مرقاۃ المفاتیح شرح اردو مشکوۃ المصابیح جلد پنجم

مرقاۃ المفاتیح شرح مشکوۃ المصابیح جلد پنجم

 

مصنف : علامہ قاری علی بن سلطان محمد القاری

 

صفحات: 1107

 

تعالی کی رسی یعنی کریم کے ساتھ کا تعلق اس وقت تک مکمل نہیں ہوسکتا جب تک قرآن کریم کی تشریح وتفسیر رسول اللہ ﷺ کی سنت ، یعنی آپ کے طریقہ سے نہ ہو اور آپ ﷺ کےطریقہ کےساتھ وابستہ ہونا اس وقت تک ناممکن ہے جب تک اس پر عمل نہ کیا جائے ۔کتبِ حدیث کے مجموعات میں سے ایک مجموعۂ حدیث ’’مشکاۃ المصابیح‘‘ کے نام سے معروف ہے ۔مشکاۃ المصابیح نبویہ ﷺ کا انمول ذخیرہ ہے جسے امام بغوی ﷫ نے ’مصابیح السنۃ‘ کے نام سے حدیث کی مشہور کتابوں صحاح ستہ، مؤطا امام مالک، مسند امام احمد ، سنن بیہقی اور دیگر کتب احادیث سے منتخب کیا ہے۔ پھر علامہ خطیب تبریزی ﷫نے ’مصابیح السنۃ‘ کی تکمیل کرتے ہوئے اس میں کچھ اضافہ کیا۔ اور راوی حدیث صحابی کا نام اور حدیث کی تخریج کی اور اس کو تین فصول میں تقسیم کیا ۔ اس کتاب کو تالیف کے دور سے ہی شرق وغرب کے عوام وخواص دونوں میں یکساں طور مقبولیت حاصل ہے۔مصنفین ، وطلبا ، واعظین وخطباء سب ہی اس کتاب سےاستفادہ کرتےچلے آرہےہیں۔یہ کتاب اپنی غایت درجہ افادیت کے پیش برصغیر پاک وہند کےدینی کےقدیم نصاب درس میں شامل چلی آرہی ہے ۔اسی اہمیت کے پیش نظر کئی اہل نے عربی ، میں شروحات اور حواشی لکھے ہیں۔اوراس پر وتخریج کا کام بھی کیا ہے حتیٰ کہ خود مصنف کے استاذ محترم نے بھی اپنے لائق شاگرد کی تالیف کی ایک جامع شرح قلمبند فرمائی۔ یہ اعزاز بہت ہی کم لوگوں حاصل ہوا ہوگا۔’’مشکوٰۃ المصابیح‘‘ دراصل دوکتابوں کا مجموعہ ہے ایک کا نام مصابیح السنہ اور دوسری کا نام مشکوٰۃ ہے۔کتبِ حدیث کےمجموعات میں اس کا نام سر فہرست ہے ۔یہ مجموعہ جہاں دینی کے نصاب میں شامل ہے تووہیں یہ عام پرھے لکھے افراد کےلیے بھی روشنی کامینارہ ہے۔ اصولی طور پر اگر اس کی اہمیت کودیکھا جائے تواحادیث کا یہ ایسا ذخیرہ ہے کہ جوہر ایک گھرانے کی ضرورت ہے کیونکہ اس میں دین ِ کےتقریبا ہر قسم کے درج ہیں کہ جن کو سمجھنا اور ان پر عمل کرنا ہر کادینی فریضہ ہے ۔ دینیہ میں مشکوٰۃ شروح میں سے مرعاۃ المفاتیح اور مرقاۃ المفاتیح زیادہ مقبول ہیں۔ زیر کتاب علی بن سلطان محمد القاری معروف ملا علی کی مشکوٰۃ المصابیح کی عربی شرح مرقاۃ المفاتیح کا سلیس ہے۔یہ شرح ملا علی قاری﷫ کے وفکر کا عظیم مجموعہ اور مشکوٰۃ المصابیح کی دیگر شروح میں ممتاز ہے۔مرقاۃ کا یہ اولین ہے۔مترجمین نے کی سلاست اور روانی کو برقرار رکھتے ہوئے ترجمہ میں ہم آہنگی اور یکسانیت کاخاص اہتمام کیا ہے ۔اور کی مکمل تخریج کابھی اہتمام کیا ہے ۔اس مبسو ط شرح کا جید کی کی ایک ٹیم نے کیا ہے۔جس سے مشکاۃ المصابیح کے مدرسین اور طلباء کے لیے آسانی ہوگئ ہے ۔یہ ترجمہ گیارہ ضخیم مجلدات پر مشتمل ہے۔ تعالیٰ مترجمین وناشرین کی اس اہم کاوش کو شرف قبولیت سے نوازے (آمین)

عناوین صفحہ نمبر
فضائل کابیان 17
لوگوں میں سے بہتر ین اشخاص سیکھنے وسکھانے  والے 21
پاک سیکھنے کی فضیلت 22
قرآنی کی فضیلت 25
اٹک اٹک کر پڑھنے والے کو دہر اجر ملے گا 26
حسد صرف دوچیزوں میں جائز ہے 27
فرشتوں کاقرآن سننا 30
تلاوت سے ناز ل ہوتی ہے 32
سورۃ بقرہ ال عمران پڑھنے والوں کے لیے باعث برکت ہے 36
آیۃ الکرسی کی فضیلت 39
سورۃ  فاتحہ اوربقرہ کاآخری حصہ کی طرف سے دونوں ہیں 43
سورۃ اخلاص سے محبت 47
سورۃ الفلق اور سورۃ الناس کے ذریعے دم کرنا 51
کریم سے خالی دل ویران گھر کی طرح ہے 55
پر عمل باعث نجات ہے 57
حافظ دس آدمیوں کی سفارش کرے گا جن پرجہنم واجب ہوچکی ہوگی 65
کی اہمیت 66
لوح محفوظ میں زمین وآسمان پیدا ہونے سے دوہزار سال قبل لکھا گیا 69
سورۃ الملک عذاب  قبر سے نجات دلانے والی ہے 76
سورۃ حشر کی آخری تین کی فضیلت 79
سورۃ الفلق اورسورۃ الناس کے ذریعے پناہ پکڑا کرو 83
قراءت کی فضیلت دوسرے اعمال پر 87
آیۃ الکرسی کی اہمیت وعظمت 89
سورۃ آل عمران کی آخری کی فضیلت 91
جمعہ کے دن آل عمران پڑھنے کی فضیلت 92
سورۃ بقرہ کی آخری کی قدرومنزلت 93
سورہ ہودجمعہ کے دن پڑھنے کی ترغیب 94
سورۃ الم تنزیل قاری کی کرنے گی اور جھگڑاکرے گی 95
سورۃ الزلزال ایک جامع سورت ہے 96
یہ باب متعلقات وغیرہ کے بیان میں ہے 108
کریم غفلت سے بھول جاتاہے 108
آپﷺکاحضرت بن مسعود ﷜سے قراءت کاسننا 115
آپﷺ کاابی بن کعب ﷜کے سامنے پڑھنا 116
فقراء کرام ﷢کے لیے خوشخبری 119
کواونچی اور آہستہ آواز سے پڑھنے کی بہترین مثال 126
قرب میں لوگ دیناوی مقاصد کے لیے پڑھیں گے 129
کے لحجوں میں پاک کی تلاوت کرنا پسندیدہ ہے 129
اختلاف قراءت او رجمع القرآن کابیان 130
کریم ﷺکو سات قراتوں میں پڑھنے  کی اجازت ہے 134
قراءت میں اختلاف کرنے کی ممانعت 138
کریم کی مختلف قراءت کامسئلہ 139
قراءت کامختلف ہوناآسانی کاباعث ہے 146
پڑھ کر لوگو ں سے مانگنا منع ہے 148
بن مسعود ﷜کے ساتھ ایک شخص کامکالمہ 150
پاک جمع کرنے سے پہلے پتھر کھجور کی چھال وغیر پر سورۃ  موجود تھا 152
عثمان ﷜کی جمع کے بارے میں 159
عثمان ﷜کاواضح کرنا کہ دونوں سورتیں علیحدہ علیحدہ ہیں 164
یہ کتاب دعاؤں کے بیان میں ہے 169
قیامت  کے دن نبی ﷺامت کی کریں گے 171
نبی کریم ﷺجہان والوں کے لئے رحمت بن کرآئے 171
دعاکرتے وقت خداتعالی پرپورا یقین ہوناچاہیے 172
غائب کی دعاغائب کے لیے بہت جلد قبول ہوتی ہے 175
بددعا کرنے سے ممانعت 176
ہرحاجت کے لئے تعالی سے دعامانگو 177
دعاعبادت کامغز ہے 179
ذکر اور تقرب الی اللہ کابیان 202
تعالی کے اسمائے مبارکہ 246
تسبیح  تحمید ،تہلیل اور تکبیر کےثواب کابیان 304
ہر حال میں تعالی کاشکرادا کرو 319
استغفار وتوبہ کابیان 337
رحمت باری تعالی کی وسعت کابیان 337
آپﷺ پرندوں کے لئے بھی رحمت  بن کر تشریف لائے 396
تعالی کااپنے بندوں پر رحمت کانزول 398
نیکی کرنے والوں کو تعالی کی رحمت ڈھانپ لیتی ہے 399
ایمان والا ہرحال میں جنتی ہے خواہ وہ گنہگار ہی کیو نہ ہو 400
صبح :شام اور سوتے وقت پڑھی جانے والی دعاؤں کابیان 400
آپ ﷺ سے منقول صبح وشام کی 402
سوکر اٹھنے کی مسنون 404
سونے  کامسنون طریقہ 406
سونے کے لئے بستر کو جھاڑنا  مسنون ہے 408
صبح وشام کی 415
حضرت ابوبکر صدیق ﷜کے لیے تجویز کردہ 416
مذکورہ دعاپڑھنے سے تعالی اس کو بیماری سے حفاظت میں رکھتا ہے 417
صبح وشام کی 420
آپ ﷺ اپنی بیٹیوں کو مذکورہ سکھلاتے تھے 421
مذکورہ پڑھنے سے غلاموں کو آزاد کرنے کے برابر ثواب ملتا ہ 424
مذکورہ دعاپڑھنے  کی برکت سے آگ سے خلاصی کاوعدہ 425
مذکورہ  دعاپر آپ ﷺ کی مواظہت 426
مذکورہ وکلمات کو پڑھنے سے گناہوں کو معاف فرمادیتاہے 428
صبح وشام کے بڑھنے کاوظیفہ 429
سوتے وقت کی مسنون 430
سونے کامسنون طریقہ 430
سوتے وقت آپﷺ یہ مذکورہ پڑھا کرتے تھے 431
استغفار کی فضیلت 431
پاک کی سورت کے بڑھنے کی برکت سے تعالی ایک فرشتہ مقرر فرمادیتے ہیں 431
کے بعد ارو سوتے وقت تسبیحات کابیان 433
صبح وشام کے وقت مذکورہ دعابڑھنےے کی فضیلت 435
سوتے وتق کی ایک 436
سوتے وقت آپﷺ کامعمول مبارک 438
آپﷺ صحابہ ﷢کو صبح  کے وقت مذکورہ تلقین کیاکرتے تھے 440
کو عافیت مانگتی چاہیے 443
صبح کےوقت کی 444
آپﷺ بعض وقت میں یہ دعابھی پڑھا کرتے تھے 446
مختلف اوقات کی دعاؤں کابیان 447
جما ع کےوقت کی 447
فکر وغم کی شدت کے وقت مذکورہ دعاپڑھنی چاہیے 449
غصے کو دور کرنے کاوظیفہ 450
شیطان سے پناہ مانگو 452
کے وقت آپﷺ کی 453
حضور ﷺ کی مشقتوں سے پناہ مانگاکرتے تھے 456
مکان میں داخل ہوتے وقت کی 457
بچھو کے ڈسنے کی 458
کی حالت میں سحری کے وقت خداکی تعریف کرنا 459
یاعمرہ سے واپس لوٹتے وقت کی 461
مشرکین کے خلاف بددعا 462
چانددیکھنے وقت کی 466
مصیبت زدہ کو دیکھ کر مذکورہ پڑھنی چاہیے 466
بازار میں داخل ہونے کی 467
جنت کاداخلہ پوری نعمت ہے 467
مجلس سے اٹھتے وقت کی 468
سواری پرسوار ہوتے وقت کی 468
مسافرکورخصت کرنامسنون عمل ہے 469
مسافرکو الوداع کرنے کاطریقہ 469
اپنے ین سے کروانے کاثبوت 469
مسافر کو نصیحت کرنامسنون ہے 469
تکلیف دینے والی چیزوں سے پناہ مانگنا 470
کے موقع پر آپﷺ کی 471
دشمن سے خوف کے وقت کی 471
گھر سے نکلتے وقت کی مسنون 471
گھر سےنکلتے وقت جامع 472
کے وقت مبارک بارہ دینا مسنون ہے 473
غمزد ہ کی 473
قرض کی ادائیگی کی 474
ادائیگی قرض کے لیے 474
مجلس سے اٹھتے وقت کی 475
دیکھنے کی 475
غم وفکر کے وقت کی 475
بلندی پرچڑھتے وقت اور اترتے وقت کی دعاکاذکر 476
کے وقت کی 476
خوف کے وقت کی 476
بازار میں داخل ہونے کی 477
پناہ مانگنے کابیان 477
آزمائش سے پناہ مانگنا 478
اندیشہ اور غم سے نجات کے لیے جامع 480
جامع 480
دنیاوبرزخ میں لاحق ہونےوالی پریشانیوں سے پناہ مانگنا 481
اچانک عذاب اور غضب خداوندی سے پناہ مانگنا 483
آپﷺ کی ایک جامع دعاکابیان 484
چارچیزوں سے پناہ مانگنے کابیان 486
پانچ چیزوں سے پناہ پکڑنے کابیان 487
ذلت اور محتاجگی سے پناہ مانگنے کابیان 488
نفاق اور برے اخلاق سے پناہ مانگنے کی 489
بھوک اور خیانت سے پناہ مانگنے کابیان 490
کوڑھا اور جذام اور دیوانگی سے پنا ہ مانگنے کابیان 491
برے عملوں اور اخلاق سیہ سے پناہ مانگنے کابیان 492
جامع 493
زہریلے جانوروں او راچانک ہلاک کردینے والی چیزوں سے پناہ پکڑنا 494
کے غروب ہونے سے پناہ پکڑنا 497
مختصر اور جامع دعاکابیان 498
تعویذ کاثبوت نابالغ بچے کے لیے 500
جنت کاسوال کرنا اور آپﷺ سے پناہ مانگی 501
جادووغیرہ سے بچنے  کی 502
فرض کے بعد پڑھنے کی ذکر 504
کفر اور قرض سے پناہ مانگو 505
جامع دعاؤں کابیان 506
جامع 506
ودنیا کی اصطلاح کی 508
ہدایت اور تقوی مانگنا 509
افعال وگفتار کی کاسوال کرنا 509
نئے کو مذکورہ وکلمات سکھایا کرتے تھے 510
ودنیا کی نعمتوں کاسوال 512
تعالی سے کفار پر فتح کاسوال کرنا 512
تعالی سے عافیت مانگو 515
سب سے بہتر دعاعافیت مانگناہے 516
تعالی سے محبت کاسوال کرنا 517
ایک جامع 518
کی زیادتی کاسوال کرنا 522
کی کیفیت کابیان 523
بینائی کی محرومی پر صبر کرنے سے جنت کاوعدہ 524
تعالی سےمحبت کاسوال کرا 527
جامع 529
فجر کی نما ز کے بعد کی 533
ابوہریرہ ﷜کاخاص 534
جسمانی ورحانی کاسوال کرنا 535
نفاق ریاکاری جھوٹ  وغیرہ سے پناہ مانگنا 536
صحابی کی حضور ﷺ کادنیا کی عافیت مانگنے کی نصیحت کرنا 537
بلاؤں میں گرفتار ہوجا اپنے نفس کو ذلیل کرنے کے مترداف 538
ظاہر وباطن کی بہتری کے لیے دعامانگنا 539
افعال کابیان 540
کرنازندگی میں ایک مرتبہ فرض ہے 542
دوران معصیت پر ہیز کرے 545
ایک عمرہ دوسرے عمرے تک کفارہ ہے 546
میں عمر ہ کرنے کی فضیلت 547
نابالغ کو نفلی کاثواب ملتاہے 548
بدل کامسئلہ 550
عورت کےساتھ میں کاہونا ضروری ہے 551
عورتوں کاجہاد ہے 552
مواقیت 553
میقات احرام کابیان 556
آپﷺ کے عمروں کابیان 557
آپﷺ کے عمروں کاذکر 559
سال میں ایک مرتبہ فرض ہے 559
کی فرضیت کے لیے شرائط 560
استطاعت کے باوجود نہ کرنے پر وعید 562
ارادہ کی تکمیل جلدی ہونی چاہیے 562
حج کرو 563
کن چیزو ں کی وجہ سے واجب  ہوتاہے 564
حاجی کی صفات کابیان 565
بدل کاثبوت 566
بدل کرنے والے پہلے اپنا حج کرے 567
اہل مشرق کامیقات 568
احرام کی جگہ کاتعین 568
حج کے گناہوں کے بخشے کاذریعے ہے 569
کے لیے کھانے  پینے کاانتظام کرناتوکل کے منافی نہیں ہے 570
عورتوں کاجہاد 571
وسعت کے باوجود نہ کرنے پروعید 572
اور عمرو کرنے والے تعالی کے مہمان ہیں 572
حاجی سے سلام مصافحہ کاثبوت 573
حجوعمرو کرنےوالے کو کرنےوالے کے برابر ثواب ملتاہے 573
احرام باندھنے اور لبیک کہنے کابیان 575
احرام باندھنے اور لبیک کے کہنے کے بیان میں ہے 575
احرام کی حالت میں خوشبو لگانے کامسئلہ 575
بلند آواز سے تلبیہ کہنا 577
بلند آواز سے تلبیہ کہنے کاثبوت 580
بلند آواز سے تلبیہ کہنا 581
کرنے والوں کی اقسام 581
کوعمرے کے ساتھ داخل کرنا 582
احرام میں سلے ہوئے کپڑے پہننے کی اجازت نہیں ہے 584
تلبیہ کرکنے کی اجازت ہے 584
بلتد آواز سے تلبیہ کہنا 584
لبیک کہنے والے کی عظمت 586
احرام باندھنے کے بعد آپﷺ کامعمول مبارک 586
تعالی سے خوشنودی مانگنا ارو طلب معافی کرنا 589
آپﷺ کاحج کےلیے اعلان کرنا 590
مشرکوں کاتلبیہ پڑھنا 591

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
25 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Leave A Reply