اسلام میں پولیس اور احتساب کا نظام

میں پولیس اور احتساب کا نظام

 

مصنف : ساجد الرحمٰن صدیقی کاندھلوی

 

صفحات: 128

 

ایک روحانی تہذیب کا علمبردار ہے۔یہی وجہ ہے کہ اس نے اداروں کے قیام وبقاء پر انحصار نہیں کیا، اور اس امر کی ضرورت محسوس نہیں کی کہ کسی مخصوص تمدنی ہیئت کو محفوظ رکھا جائےیا کسی خاص تہذیبی مظہر کو اجاگر کیا جائے۔اسلام نے شوری کا حکم دیا ہے ، لیکن شوری کی ہیئت کا تعین لوگوں کے بدلتے ہوئے حالات اور ان کے مصالح پر چھوڑ دیا ہے۔اسی طرح اسلام نے عدل وانصاف اور قضاء کے زریں عطا کئے لیکن داد رسی کا کوئی خاص طریقہ لازم نہیں کیا کہ عدلیہ کا ادارہ کس طرح تشکیل پائے،عدلیہ کے ذیلی ادارے کون کونسے ہوں؟پولیس عدلیہ کے ماتحت ہو یا انتظامیہ کے؟ نظام حکومت میں تمام امور وسنت کی ہدایات کی روشنی میں انجام دئیے جاتے ہیں اور پورے نظام کی اساس امر بالمعروف اور نہی عن المنکر پر استوار ہوتی ہے۔ نے ہمیں زندگی کے تمام شعبوں کے بارے میں راہنمائی فراہم کی ہے۔عبادات ہوں یا معاملات، ہو یا ،عدالت ہو یا قیادت ، طب ہو یا انجینئرنگ ، نے ان تمام امور کے بارے میں مکمل فراہم کی ہیں۔ کی یہی عالمگیریت اور روشن تعلیمات ہیں کہ جن کے سبب اسلام دنیا میں اس تیزی سے پھیلا کہ دنیا کی دوسرا کوئی بھی اس کا مقابلہ نہیں کر سکتا ہے۔اسلامی تعلیمات نہ صرف کی میں چین وسکون کی راہیں کھولتی ہیں ،بلکہ اس دنیوی زندگی میں اطمینان ،سکون اور ترقی کی ضامن ہیں۔ زیر کتاب” میں پولیس اور احتساب کا نظام “محترم ساجد الرحمن صدیقی کاندھلوی صاحب کی تصنیف ہے، جس میں انہوں نے اسلام میں پولیس اور احتساب کے نظام کے حوالے سے گفتگو کی ہے۔ تعالی سے ہے کہ وہ ان کی اس کاوش کو قبول فرمائے اور ان کے میزان حسنات میں اضافہ فرمائے۔ آمین

 

عناوین صفحہ نمبر
تقدیم 9
ابتدائی کلمات 12
نظام پولیس جدیدپولیس ‘فرائض اورمختصر 19
پولیس کی ضرورت 19
پولیس کے معنی اورابتدائی 20
صنعتی کےبعد 21
جنگ عظیم دوم کےبعد 23
پولیس کےفرائض 24
شرط کے لغوی معنی 27
دور رسالت اورخلافت راشدہ 31
مجرموں کی گرفتاری 32
حبس کی سزا 34
بعض اہم نکات 37
قیس بن سعد عبادہ 38
عہد فاروقی 40
جیل خانہ کی ایجاد 48
حضر ت علی کادور 48
عہداموی میں شرطہ 53
شرطہ کے دو محکمے 57
کانظام شرطہ 57
شرطہ کانظام اورمصارف 58
چوتھی صدی ہجری میں شرطہ 61
مکتفی بااللہ کے زمانے کاایک واقعہ 62
نظام مظالم 64
اصطلاحی تعریف 65
نبوی سے رفع مظالم کاثبوت 69
ولایت مظالم کے اختیارات 82
مظالم اورقضاء میں فرق 87
مظالم کی عدالت اورطریقہ کار 89
والی مظالم کی عدالت میں مرافعہ 91
ثبوت کاحامل دعوی 91
پہلی حالت 91
دوسری حالت 91
تیسری حالت 92
چوتھی حالت 93
پانچویں حالت 93
چھٹی حالت 95
غیر ثابت شدہ دعوی 95
پہلی صورت 95
دوسری صورت 96
تیسری صورت 97
چوتھی صورت 97
پانچویں صورت 97
چھٹی صورت 98
ثبوت سے خالی دعوی 98
رفع مظالم کی مختصر 102
رفع مظالم اور راشدہ 102
خلفائے بنوامیہ 102
عباسی دورحکومت 103
نظام احتساب 106
وسنت سے حبہ کےتصور کاثبوت 111
عہد صدیقی 114
عہدی فاروقی 115
عمال حکومت کااحتساب 119
حکومت میں مناصب کامقصود ومطلوب 126
محتسب کے فرائض 127
حسبہ ایک دینی فریضہ ہے 127
الماوردی اورابویعلی کی 131
احتسا ب مظالم اورقضاء میں فرق 141
کی رائے 143
وہ امورجن پراختساب جاری ہوتاہے 144
محتسب کے فرائض کاخلاصہ 146
عبادات کی نگرانی 146
عامہ کی نگرانی 146
عامہ کی نگرانی 147
خوردنی اشیاء کی نظامت 147
بازاروں کی نگرانی 148
تجارتی معاملات کی نگرانی 149
اجتماعی مصالح کی نگرانی 150
محتسب کےتادیبی اختیارات 151
پہلادرجہ تعریف 152
دوسرادرجہ تعریف 153
تیسرادرجہ وعظ ونصیحت 153
چوتھا درجہ برا بھلاکہنا 155
پانچواں درجہ عملابرائی کا مٹانا 153
چھٹا درجہ تہدید وتخویف 153
ساتواں درجہ ضرب 153
آٹھواں درجہ 153
شرائط محتسب 154
محتسب کےآداب 154
احتساب عہد بعہد 156
عہدفاطمین 157
بغداد کانظام احتساب 157
اند لس میں نظام احتساب 158
سلظنت عثمانیہ 159
ایران 161
برصیغرپاک وہند 161

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
4.3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...