شرح اربعین نووی 40 احادیث ) عبد المجید سوہدروی )

شرح اربعین نووی 40 احادیث ) عبد المجید سوہدروی )

 

مصنف : عبد المجید سوہدروی

 

صفحات: 105

 

کتاب اور رسول ﷺدینِ کے بنیادی مآخذ ہیں۔ رسول ﷺ کو محفوظ کرنے کے لیے کئی پہلوؤں اور اعتبارات سے اہل نے انجام دیں۔ تدوینِ کا آغاز عہد نبوی ﷺ سے ہوا وتابعین کے دور میں پروان چڑھا او ر محدثین کےدور میں خوب پھلا پھولا ۔مختلف ائمہ محدثین نے احادیث کے کئی مجموعے مرتب کئے او رپھر بعدمیں اہل علم نے ان مجموعات کے اختصار اور شروح ، وتخریج او رحواشی کا کام کیا۔مجموعاتِ میں اربعین نویسی، علوم حدیث کی دلچسپیوں کا ایک مستقل باب ہے ۔ بن مبارک﷫ وہ پہلے محدث ہیں جنہوں نے اس فن پر پہلی اربعین مرتب کرنے کی سعادت حاصل کی ۔بعد ازاں حدیث ،حفاظت حدیث، حفظ اورعمل بالحدیث کی او رعملی ترغیبات نے اربعین نویسی کو ایک مستقل شعبۂ بنادیا۔ اس ضمن میں کی جانے والی کوششوں کے نتیجے میں اربعین کے سینکڑوں مجموعے دین، عبادات، زندگی، زہد وتقویٰ او رخطبات و جیسے موضوعات پر مرتب ہوتے رہے ۔اس سلسلۂ سعادت میں سے ایک معتبر اور نمایاں نام ابو زکریا یحییٰ بن شرف النووی کا ہے جن کی اربعین اس سلسلے کی سب سے ممتاز تصنیف ہے۔امام نووی نے اپنی اربعین میں اس بات کا التزام کیا ہے کہ تمام تر منتخب احادیث روایت اور سند کے اعتبار سے درست ہوں۔اس کے علاوہ اس امر کی بھی کوشش کی ہے کہ بیشتر احادیث صحیح اور سے ماخوذ ہوں ۔اپنی حسن ترتیب اور مذکورہ امتیازات کے باعث یہ مجموعۂ اربعین عوام وخواص میں قبولیت کا حامل ہے انہی خصائص کی بناپر اہل علم نے اس کی متعدد شروحات، حواشی اور تراجم کیے ہیں ۔ میں اربعین نووی کی شروحات کی ایک طویل فہرست ہے ۔ اردوزبان میں بھی اس کے کئی تراجم وتشریحات پاک وہند میں شائع ہوچکی ہیں زیر کتاب ’’شرح اربعین نووی‘‘ مولانا حکیم عبدالمجید سوہدروی ﷫ کی ہے۔انہوں نے کتبِ احادیث کا کرنے کا آغاز اربعین نووی سے ہی کیا اور ساتھ ہی بڑی آسان ، معاشرتی اوراخلاقی پہلوؤں پر مشتمل اور بہت سے نکات کی حامل شرح لکھی۔ جو پہلی بار 1955ء میں شائع ہوئی۔اس کےبعد اب جناب مولانا محمد نعمان فاروقی صاحب (مدیر مسلم پبلی کیشنز )نےاسے بڑی عمدہ طباعت سے آراستہ کیا ہے۔اپنی افادیت کےباعث یہ کتاب اس قابل ہے کہ اسے کےمدارس میں عمومی طور پر اور بچوں کے کی ابتدائی کلاسوں میں اور دینی سکولوں کےنصاب میں شامل کیا جائے ۔جن احباب نےبھی کتاب کوطباعت کےلیےتیار کرنےمیں حصہ لیا ہے تعالیٰ ان کی کاوشوں کو قبول فرمائے (آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض ناشر 9
پیش لفظ 11
امام نووی  13
نیت اور ارادے کی اہمیت 15
ایمان ، اور احسان کیا ہیں 17
ارکان 22
کی ولادت اور اس کے بعد سعادت یا شقاوت 24
میں نئے امور 27
اور ان کے درمیان مشتبہ معاملات 29
خیر خواہی کا نام ہے 32
و قتال کا ایک مقصد 34
بال کی کھال اتارنے والے سوالوں سے اجتناب 36
حرام کے استعمال سے قبول نہیں ہوتیں 38
مشکوک معاملات سے کنارہ کشی 40
کا حسن 41
دوسرے کے لیے وہی کچھ پسند کریں جو اپنے لیے کرتے ہیں 42
قتل مسلم کی تین وجوہات 44
اور پر ایمان کے چند تقاضے 46
غصہ نہ کیا کرو 48
تو کیا حیوانوں کے ساتھ بھی احسان 49
تعالی کا ڈر اور لوگوں سے اچھا برتاؤ 51
نصیحت نبوی کے گراں مایہ پہلو 53
شرم و کی اہمیت 57
استقامت 59
نماز ، روزے کا اہتمام اور کی تمیز 61
صفائی کی اہمیت اور کلمات کی فضیلت 63
جامع ترین قدسی 66
نیکی میں مقابلہ 69
صدقے کے مفہوم کی وسعت 72
نیکی اور برائی کی تعریف 74
نبی کریم ﷺ کا ایک وعظ 76
جہنم سے نجات اور جنت میں داخلہ مگر کیسے 79
و حدود کی پاسداری 82
کا محبوب اور لوگوں کا پیارا بننے کے لیے 84
نقصان نہ اپنا نہ دوسروں کا 86
دلیل کے بغیر دعوے بے ہیں 87
برائی سے روکنے کے تین مراتب 88
مسلم معاشرے کے چند ضابطے 90
درد دل اور جذبہ حصول 93
اعمال نامے میں نیکی اور برائی لکھنے کا ضابطہ 96
قرب الہٰی کی جستجو 98
بھول چوک اور مجبوری قابل گرفت نہیں 100
جگہ جی لگانے کی دنیا نہیں ہے 101

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...