اسلامی بیداری مستقبل کے تناظر میں

بیداری مستقبل کے تناظر میں

 

مصنف : ڈاکٹر مانع حماد الجھنی

 

صفحات: 147

مسلم دنیا میں آج ہر جگہ کی طرف واپسی اور اس خدائی نظام کی پیروی کا رجحان آ رہا ہے، جس کی اساس وسنت کے مصادر پر ہے، اس رجحان اور فضا کو آج اصطلاحی طور پر بیداری سے تعبیر کیا جا رہا ہے۔اسلامی بیداری اب وہ عمومی رجحان ہے جس نے انیسویں صدی کی آخری دو دہائیوں سے ساری دنیا کو اپنی طرف متوجہ کر رکھا ہے۔مسلم ہوں یا غیر مسلم ان کی ایک بڑی تعداد اس میں دلچسپی لے رہی ہے، کچھ تو اسے خوش آمدید کہہ رہے ہیں اور پر امید ہیں، کچھ خوف اور اندیشوں میں مبتلا ہیں، کچھ اس کی وضاحتیں کر رہے ہیں اور انتظار کر رہے ہیں، کچھ اس سے ڈر رہے ہیں اور اس پر تنقید کر رہے ہیں، کچھ اس کی رہنمائی کر رہے ہیں تو کچھ اسے برا بھلا کہہ رہے ہیں۔ان میں سے ہر ایک کا رویہ اپنے مقصد اور دلچسپی کے لحاظ سے ہے۔ زیر کتاب” بیداری مستقبل کے تناطر میں “سعودی کے معروف عالم اور ورلڈ اسمبلی آف مسلم یوتھ، ریاض کے سیکرٹری جنرل محترم ڈاکٹر مانع حماد الجھنی کی تصنیف کا ہے۔ اردو محترم مظہر سید عالم نے کیا ہے۔اس کتاب میں مولف موصوف نے بیداری کے حوالے اپنے تجربے کو پیش کرتے ہوئے مسلم نوجوانوں کی درست سمت رہنمائی فرمائی ہے۔ تعالی سے ہے کہ وہ مولف کی اس محنت کو اپنی بارگاہ میں قبول فرمائے اور ان کے میزان حسنات میں اضافہ فرمائے۔آمین

 

عناوین صفحہ نمبر
انتساب 2
پیش لفظ 3
بیداری کیا ہے؟ 6
مختلف زاویہ ہائے ن نگاہ 7
فہرست کمپوز ہور ہی ہے۔

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...