شہاب نامہ

شہاب نامہ

 

مصنف : قدرت شہاب

 

صفحات: 840

 

قدرت شہاب کے قیام سے قبل بطور آئی سی ایس آفیسر میں مختلف عہدوں پر تعینات رہے ہیں ۔ کے معرضِ وجودمیں آنے کے بعد وہ پاکستان تشریف لے آئے اور صدرمحمد ایوب کے دور تک وہ اعلیٰ عہدوں پر کام کرتے رہے ہیں ۔اپنی زندگی کے ان اہم ادوار کو انہوں نے اپنی مشہورِزمانہ کتاب ”شہاب نامہ “ میں بڑی تفصیل سے بیان کیاہے جو کے قاری کے لیے نہائت افز ا اور پاکستان کے ماضی کے حکمرانوں کے کردار کو جاننےکے لیے ایک بہترین کتاب ہےشہاب نامہ در اصل قدرت اللہ شہاب کی خودنوشت کہانی ہے۔ یہ کتاب مسلمانانِ برصغیر کی کے پس منظر ، مطالبہ پاکستان، قیامِ اور پاکستان کی چشم دید داستان ہے۔ جو حقیقی کرداروں کی سے بیان ہوئی ہے۔ شہاب نامہ دیکھنے میں ضخیم اور پڑھنے میں مختصر کتاب ہے۔ شہاب نامہ امکانی حد تک سچی کتاب ہے۔ قدرت اللہ شہاب نے کتاب کے ابتدائیہ میں لکھا ہے کہ:’’میں نے کو انتہائی احتیاط سے ممکنہ حد تک اسی رنگ میں پیش کرنے کی کوشش کی ہے جس رنگ میں وہ مجھے نظرآئے۔‘‘جو لوگ قدرت اللہ شہاب کو جانتے ہیں ان کو معلوم ہے کہ یہ ایک سادہ اور سچے کے الفاظ ہیں ۔ قدرت اللہ شہاب نے اس کتاب میں وہی لکھے ہیں جو براہِ راست ان کے اور مشاہدے میں آئے اس لئے واقعاتی طور پر ان کی تاریخی صداقت مسلم ہے۔ شہاب نامہ کے حسب ذیل چار حصے ہیں۔(١)قدرت اللہ کا بچپن اور تعلیم۔ (٢)آئی سی ایس میں داخلہ اور دورِ ملازمت۔ (٣) کے بارے میں تاثرات۔ (٤)دینی و روحانی تجربات و مشاہدات۔ان چاروں حصوں کی اہمیت جداگانہ ہے۔یہ کتاب چونکہ پاکستان کےمتعلق تاریخی او رحقائق پر مشتمل ایک ادبی نوعیت کی کتاب ہے اس لیے اس کو   ویب سائٹ پر پبلش کیا گیا ہے

 

عناوین صفحہ نمبر
اقبال جرم 7
جموں میں پلیگ 15
نندہ بس سروس 25
چمکور صاحب 35
راج گرو کا خالصہ، باقی رہے نہ کو 51
مہاراجہ ہری سنگھ کے ساتھے چائے 69
چندرواتی 79
آئی سی ایس میں میں داخلہ 91
صاحب، بنیا اور میں 99
بھاگلپور اور مسلم فسادات 109
ایس۔ ڈی۔ او 127
نندی گرام اور لارڈ ویول 143
بملا کماری کی بے چین 157
کا مطلب کیا؟ 173
سادگی مسلم کی دیکھ 193
کراچی کی طوطا کہانی 201
کچھ ’’یاخدا‘‘ کے بارے میں 213
محمد کا 215
’’یاخدا‘‘ اور اس کا دیباچہ 219
نظرے خوش گزرے 231
آزاد کشمیر 233
صلۂ کشمیر 233
ڈپٹی کمشنر کی ڈائری 299
چناب رنگ 303
چارج 307
دورن خانہ 313
الیکشن 319
اب مجھے رہبروں نے گھیرا ہے 325
رپورٹ پٹواری مفصل ہے 329
جس کھیت سے دہقاں کو میسر نہ ہو روزی 333
گھر پیر کا بجلی کے چراغوے ہے روشن 337
ڈسٹرکٹ بورڈ 341
علی بخش 345
ملاقاتی 349
تبادلہ 349
ہالینڈ میں کی نیت 371
کے صوفی 379
تو بھی راہگزر میں ہے 387
سراب منزل 409
جھوٹ، فریب، فراڈ اور حرص کی دلدل 423
گورنر جنرل ملک غلام محمد 433
سکندر مرزا کا عروج زوال 465
جنرل ایوب خان کی اٹھان 487
صدر ایوب، اصلاحات اور بیورو کریسی 507
صدر ایوب اور ادیب 513
صدر ایوب اور صحافت 553
نیشنل پریس ٹرسٹ 569
ایوب خان اور 577
صدر ایوب اور سیاستدان 593
صدر ایوب اور طلباء 609
صدر ایوب اور کی خارجہ پالیسی 619
’’ماں جی‘‘: کا ایک زندہ کارنامہ 687
صدر ایوب کا زوال 693
زوزگار سفیر 713
سی۔ ایس۔ پی سے استعفیٰ 731
یونیسکو 749
عفت 763
کا مستقبل 777
چھوٹا منہ بڑی بات 783

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
21 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Leave A Reply