شیخ محمد الغزالی خود نوشت سوانح حیات نظریات تالیفات

شیخ محمد الغزالی خود نوشت سوانح تالیفات

 

مصنف : محمد ظہیر الدین بھٹی

 

صفحات: 196

 

شیخ محمد الغزالی﷫ کی ایک ممتاز ودینی اور تحریکی شخصیت ہیں جنہوں نے ساری عمر مصر میں وبےدینی کے طوفان کا پوری جرات، دلیری اور عالمانہ فراست کے ساتھ مقابلہ کیا۔آپ نے شاہ فاروق کا دور بھی دیکھا اور پھر جمال عبد الناصر اور سادات کے اقتدار میں جبر وتشدد کا پورے صبر واستقلال اور جرات وہمت کے ساتھ سامنا کیا۔ زیر کتاب” شیخ محمد الغزالی﷫ خود نوشت سوانح حیات، نظریات، تالیفات “شیخ محمد الغزالی کی تصنیف ہے، جو یوں تو ان کی ایک خود نوشت ہے، لیکن درحقیقت مصر کے ایک طویل تاریک دور کی ہے، جس کا ایک ایک لمحہ جبرواستبداد، فرعونی آمریت اور دشمنی کا آئینہ دار ہے۔صدر ناصر نے جس طرح تحریک کی علمبردار اخوان المسلمون کو کچلنے اور اس کی تنظیم کو تباہ کرنے کے لئے ظلم وتشدد کے ناقابل تصور حربے استعمال کئے اور اسلام کا نام لینے والوں کو قید وبند، پھانسیوں اور کوڑوں اور جیلوں میں انتہائی وحشیانہ سلوک کا نشانہ بنایا اس کی ادنی سی جھلک اس خود نوشت میں دیکھی جا سکتی ہے۔نیز اس میں ان کے اور تصنیفات کا تعارف بھی بیان کیا گیا ہے۔کتاب میں ہے، جس کا محترم محمد ظہیر الدین بھٹی صاحب نے کیا ہے۔

 

عناوین صفحہ نمبر
پیش گفتار ازمترجم 9
تعارف 13
شیخ محمد الغزالی کااجمالی تعارف 13
شیخ محمد الغزالی اوران کی زندگی کےچند اوراق طہ جابر العلوانی 15
المہد العالمی للفکرالاسلامی سےتعلق 16
عمروبن العاص کی آبادکاری 21
ترک وطن کافیصلہ 22
شیخ غزالی اورمصری فوج 22
شیخ محمد الغزالی  کےافکار پر ایک ڈاکٹر یوسف القرضاوی 24
غزالی ایک داعی ومبلغ 25
غزالی کے مراکز کفر 25
غزالی کےنزدیک داعی کی خصوصیات 25
بصیرت  وعقل 25
شاعرانہ 26
روحانیت 26
غزالی اورقرآن حکیم 26
شیخ کےقرآنی درس 27
کریم پر توجہ کی ضرورت 37
غزالیس اورسنت نبوی ﷺ 28
غزالی اروفقیہ غزالی کےاصول 29
کتاب وسنت بیک وقت نص معصوم 29
مصالح مرسلہ کی رعایت 30
جملہ مکاتیب فکر کااحترام 30
دعوت کےلیے 31
غزالی ایک مصلح ومجدد 31
تجدید ایمان وتزکیہ نفس 31
سیاسی استبدادکامقابلہ اورحریت 32
عدل اجتماعی 32
عورت اورخاندان کی 32
غلط فہمیوں کاازالہ 34
کامتوازن جامع نظرہ 35
امت کی اوراتحا د 36
امت کےکٹےہوئے گروہوں کاانضمام 36
پسماندگی سےنکلنے اورترقی کی طرف بڑھنے کی دعوت 37
اسباب زوال 38
ثقافت اوراسلامی ورثہ کی تطہیر 40
بیداری کےلئے راہ نمائی 41
کااحیاء 43
شیخ محمد الغزالی کی خودنوشت سوانح 45
بچپن کی یادیں 45
مکتب کی زندگی 47
حفظ کیوں؟ 48
نظام مکتب کی وتجدید 49
ابتدائی 50
دینی دونیوی 52
سیاسی اضطراب مظاہرے کی قیادت گرفتاری اوررہائی 54
نتائج 55
مرحلہ ثانویہ 57
کچھ سوالات 58
البنا سےملاقات 59
اصول کالج میں داخلہ 59
ایک عجیب واقعہ 60
میں کی 61
قدیم ازہری 62
اساتذہ سےہماررابطہ 63
اخوان المسلمون کاظہور 65
مرشد کاگرامی نامہ 66
کامنفرد مزاج 68
نامنظور مطالبہ 69
اخوان المسلمو نکامثبت کردار 70
میری کچھ عادتیں 71
عذر مقبول یامجبوری 73
قبولیت دعاکرشمہ قدرت 74
نصاب کےمتعلق چند گزارشات 76
ملازمت کی تلاش 78
ملازمت کےلیےانٹرویواورمیری ناسمجھی 78
ایک اہم انکشاف 80
کےافتتاح کےلئے شاہ فاورق کی آمد اورایک دلچسپ واقعہ 81
خانہ آبادی 83
رفیقہ کی جدائی 84
اس وقت کےمسلمانوں کی حالت زار 84
ایک ناکام کوشش 86
جمہوریت 88
عالمی نظام 90
ایک صابر وشاکر محنت کش کالبدی آرام 91
اخوانی واعظ 93
جمہوری آزادیوں سے استفادہ 94
سیاسی حالات اورجماعت اخوان 95
آئین ودستور کےبارےمیں ایک صاحب سےمکالمہ 97
حکومت کاایک عجیب فیصلہ 99
اوقاف کانظام تہس نہس 100
نت نئی بری خبریں 101
فوجی ٹولے کاظلم وجبر 102
جب انور السادات نےجمعہ پڑھایا 104
معاشرے میں کاکردار 106
میرےعزائم اورماحول 108
سرکاری ملازم کااحساس ذمہ داری 109
اخوان المسلمون پرظلم وتشدد اوردینا اعلماء کاطرز عمل 110
کتابوں پرپابندی 113
میراطریق دعوت 115
میدان عروبہ میں 117
مختلف قسم کےداعی 118
اشتراکی اتحاد میں شمولیت 119
کی حفاظت اورتعمیر نو 134
ایک نئی مصیبت اوراللہ کےبےپایاں رحمت 136
فرعونی روش 139
گرفتاری 140
ڈکٹیٹر شپ  کی خرابیاں 148
ذلت ناک شکست 149
انوارلسادات کےساتھ 154
دعوت وتبلیغ اورتعلیم وتربیت 156
بیوروکریٹ کارویہ اورمیریحق گوئی 157
عظمت کردار 158
عمروبن العاص کی آبادکاری 159
سیکریٹری وزارت کےمنصب پرتعین اوردونوں کےبعد استعفی 161
صدرسادات کی ملت فروشی 162
شیخ غزالی کی تصانیف کامختصرتعارف 165
شیخ غزالی کےبارےمیں کتابیں 187

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
4.3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Leave A Reply