Categories
Islam تجوید وقراءات دیوبندی سلفی علماء قراء

جمال القرآن مع شرح کمال الفرقان

جمال القرآن مع شرح کمال الفرقان

 

مصنف : قاری محمد طاہر الرحیمی

 

صفحات: 292

 

تلاوت ِقرآن کا  بھر پور اجروثواب اس  امر پرموقوف ہے  کہ تلاوت پورے قواعد وضوابط اور اصول وآداب کے ساتھ کی جائے قرآن کریم  کی تلاوت  کا صحیح  طریقہ جاننا اورسیکھنا علم تجوید کہلاتا ہے  ہرمسلمان کے لیے ضروری ہے کہ  وہ علم تجوید کے بنیادی قواعد سے آگاہی  حاصل کرے ۔ کیونکہ  قرآن کریم اللہ تعالیٰ کی  وہ عظیم الشان کتاب ہے کہ ہر مسلمان پراس کتاب کو صحیح پڑھنا لازمی اور ضروری ہے جس  کاحکم  ورتل القرآن ترتیلا سے واضح ہوتا ہے۔ اس قرآنی حکم کی تکمیل اور تجویدکوطالب تجوید کےلیے  آسان اورعام فہم بناکر پیش کرناایک استاد کے منصب کا  اہم فریضہ ہے ۔ایک اچھا استاد جہاں اداء الحروف کی طرف توجہ دیتا ہے ۔ وہیں وہ اپنے  طالب علم کو  کتاب کےذریعے بھی مسائل تجوید ازبر کراتا ہے۔علم تجوید قرآنی علوم کے بنیادی علوم میں سے ایک  ہے  ۔ اس علم کی تدوین کا آغاز دوسری صدی کے  نصف سے ہوا۔ائمۂ حدیث وفقہ کی طرح تجوید وقراءات کے ائمہ کی بھی  ایک طویل لسٹ ہے  اور تجوید وقراءات کے موضوع    پرماہرین تجوید وقراءات  کی بے شمار کتب موجود ہیں ۔   جن سے استفادہ کرنا اردو دان طبقہ کے لئے اب  نہایت سہل اور آسان ہو گیا ہے ۔ عرب قراء کی طرح برصغیر پاک وہند کے علماء  کرام اور  قراءعظام  نے  بھی  علم تجوید قراءات  کی اشاعت وترویج کےلیے گراں قدر خدمات انجام دی ہیں ۔پاکستان میں دیوبندی قراء کرام کےعلاوہ  سلفی قراء عظام  جناب قاری یحییٰ رسولنگری، قاری محمداریس العاصم ،قای محمد ابراہیم میرمحمدی  حفظہم اللہ اور ان کےشاگردوں کی  تجوید قراءات کی نشرواشاعت میں  خدمات  قابل تحسین ہیں  ۔مذکورہ قراء کی تجوید وقراءات کی کتب کے  علاوہ  جامعہ لاہور الاسلامیہ کے کلیۃ القرآن ومجلس التحقیق الاسلامی ،لاہور  کے زیر نگرانی شائع ہونے  والے  علمی مجلہ  رشد کےعلم ِتجویدو  قراءات  کے موضوع پر تین ضخیم  جلدوں  پر مشتمل قراءات نمبرز  اپنے  موضوع  میں انسائیکلوپیڈیا کی حیثیت رکھتے ہیں ۔جس میں  مشہور قراء کرام کے   تحریر شدہ مضامین ، علمی  مقالات  اور حجیت  قراءات پر    پاک وہند کے  کئی  جیدمفتیان کرام کے فتاوی ٰ جات بھی شامل ہیں اور اس میں  قراءات کو عجمی فتنہ قرار دینے والوں کی  بھی خوب خبر لیتے ہوئے  ان کے  اعتراضات کے  مسکت جوابات دیئے گئے ہیں۔ زیر نظر کتاب ’’ جمال القرآن مع  شرح کمال الفرقان   ‘‘محترم مولانا اشرف علی تھانوی  صاحبکی تصنیف ہے ۔جمال القرآن  کی شرح کمال  الفرقان  استاذ القراء  مولانا  قاری محمد طاہر رحیمی کی تحریر کردہ ہے ۔جمال القرآ ن علم تجوید کی ابتدائی کتاب ہےشائقین علم تجوید کے لئے یہ ایک مفید اور شاندار کتاب ہے۔شارح جمال القرآن جناب قاری طاہر رحیمی صااحب نے اس شرح میں  ہر ہر  مضمون ،قاعدہ  اور تنبیہ پر حاشیہ کا نشان دے کر بقدر ضرورت اس کی پوری تفصیل  بیان کردی ہے اور بعض لمعات کےآخر میں ان کے مناسب بعض مضامین ضروریہ  بعنوان تکملہ درج کردئیے  ہیں ۔نیز ہر لمعہ کےآخر میں مختصر لفظوں میں اس کا جامع خلاصہ بھی تحریر کردیا ہے ۔ 

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض حال 2
تعارف مؤلف حضرت حکیم الامت تھانوی 3، 4
دیباچہ و مقدمہ از مؤلف 5
مشورہ مفید ہ 7
پہلا لمعہ: تجوید کی تعرف میں 7
مخرج و صفت کی مختصر تعریف 8
تلاوت کے مختصر محاسن و مصائب 9
فائدہ علم تجوید کے متعلق نو چیزوں کے بیان میں 9
وجوب تجوید پر دلائل 10
دوسرا لمعہ : تجوید کی ضد 11
لحن جلی سے فساد صلوٰۃ 13
لحن خفی کی دو قسمیں 14
خلاصہ لمعہ دوم 15
تیسرا لمعہ: تعوذ و بسلمہ کا محل 17
شروع تلاوت و بیان سورت کا حکم 17
فائدہ 1: تعوذ و بسلمہ کا سر و جہر 18
فائدہ 2: وصل اور فصل کی بحث میں 19
خلاصہ لمعہ سوم 20
چوتھا لمعہ : مخارج حروف کے بیان میں 21
الف و ہمزہ میں چھ فروق 24
حروف مدہ کے سات نام 24
دانتوں کی تعداد اور ترتیب و اسماء و وجہ تسمیہ وغیرہ 27
مخرج 8 کی مکمل تشریح 29
ضاد کا صحیح تلفظ 30
فتویٰ علماء حرمین شریفین 31
صحت و فساد صلوٰۃ کا حکم 31
نون و راء کے مخرج میں تین فرق 32
نقشہ مخارج حروف 37
پانچواں لمعہ: حروف کی صفات لازمہ اور ان صفات کے معانی و حروف 38
جدول حروف صفات لازمہ 41
کاف و تا کے متعلق ایک شبہ کی تقریر 45
حروف شبیہ مستعلیہ کا ذکر 48
حروف صغیر کے متعلق ایک عجیب انکشاف 52
قلقلہ کے پانچ درجات 54
تکرر را کے متعلق تین چیزیں 56
استطالت مد تفشی میں وجہ فرق 59
مسئلہ زلۃ القاری کا اہم خلاصہ 65
خلاصہ لمعہ پنجم 68
نقشہ صفات لازمہ 69
چھٹا لمعہ : صفات محسنہ مجلیہ کے بیان میں 70
صفات عارضہ مجلیۃ کی وجہ تسمیہ 71
صفات عارضہ کے آٹھ حروف 71
خلاصہ لمعہ ششم 73
ساتواں لمعہ : لام کے قاعدوں میں 73
خلاصہ لمعہ ہفتم 75
آٹھواں لمعہ : راء کے قاعدوں میں 75
قواعد راء کے متعلق تین بنیادی باتیں 76
پہلا قاعدہ را متحرکہ کا 76
راء مشددہ کا حکم 77
دوسرا قاعدہ راء ساکن ما قبل متحرک کا 77
فِرْقٍ کی راء کا حکم 80
تیسرا قاعدہ راء ساکن ماقبل ساکن کا 81
یَسر کی وقفی راء کا حکم 82
چوتھا قاعدہ راء ممالہ کا 84
پانچوان قاعدہ راء مرامہ کا 86
خلاصہ لمعہ ہشتم 87
نواں لمعہ : میم ساکن و مشدد کے قاعدوں میں غنہ فرعی 88
الف کی دریافت کا طریقہ 89
حکم دوم اخفاء شفوی 90
غنہ کے پانچ درجات 92
خلاصہ لمعہ ہفتم 94
دسواں لمعہ : نون ساکن و مشدد کے قاعدوں میں 94
حکم اول غنہ فرعیہ 95
نون و میم مشدد تین کے متعلق پانچ امور 95
حکم سوم ادغام 97
ادغام کا مفہوم  مع وجوہ ادغام 97، 98
ادغام کامل بلاغنہ کی تشریح 101
حکم چہارم اقلاب مع وجہ 103
حکم پنجم اخفاء حقیقی 104
تفہیم اخفاء بالتمثیل 110
خلاصہ لمعہ دہم 110
گیارہواں لمعہ: الف، واؤ اور یاء کے قاعدوں میں 111
نقشہ مد اصلی و مد فرعی 115
مد متصل کی تعریف اور اس کے متعلق ایک حدیث 116
مد مقطعات کی تفصیل و تعریف و تقسیم مع مجموعات 125
مد عارض کی تعریف 130
بد عارض لازم و متصل کا حکم 122
تساوی مدات عارضیہ وقفیہ 122
مدلین عارض کی تعریف 138
مقدار کشش مد لین عارض 136
مد کی اولی دو قسمیں 138
درجات تفخیم حروف مفخم 141
مد تسکین کی بحث مع دلائل 150
خلاصہ لمعہ یازدہم 153
مد کے متعلق پانچ معلوماتی فوائد 154
بارہواں لمعہ: ہمزہ کے قاعدوں میں 155
تسہیل کی تعریف اور اس کی دو قسمیں 156
ہمزہ وصلی کی حرکت 158
خلاصہ لمعہ دوا زدہم 161
تیرہواں لمعہ : وقف کرنے کے بیان میں 161
علم اوقاف کی اہمیت 164
وسط کلمہ پر وقف کا ناجائز ہونا 167
رسم کے موافق وقف کرنا 168
الفات محذوفہ فی الحالین 170
تماثل فی الرسم کا قاعدہ 174
وقف بالاسکان کی اصالت کی چھ وجہ 176
اشحام کی چار قسمیں 180
روم  و اشمام  کے چار فوائد استعمال 180
تتمہ کیفیات وقف 180
المد و الوقف 187
خلاصہ لمعہ سیز دہم 189
چودہوں لمعہ : فوائد متفرقہ ضروریہ کے بیان میں 193
سکتہ کے متعلق ایک شبہ مع جواب 199
عجیب و غریب توجہیات 207
حصہ نظم
رسالہ تجوید والقرآن ( نظم ) 216تا 225

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
14.9 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Leave a Reply