حکمائے اسلام حصہ دوم

حکمائے حصہ دوم

 

مصنف : عبد السلام ندوی

 

صفحات: 338

 

مسلمانوں میں جو حکماء وفلاسفہ پیدا ہوئے ان میں کچھ تو ملحد وبے اور اکثر ضعیف العقیدہ تھے۔ یا کم ازکم ان کی مذہبی حالت  بہتر نہیں تھی یہی وجہ  ہے کہ قدیم زمانے میں بھی ان کے سوانح وحالات کی طرف بہت کم مؤرخین نے  توجہ دی۔اس لیے عوام الناس  ان کے حالات سے بالکل ناآشنا رہے ۔قدیم زمانے میں اگرچہ بعض آزاد خیال لوگوں نے ان کے حالات پر چند کتابیں لکھیں  لیکن اولاً تو یہ کتابیں خاص طور ان کے زمانے کے حکماء کے حالات تک محدود ہیں ۔ثانیاً ان کتابوں میں حکمائے کے ساتھ ساتھ  زیادہ تر حکمائے یونان ، عیسائی  فلاسفہ او راطباء کے نام  مذکور ہیں۔ خالص حکمائے اسلام کے حالات  میں کوئی کتاب نہیں لکھی گئی۔لہذا اس ضرورت کے پیش نظر  مولانا عبد السلام ندوی  نے زیر کتاب ’’ حکمائے اسلام ‘‘ تحریر کی یہ کتاب  دو حصوں میں  ہے ۔مصنف نے اس کتا ب میں  حکمائے کی ہر قسم کی مذہبی اخلاقی اور فلسفیانہ کو نمایاں کیا ہے  حصہ اول میں  پانچویں صدی تک  کے حکماء کے حالات مذکور ہیں  اور دوسرے  حصے  میں متوسّطین  ومتاخرین حکمائے اسلام  کے مستند حالات ان  کی خدمات  اور ان کے  فلسفیانہ کی تفصیل  دی گئی ہے۔

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
7.25 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...