جدید فقہی تحقیقات زکوۃ کے نئے مسائل

جدید فقہی تحقیقات کے نئے

 

مصنف : قاضی مجاہد الاسلام قاسمی

 

صفحات: 574

 

کے نظام کی بنیادی خصوصیت انفرادی ملکیت کو تسلیم کرنے کے ساتھ ساتھ دولت کی زیادہ سے زیادہ تقسیم اور اس کو ارتکاز سے بچانا ہے،اس کی ایک عملی مثال کا  نظام ہے۔زکوۃ کو واجب قرار دیا جانا ایک طرف اس بات کی دلیل ہے کہ سرمایہ دار خود اپنی دولت کا مالک ہےاور وہ جائز راستوں میں اسے خرچ کر سکتا ہے۔دوسری طرف اس سے یہ بات  بھی واضح ہوتی ہے کہ کی دولت میں سماج کے غریب لوگوں کا بھی ہے ۔یہ حق متعین طور پر اڑھائی فیصد سے لیکر بیس فیصد تک ہے،جو مختلف اموال میں کی مقررہ شرح ہے،اور بطور نفل اپنی ضروریات کے بعد غرباء پر جتنا کرچ کیا جائے اتنا ہی بہتر ہے۔لیکن افسوس کی بات یہ ہے کہ آج کل اس عظیم الشان فریضے کی ادائیگی سے سے بالکل  لا پرواہ ہو چکے ہیں۔اور نکالنے کا اہتمام مفقود آتا ہے۔ کے متعدد ایسے جدید ہیں ،اہل اور طلباء کے لئے ان سے آگاہی انتہائی ضروری تھی۔چنانچہ  کی اسلامک اکیڈمی نے دیگر موضوعات کی طرح  اس پر بھی ایک سیمینار کا انعقاد کیا اور اس میں مختلف اہل نے پیش کئے اور اپنے موقف کا اظہار کیا۔یہ کتاب ” جدید فقہی تحقیقات( کے نئے مسائل)” اس سیمینار میں پیش کئے گئے مقالات کے مجموعے پر مشتمل ہے،جسے محترم مولانا قاضی مجاہد الاسلام قاسمی نے مرتب کیا ہے اور  کتب خانہ نعیمیہ دیو بند  نے طبع کیا ہے۔یہ  اہل علم اور طلباء کے لئے ایک گرانقدر وتحقیقی ہے۔تمام طالبان علم کو چاہئے کہ وہ  کے جدید کے کے لئے اس  کتاب کو ضرور پڑھیں۔

 

عناوین صفحہ نمبر
ابتدائیہ 9
پہلا باب تمہید ی امور 15
سوال نامہ 15
تجاویز 26
دوسرا باب تفصیلی 37
سوال نامہ کا جواب 37
کا نظام 47
اموال سے متعلق 73
جواب و سوال نامہ بابت زکاۃ 96
کے 113
ادائیگی کے شرائط و ارکان 136
کے 158
پر ایک 175
کے چند اہم 190
کے اور ان کا شرعی 202
میں کا مصرف 328
کمیشن پر چندہ 399
نصاب 411
416
کے کچھ اہم 443
تیسرا باب مختصر جوابات 465

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
9.5 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...