انسان اور کفر

اور کفر

 

مصنف : حافظ مبشر حسین لاہوری

 

صفحات: 179

 

کفر کے معنیٰ ہیں انکار کرنا۔ کی ضروری باتوں کا انکار کرنا یا ان ضروری باتوں میں سے کسی ایک یا چند باتوں کا انکار کرنا کفر کہلاتا ہے اور جو شخص کفر کا مرتکب ہوتا ہے اس کو شریعتِ میں کافر کہتے ہیں۔کفر زیادہ تر حقہ سے انکار یا سے انکار کے لئے استعمال ہوتا ہے اور سب سے بڑا کفر تعالیٰ کی وحدانیت یا اس کے فرستادہ سے یا ان کی لائی ہوئی سے انکار ہے۔جو کچھ تعالیٰ کی طرف سے آنحضرت ﷺ پر نازل ہوا اس سے انکار کرنا کفر ہے اور کفر ایمان کی ضد ہے۔ کسی شخص کے عقائد و کی بنیاد پر اس کو کافر قرار دینا اصطلاح میں تکفیر کہلاتا ہے۔ زیر کتاب ’’ اورکفر ‘‘ڈاکٹر حافظ مبشرحسین ﷾ کے کتابی سلسلہ عقائد کی دسویں اور آخری کتاب ہے ۔اس کتاب کو انہوں نے چارابواب میں تقسیم کیا ہے اور ان میں یہ بتایا ہے کہ وہ کون سی صورتیں ہیں جن سے ایک بندۂ مومن کا ایمان ضائع ہوجاتاہے نیز کسی پر کفر کا لگانے سےپہلے وہ کون سے وضوابط ہیں جن کا لحاظ رکھانا از بس ضروری ہے ۔نیز کتاب کے آخر میں ضمیمہ کےطور پر عقیدہ کی معروف کتاب ’’ شرح العقیدہ الطحاویۃ‘‘ کے ان مباحث کا اردو بھی شامل کردیاگیا ہے جو اس موضوع سےبراہ راست تعلق رکھتے ہیں۔

 

عناوین صفحہ نمبر
پیش لفظ 3
  اور ایمان 15
ایمان  ایک  مسلمان  کی سب سےبڑی دو لت ہے 16
ایمان کیا ہے 17
اہل کی رائے 17
مر وجہ  اور فقہا ئے  حنفیہ 25
ایمان  اور میں فرق 28
ار کان  ایمان کا بیان 30
 ایما ن کے سا تھ  ان شا ءاللہ  کہنا (یعنی استثنا ء کر نا) 32
ایمان میں کمی بیشی  کا 32
قر آنی 33
34
صحا بہ کرام  ﷜کے 35
اہل ایمان  کے ایمان  کے لحاظ  سے مختلف در جات 36
ایمان کا دہ  در جہ  (حد ) جس کے بعد کفر  ہے 37
 کبیرہ  گناہ  کے مر تکب  کا ایمان 38
اور کفر و مکفرات (نو اقض ایمان  کا بیان ) 42
 کفر ’ معنی’و مفہوم  اور اس کی بنیادی  اقسام 43
کفر کسے کہتے ہیں 43
کفر کی اقسام   کفر اکبر  اصغر 45
نو عیت اور کیفیت  کے لحاظ سے کفر اکبر  کی اقسام 45
انسان  کو کافر  بنانے وا لی چیزیں 47
اعتقادی  مکفرات ۔ اعتقادی نو اقض 48
کے  با رے کفر اعتقادی 48
وجود  با ری تعا لیٰ کا انکار 48
  تعا لی ٰ کی صفات  میں سے کسی  ثابت  شدہ صفت  کا انکار 49
تعالی کے ساتھ  49
تعالی کی  ذات میں 49
تعالی کی   صفا ت اور  افعال میں 51
  کی عبا دت میں 53
کی مذمت  کے دلا ئل 55
اصغر ر یا کاری 56
نبیو ں اور رسو لو ں کے با رے  میں کفر اعتقادی 58
کی منزل کر دہ  کتابو ں  کے با رے میں  کفر  اعتقادی 61
میں بیان کر دہ عیبی حقا ئق کے با رے  میں کفر اعتقادی 66
احکام  شر یعت  کے حو الے  سے کفر اعتقادی 67
حلال کو حرام  اور حرام  کو  حلال سمجھنا 67
دین  و شر یعت  پر عمل  اور نبی کر یم ﷺ  کی اطاعت  کی ضرو رت  نہ سمجھنا 68
 نفا ق … کفر  اعتقادی  کی بد ترین  صو رت 70
عملی  نفا ق یعنی  نفا ق اصغر 71
اعتقادی نفاق  یعنی  نفاق  اکبر 74
نفا ق کے بعض  مظاہر 77
عقا ئد  میں  شک  و شبہ 78
 کا فر  کے کفر  میں  شک 79
 کفر اعتقادی  اگر  ثابت  اور  ظاہر ہو جا ئے  تو 80
قو لی  مکفرات – قو لی نوا قص 82
کفر تکذیب ’کفر حجود  اور استکبار 82
 اللہ  یا رسو ل یا  قر آ ن  یا کو گالی دینا 83
اللہ  یا رسو ل یا  قر آ ن  یا دین  سے طنز و تشنیع  او راستہزا کرنا 85
عملی مکفرات – عملی نو اقض 86
و سے اعراض ( بے رخی ) کا 86
کلی اعراض اور جزو ی اعراض 88
کلی طو ر پر سے اعراض کر لینا   اور عمل چھو ڑ دینا  کفر ہے 88
جزو ی اعراض کا حکم 90
تا رک کا حکم 91
الحکم  بغیر ما انزل 92
تکفیر اور عمومی ضا بطے 94
کلمہ گو  کا فر کہنے  میں سخت اختیاط کی ضرورت 95
 ظاہر ی حالت کا اعتبار  اور حسن ظن 96
تکفیر کے موانع او رعذر کا لحاظ 101
عمل کفر اور کا فر میں فرق 102
تکفیر سے پہلے اتمام حجت 103
تکفیر معین  او رتکفیر مطلق کا فر ق 103
تکفیر ہر فرد کا کام نہیں 104
تکفیر توبہ  او رقتل وقتا ل 105
مو انع تکفیر  کوکا فر قر ار دینے سے رو کنے والیڈچیزیں 106
جھالت  اور لا 107
شر یعت میں جہا لت کے عذر کا اعتبار 107
پہلی دلیل 107
دو سر ی دلیل 108
تیسر ی دلیل 110
چو تھی دلیل 111
پا نچویں  دلیل 113
کر ام کی آرا ء 113
خطا ءاور غلطی 115
شر یعت میں خطا کے غذر کا اعتبار 116
پہلی دلیل 116
دو سر ی دلیل 117
تیسر ی دلیل 118
چو تھی دلیل 118
پا نچویں  دلیل 119
فصل…… 3 اکرا ء 121
اکرا ہ کی صورت میں کلمہ کفر کی گنجا ئش 121
پہلی دلیل 121
دو سر ی دلیل 123
افضل کیا ہے 123
اکر اہ کا تعلق قو لاور فعل کے ساتھ ہے نہ کہ دل کے ساتھ 125
 فصل….. تا ویل 127
 تا ویل کسے کہتے ہیں 127
تا ویل کا عذر تسلیم کیا جا ئے گا خو اہ تا ویل کا تعلق  عقا ئد سے  ہو یا فرو عات سے 127
 تا ویل کے عذر  او رما نع تکفیر ہو نے کے با رے میں اہل کی آراء 128
تا ویل کر نے والے  فر قو ں کے بار ے  میں حکم 129
  تا ویل کر نے والے  فر قو ں کے بار ے  میں امام احمد بن حنبل ﷭ کا نقطہ نظر 130
اس سلسلہ میں علامہ ابن  تیمیہ ﷭ کا نقطہ 132
خلا صہ کتا ب 135
ایمان اور اس کے متعلقا ت 135
کفر اور مکفرات 136
کفر اعتقادی ( اعتقادی  نو اقض – اعتقادی  مکفرات ) کی بنیادی صو رتیں 137
قولی مکفرات ۔ قولی نواقض  کی بنیادی  صو رتیں 141
ضوا بط  تکفیر 142
ضمیمہ کتا ب : العقید ہ الطحا ویہ مع الشر ح لابن  ابی العز ( ن٭متعلقہ  مبا حث کا تر جمہ ) 176
تمام اہل ہیں 148
فلسفیانہ بحثوں سے اجتنا ب 148
 اہل قبلہ ( مسلمانو ں  کی تکفیر کا مسئلہ ) 149
تکفیر مطلق او رتکفیر معین  کا 152
 تکفیر کے مو انع  اورشر ائط و ضو ابط 153
 کفر اکبر  او رکفر اصغر   : ایک اشکال 155
گزشتہ اشکال  کا جو اب 156
الحکم  بغیر ما  انزل  اللہ  بعض حا لتوں میں کفر  اکبرہے اور  بعض  میں کفر اصغر 158
ایمان کیا ہے 160
ایمان میں  کمی بیشی کا 163
 ایمان  اور میں فر ق 164
ایمان کے ساتھ ان شا ءاللہ  کہنا 164
اتحاد  امت  اور بد عتیوں  اور  فا سقوں کے ساتھ   عبا دات و معا ملات  میں تعامل کی حدود 166
 فا سق و بد عتی  کی نما ز  جنا زہ  کا 168
کسی کو یقینی  طو ر پر  جنتی  یا جہنمی کہنا 170
کا قتل  حرام ہے سو ائے  تین صورتوں کے 170
 حکمرانوں  کے خلا ف  خرو ج کا 171

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
4 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...