واحوال رضوان علیہم اجمعین 55
کرام رضوان علیہم اجمعین اور شرف صحابیت اصلاحی صاحب کی میں 66
’’حنفی فقاہت راوی‘‘ پر اصلاحی صاحب کابیجااعتماد 91
باب چہارم
سند کی لازوال عظمت اور فن جرح وتعدیل کا تعارف 123
سند کی بحث 123
فن  جرح وتعدیل کی بحث 144
سند کی عظمت او راس کے بعض کمزور پہلو۔اصلاحی صاحب کی میں 211
کی بحث 238
اعمال وغیرہ میں ضعیف کا مقبول ہونا محل نزاع ہے 271
جن کے نزدیک ضعیف مطلقا قابل قبول ہے 271
ضعیف سے میں احتجاج 274
صوفیاء اور زہاد کا حدیثیں وضع کرنامعروف ہے 279
بعض متساہل محدثین 284
استدراک 292
باب پنجم
روایت بالمعنی 297
پہلا گروہ۔۔روایت بالمعنی کےمانعین اور ان کے 309
دوسراگروہ 315
تیسراگروہ 316
روایت بالمعنی مشاہیر کی نظرمیں 324
روایت بالمعنی کے جواز کےلیے شرائط 329
خلاصئہ کلام 342
روایت بالمعنی کے بعض مضمرات۔اصلاحی صاحب کی میں 343

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
15.5 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...