امام ابن شہاب زہری اور ان پر اعتراضات کا تحقیقی جائزہ

امام ابن شہاب زہری اور ان پر اعتراضات کا تحقیقی جائزہ

 

مصنف : ڈاکٹر حافظ محمد عبد القیوم

 

صفحات: 121

 

بن مسلم بن عبيد الله بن عبد الله بن شهاب زہری (50۔124ھ) زبردست ثقہ امام، حافظ، اور فقیہ تھے۔ زہری نے کئی کرام اور کئی کبار تابعین سے روایات لی ہیں آپ کی روایات تمام کتبِ صحاح، سنن، مسانید، معاجم، مستدرکات، مستخرجات، جوامع، تواریخ اور ہر قسم کی کتب میں شامل ہیں آپ کی جلالت اور اتقان پر امت کا اتفاق ہےامام  زہری ﷫ کا شمار ان جلیل القدر آئمہ حدیث میں ہوتا ہے  جو علمِ حدیث میں  ’’جبل العلم‘‘  کامقام رکھتے ہیں ۔اسی لیے آپ میں ایک فردکی حیثیت سے  نہیں بلکہ علم  حدیث کا  دائرۃ المعارف کی  حیثیت سے پہچانے جاتے ہیں ۔علمائے جرح وتعدیل اسماء الرجال اور حدیث میں نابغہ روز گار شخصیات آپ کی وجلالت ،ثقاہت وعدالت پر متفق ہیں۔ حقیقت یہ کہ آپ ہی کی  محنت شاقہ کی بدولت آج  ہم  احادیث  نبویہ سے اپنے قلوب کوگرمائے  ہوئے ہیں وگرنہ بقول اما م لیث بن سعد اگر ابن شہاب زہری  نہ ہوتے تو بہت سی احادیثِ نبویہ ضائع ہو جاتیں ۔لیکن بعض جاہل منکرین نے پر صرف اس لئے تشیع کا الزام لگایا کیونکہ ان کا محض کسی کتب رجال میں موجود ہے۔ حالانکہ کسی شخص کا شیعہ کی کتب رجال میں ذکر ہونا اس بات کا قطعی ثبوت نہیں ہے کہ وہ شخص شیعہ ہے۔ یہ الزام بالکل بے بنیاد اور جھوٹا ہے جبکہ اس کے برعکس امت میں سے کسی عالمِ و محدث نے کبھی ایسا نہیں کہا ہے۔زیر کتاب ’’امام ابن شہاب زہری  اور ان پر اعتراضات کا  تحقیقی جائزہ‘‘محتر م حافظ عبد القیوم صاحب  (لیکچررشیخ  زاید اسلامک سنٹر ،لاہور) کی  کاوش  ہے  جسے انہوں نے  جاوید کے  ادارہ الموردکے  ترجمان انگریزی  مجلہRenaissance  میں  المورد کے سکالر جنا ب شہزاد سلیم کے شائع ہونے  مضمون کا  تحقیقی  جائزہ لیتے ہوئے تحریر کیا ۔ جس میں انہوں نے علمِ حدیث کے روشن چراغ  اما م  ابن شہاب زہری  کےحالات ،ان کی اور ان پر کیےگے اعتراضات  کا مدلل تجزیہ پیش کیا ہے ۔ تعالیٰ دعاع حدیث  کے  سلسلے میں  مصنف  کی اس کاوش کو قبول فرمائے ۔(آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
حرف اول
ابتدائیہ
باب اول سوانح و آثار 1
نام و نسب 1
صفات خلقیہ 2
تحصیل 4
امام زہری کی خدمات 9
شیوخ امام زہری 11
تلامذہ امام زہری اور ان کے طبقات 12
تصانیف 14
آراء علمائے معاصرین و متاخرین 15
آراء علمائے جرح و تعدیل 17
حوالہ جات 20
باب دوم امام زہری اور جدید مسلم محققین 23
تدلیس اور اس کے 24
مدلسین اور ان کے طبقات 25
مدلس راوی کا حکم 31
مرسل روایات اور ان کے 35
مراسیل امام زہری کی حقیقت 41
ادراج اور اس کی حقیقت 44
امام زہری اور تشیع 45
معترضین کے فکری مغالطوں کا جائزہ 46
امام زہری پر طعن کے اسباب 50
حوالہ جات 56
باب سوم امام زہری اور گولڈزیہر 61
گولڈزیہر کے اعتراضات 61
امام زہری اور خلفائے بنو امیہ 66
قبہ صخرہ کی تعمیر کا مقصد 68
امام زہری اور مکاتبت 84
امام زہری اور اموی خلفاء 87
گورنر حجاج اور امام زہری 88
امام زہری اور منصب قضاء 90
حوالہ جات 94
کتابیات 99

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...