اسلام کا قانون وقف مع تاریخ مسلم اوقاف

کا وقف مع مسلم اوقاف

 

مصنف : ڈاکٹر محمود الحسن عارف

 

صفحات: 314

 

وقف کا ایک اہم جز اور مسلمانوں کی ملی زندگی کا ایک روشن رخ ہے۔مسلمانوں نے ہر دور میں اس کارِخیراورفلاحی پروگرام کورواج دیا ہے۔ وقف کی تعریف یہ ہے کہ ملکیت باقی رکھتے ہوئے جائداد کا نفع سب کے لیے یا کسی خاص طبقے کیلئے خاص کردیاجائے۔نہ اس کو بیچا جاسکتاہے اور نہ منتقل کیاجاسکتا ہے۔ میں سب سے پہلا وقف پیغمبرحضرت محمدﷺنے کیا ۔آپ ﷺنے سات باغوں کووقف کیا جو اسلام میں پہلاوقف خیری تھا۔ دوسرا وقف اسلام میں خلیفہ دوم سید نا عمر فاروق﷜ نے کیا۔ اس کے بعد آپ ﷺ کے زمانہ ہی میں کرام ﷢نے کئی وقف کیے۔جب پیغمبراسلام کے سامنے کوئی شوسل آتاتوآپﷺ کو ترغیب دیتے، کرام فوراََ وہ چیز دے دیتے ۔اسلام کے مالیاتی نظام میں وقف کو ایک بنیادی حیثیت حاصل ہے۔اسلامی کے ہردور میں غریبوں اورمسکینوں کی ضروریات کو پوراکرنے ،انہیں معاشی طورپر خود کفیل بنانے ،مسلمانوں کو علوم و سے آراستہ کرنے ،مریضوں پریشان حالوں کی حاجت روائی کرنے اور اصحاب و فضل کی معاشی کفالت میں وقف کا بہت اہم رول رہا ہے۔ کتب ِ میں اسکے تفصیلی احکامات موجود ہیں ۔ فقہ کی اکثر کتب چونکہ میں ہیں ۔ دان طبقہ جس سے مستفید نہیں ہوسکتا تھا ۔ جناب ڈاکٹر محمود الحسن عارف صاحب نے   کی امہات الکتب سے استفادہ کر کے اردو دان حضرات کے لیے زیر کتاب ’’اسلام کا وقف مع تاریخ مسلم اوقاف ‘‘ تیار کی ۔اس کتاب میں انہوں نے اسلام کے قانون وقف کاتعارف کروانے کی کوشش کی ہے ۔اس میں ’’وقف‘‘کے لغوی واصطلاحی پس منظر کے ساتھ اس کے پر بھی تفصیلاً بحث کرنے کے علاوہ عہد نبوی سے قیام تک مسلم اوقاف کے مختلف ادوار کی تاریخ بھی پیش کردی ہے ۔ میں اپنے موضوع پر یہ ایک تحقیقی نوعیت کی ایک اہم کتاب ہے ۔ تعالیٰ ان کی اس کاوش کو قبول فرمائے (آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
مقدمہ
مند ر جات
پیش لفظ 9
مقدمہ از مصنف 11
باب اول :
تعریف وقف 14
اساسی وقف 14
افاق فی سبیل کی وسعت 18
مشروعیت و 20
امام کا مسلک اور حنفی کا عمل 22
وقف 23
لغوی ا صطلا حی 24
مسالک میں وقف کی تعریف 26
وقف کے مترادف الفاظ 29
وقف کا حکم 30
و فوائد 31
حصول برکا ذریعہ 31
انفاق فی سبیل او ر صدقہ کی فضیلت 31
صدقہ جاریہ کا ثواب 32
انیبا کی سُنت 32
باب دوم : اقسام وقف 37
وقف علی 37
اقاف بیت المال 38
معاہدون کی روسے حاصل شدہ اراضی 39
وقف علی الا و لاد 40
دیگر اقسام وقف 42
حکومت کی زیر نگرانی اوقاف 43
وقف اور صنعت و 43
باب سوم : شرائط وقف 47
واقف کی شرا ئط و اہلیت 47
شرط ملکیت کیساتھ متعلقہ 51
شی مو قو فہ کی شرائط 53
مو قوف علیہم کی شرائط 55
الفاظ وقف کی شرائط 58
وقف کے الفاظ کا بوقت وقف سکی
غیر مو جو د شرائط کیساتھ مشروط نہ ہونا 58
مرنے کے بعد کی طر منسوب ن ہونا 59
الفاظ کا شر ط خیارے مشروط
نہ ہونا 59
کسی ایسی شر ط کا نہ ہونا جو وقف کی
اصلیت پر اندازہو 60
معنی تابید (ہمیشگی ) کا ہونا 60
وقف کا لزومم 63
وقف کی حیثیت 67
وقف کی نتسیخ 68
تملیک 69
باب چہارم : ارکان وقف 72
الفاظ وقفف کا بیان 72
مر ض الوفات میں یامرنے کے بعد
کسی شئی کو وقف کرنا 77
باب: پنجم : موقوفہ اشیاء کی اقسام 85
غیر منقولہ جائیداد 85
منقولہ اشیاء کے وقف کا حکم 88
درختوں اور عمارتوں کا وقف 91
موقوفہ اراضی میں مکان بنانے یا
درخت لگانے کا حکم 92
مشبا ع ( مشترک ) اشیا ء کے وقف کا حکم 95
باب ششم:مو قو فہ اشیاء سے استفادہ 102
ذاتی استعمال 102
م و قوفہ سے شئے کی اجت پر دینا 104
مدت اجارہ 105
کرائے پر دینے کا اختیار 107
وصولی کرایہ کا 108
کرایہ دار ، مستاجر 103
اجت ، کرایہ 110
مروجہ کرائے سے کم پر مو قوفہ شئ کو
کرائے پر دینا 111
کرائے پر دینے کے بعد مروجہ کرائے
میں کمی بیشی 114
معاہدے کے ا ختتام پر مو قوفہ شی میں
کمی یا اضافہ 116
وجوب اجت اور کرایہ دار کےلیے
انفساح 119
تحکیر 120
مو قو فہ اراضی کو مرارعت پر دینا 122
خود کا شت کرنا 123
مضاربت اور 124
باب ہفتم : بانیان وقف کی جائزو نا جائز
شرائط کا بیان 127
جواز و عدم جواز 127
قسم اول کی شرائط 128

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
10.8 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...