انسانیت کا قاتل ہندو دھرم

انسانیت کا قاتل دھرم

 

مصنف : حمزہ

 

صفحات: 112

 

دھرم کی صحیح کشی کے لئے بہت کم لکھا گیاہے۔ اور جو تحریری مواد موجود بھی ہے اس میں مولفین نے عام طور پر فلسفیانہ انداز اختیار کیا ہے۔ویسے بھی ہندو دھرم ایک الجھا ہوا ہے۔اور اس کے راہنما اپنی عوام کو یہ تلقین کرتے ہیں کہ مذہب سمجھ میں آنے والی چیز نہیں ہے ،بس آنکھیں بند کر کے اس پر عمل کیا جائے اور بغیر دلیل کے اسے تسلیم کیا جائے۔یہی وجہ ہے کہ ہندو مذہب میں کروڑوں پوجے جاتے ہیں اور جنوں ،پریوں اور توہمات سے لوگوں کو ڈرایا جاتا ہے۔ضرورت اس بات کی تھی کہ لوگوں کو سے آگاہ کرنے کے لئے آسان انداز میں لکھا جاتا ،کیونکہ ہندو رسوم ورواج اور ہندوانہ عقائد بہت حد تک مسلمانوں میں گھر کر چکے ہیں۔اور اس موضوع پر لکھنےوالے ناقدین نے بھی اس ضرورت کو پورا نہیں کیا ہے۔ الا ما شاء اللہ۔ زیر کتاب” انسانیت کا قاتل ہندو دھرم ” جماعت الدعوہ کے مرکزی راہنما،مجلہ الحرمین کے ایڈیٹر اور معروف کالم نگار محترم حمزہ صاحب کی تصنیف ہے جس میں انہوں نے نہایت سادہ اور عام فہم انداز میں ہندو دھرم کی کشی کی ہے،تاکہ عام لوگ اس سے فائدہ اٹھا سکیں اور اپنے عقائد کی کر سکیں۔ مولف موصوف نے اس کتاب میں دھرم کی حقیقت اور ہندووں کی دشمنی اور میں رہنے والے مسلمانوں پر مذہبی تشدد اور دہشت گردی کو آشکارا کیا ہے۔ تعالی سے ہے کہ وہ مولف کی ان محنتوں کو قبول فرمائے اور ان کے میزان حسنات میں اضافہ فرمائے۔آمین

 

عناوین صفحہ نمبر
ہولی کا دن 17
پہلاک کا واقعہ تو حضرت ابراہیمؑ سے ملتا ہے 19
خون کا رنگ بھی تو سرخ ہے 25
ہمارا طرز عمل 26
میں خون مسلم کی ہولیاں اور ان کے اسباب 28
پہلا سبب ۔۔ وید کے اشلوک
برہمیت کا تاریک ترین روپ 30
دوسرا سبب۔۔۔ وطن دیوتا 33
کا ماتا 35
ماتا کے چرنوں میں کی اور پھر گوشت کھانا 35
ماتا کے لیے میزائل پروگرام کہ جس کے نام سے ہی بھارت ماتا عقیدہ دکھائی دیتا ہے
بندے ماترم 37
ماتا کا جنتی اور جہنی حصہ 39
ماتا کا حصہ کشمیر جنت ارضی ہے 40
اور پنڈت جواہر لعل نہرو کی جنم بھومی ہے
ماتا میں خون مسلم کے ساتھ ہولی۔۔۔ لالہ کا طرز عمل 40
دھندلی سی 41
عورتوں کی چھاتیاں کاٹ دی گئیں 43
میرٹھ میں مسلمانوں کا خون دیوتاؤں کی بھینٹ چڑھایا گیا 43
راجستھان 45
آسام میں خون آشام ہولی 45
بس کے مسافر قتل کر دیے گئے 46
مسلمانوں کی پانی کی ٹینکی میں زہر ملادیا گیا۔۔۔ ٹھٹھروا گاؤں کی عورتوں کے زیورات نوچ لیے گئے۔ بد ن سے ساڑھیا کھینچ لی گئیں۔
ہماچل پردیش 51
ضمیر کی عدالت میں 52
پنڈت جوشی سے ملاقات 60
گنگا کے تالاب میں کتے کا اشنان 65
مردوں کی رکھ وصول کرنے والے باوا کے پاس 68
یورپین باشندے گنگا کے کنارے پر 71
شمشان بھومی 73
کا سب سے بڑا کمبھ میلا 74
جلانا اور دریا میں بہانامندومت ہے۔ نہلا کر سفید پوشاک پہنانا اور قبر میں دفن کرنااسلام ہے۔ فطرت کے مطابق کون ہے؟
گائے ہی بن جاؤں تو بہتر ہے
شوردھ کی آنکھ میں انتقام کی آگ 87
90
اور اب نراد پٹیل کا عوامی گیت 90
کونسا 92
مہربان کی تلاش 93
کافر ار فاجر کی گرفتاری کے کربناک لمحات 103
جنت اور جہنم کا ویدک تصور 108
راز آشکار ہوتا ہے 111

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
6.2 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...