اسلامی عقائد اردو ترجمہ شرح عقیدہ طحاویہ

عقائد شرح عقیدہ طحاویہ

 

مصنف : علامہ ابن ابی العز الحنفی

 

صفحات: 676

 

اعمال صالحہ کا اعتبار ایمان پر موقوف ہے اس لیے کہ ایمان اصل ہے ۔ امام بخاری﷫ نے اعتقادی اصولوں کو کتاب الایمان اور کتاب التوحید کے تحت نہایت مفصل او رمدلل بیان فرمایا ۔امام ابوداؤد اوربعض دیگر آئمہ کرام نے ان اصولوں کو کتا ب السنۃ کے تحت ذکر کیا ہے جہاں اثباتی انداز میں کی ربوبیت، الوہیت اس کے اوصاف کا ذکر فرمایا ہے وہاں منفی انداز میں ان فرقوں کو گمراہ قرار دیا جنہوں نے اللہ کی صفات کا انکار کیا ۔ عقیدہ پر خصوصیت کے ساتھ بعض جلیل القدر اہل نے عقائد کے عنوان پر کتابیں تالیف کی ہیں ۔شیخ الاسلام ابن تیمیہ ﷫ نے العقیدۃ الواسطیہ، العقیدۃالحمویہ،شرح العقیدہ الاصفہانیہ او رامام طحاوی﷫ نے العقیدۃالطحاویہ کے نام سے رسائل تالیف فرمائے۔ ان کے علاوہ بعض دیگر محدثین نے نہایت عمدہ او رمؤثر انداز میں کتابیں تالیف کیں۔ہنوز یہ سلسلہ جاری وساری ہے۔ زیرنظر کتاب ’’ عقائد اردور شر ح عقیدہ طحاویہ‘‘علامہ ابو جعفر الورّاق الطحاوی﷫ کی عقیدہ کے موضوع پر معروف کتاب ’’ العقیدہ الطحاویہ ‘‘ کی شرح کا ہے ۔ عقید ہ طحاویہ کی یہ ضخیم شرح علامہ ابن ابی العز الحنفی نےترتیب دی ۔جس میں احسن انداز میں عقائد کا احاطہ کیا گیا ہے اور اہل والجماعت کےعقائد بیان کیے گئے ۔ہیں۔ کتاب مذکور کی خو بی یہ ہے کہ تمام اسلامی عقائد کو مختصراً بیان کردیا گیا ہے اور باطل فرقوں کے بالمقابل اہل سنت والجماعت کے افکارونظریات کی نمائندگی کی گئی ہے یہ شرح اپنی اہمیت وافادیت کے باعث تقریبا تمام عربیہ،جامعہ اسلامیہ اور دیگر سعودی کی جامعات وکلیات کے نصاب میں شامل ہے۔کتاب کے آغاز میں علامہ ناصر الدین البانی ﷫ کامقدمہ نہایت قیمتی نادر کا خزانہ ہے جس میں انہو ں نے کے بارے میں نادر بہم پہنچائی ہیں۔ علامہ زاہد الکوثری اور ان کے شاگرد علامہ ابو غدہ کے اعتراضات کے جس تحقیقی انداز میں انہوں نے پوسٹ مارٹم کیا ہے یقیناً انہی کا حصہ ہے ۔ شرح عقیدہ طحاویہ کا یہ سلیس و آسان فہم معروف عالم مصنف ومترجم کتب کثیرہ مولانا محمد صادق خلیل ﷫ نے تقریبا تیس سال قبل شائع کر کے اپنے ادارہ ضیاء السنۃ سے شائع کیا ہے جسے کے اساتذہ وطلباء کے ہاں بڑی مقبولیت حاصل ہوئی ۔ تعالیٰ ان کی اس کاوش کوقبول فرمائے اور ان کےمیزان حسنات میں اضافہ فرمائے (آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
مقدمہ 12
چند وضا حتیں ملاحظہ فرمائیں 19
پہلی وضاحت 19
دوسر ی وضاحت 20
امام کے بارے میں علامہ البانی کا قول 21
تیسری وضاحت 24
علامہ البانی کی  تخریج پر ابو غدہ کی تنقید 25
علامہ البانی کی عبارات میں تناقض 27
مقدمہ 31
عقیدہ طحاویہ کے مؤلف کے حالات 36
ابن یونس کا قول 37
ذہبی کا قول ؛ 37
ابن کثیر کا قول 37
تصانیف امام طحاوی 37
وفات 38
مقدمہ 39
تخریج کا نیا انداز 39
اعتراض 40
تفصیلی جواب 40
وضاحت کے لیے ایک مثال 41
پہلا اعتراض 41
دوسرا اعتراض 42
تیسرا اعتراض 42
چوتھا اعتراض 42
پانچواں اعتراض 42
پہلے اعتراض کا جواب 43
دوسرے اعتراض کا جواب 46
دو مثالیں 49
دوسری مثال 50
پہلی صورت 52
پہلا جواب 52
ابو غدہ کا مملکت سعودیہ میں تدریسی منصب 69
خاتمہ 82
اصول کی معرفت 84
دو بنیادی 85
تکلیف مالا یطاق درست نہیں 86
کون  لوگ گمراہ ہیں 87
اور تابعین آپ کی اتباع فرماتے رہے 89
امام ابو جعفر طحاوی ؒ 90
تابعین  کرام کی مساعی 91
کلام کی مذمت میں امام ابو یوسف کا قول 92
کا قول 93
کا فتوی 93
رسول ﷺ جامع علوم دیئے گیے تھے 94
عقیدہ طحاویہ کی شروح 94
اولا کیا واجب ہے ََ؟ 97
کی اقسام 98
صفات کا  انکار 98
جہم بن صفوان کے 98
توحید  فی الربوبیت 99
فرعون اور اسکی قوم 99
اعتراض اور اس کا جواب 100
ثنویہ اور مانویہ کا نظریہ 101
عیسائیوں کا نظریہ 101
دلیل تمانع 102
ایک وضاحت 102
فی الالوہیت 106
فطرت ہے 107
کے فطرت ہونے کے عقلی 108
امام سے مروی ایک حکایت 109
فی الربوبیت کا اثبات مثال کے ساتھ 112
اذا الا بتغوا کی  تشریح میں اختلاف 115
کی عمومی قسمیں 115
پہلی قسم 116
دوسری قسم 116
شھد انہ لاالہ لا ھو  کی تشریح 117
شھد کے معنی کی 117
مراتب 117
117
تکلم و الخبر 118
الاعلام والفعل 118
الامر 119
حکم اور قضا کا  استعمال 121
نبوت 123
بینات حضرت ہود ّ 125
آفاق وانفس 126
سوال 127
جواب 127
الخاصہ کا ذکر 129
صفات الہیہ میں اہل کا مسلک 132
سوال 136
جواب 137
سوال 137
جواب 137
موجودہ قد یم ازلی یا حادث 137
الفاظ کی معانی پر دلالت 139
ایک مثال 139
اور عربی کی اصطلاحات 141
رسولﷺ اور امور غیب 142
تین درجات 142
کتاب میں اثباتی صفات 145
متکلمیں کا صفات کے بارے میں بیان 145
لاالہ الااللہ کی تر کیب نحوی 148
وجود باری پر متکلمین کے اور اسلوب  150
کیا قدیم کا نام ہے ؟ 151
قدریہ کی وجہ تسمیہ 153
اہل کا کے بارے میں مؤقف 153
ارادہ کی قسمیں 154
دونوں ارادوں میں فرق 155
کیا کا امر اس کے ارادہ کو مستلزم ہے ؟ 156
قدریہ کا استدلال 157
جواب 157
مثال 158
امام کا قول 160
نعیم بن حماد کا قول 160
اسحاق بن راھویہ کا قول 160
اہل سنت کی تصریحات 161
مقدمات کی ترکیب 162
الحی القیوم کی تشریح 165
کا قول 168
مثال 169
کیا تعالی محل حوادث ہے ؟ 169
وجہ ثانی 186
وجہ ثالث 186
امام عبدالعزیز مکی کا بشر مریسی کےساتھ مناظرہ 187
کے پر عقلی دلیل 188
معتزلہ کا نظریہ 190
سوال 190
جواب 190
ایک  اشکال اور اس کا جوا ب 194
سوال 195
جواب 196
وہب بن منبہ کا قول 197
سچی نبوت اور جوٹھی نبوت میں امتیاز 200
صدق کذب کے قرائن 202
حضرت خدیجہ کا بیان 203
نجاشی کا بیان 204
ورقہ بن نوفل کابیان 204
ہرقل کا بیان 204
صدق کذب کے میں  تفاوت 207
کے متواتر ہیں 208
رسول اکرم ﷺ کی نبوت  صادقہ کی دلیل 209
رسول اور نبی میں فرق 210
رسولوں کی بعثت کی بہت بڑی نعمت ہے 211
ایک اشکال اور  اس کا  جوا ب 213
محبت کے  مراتب 218
آپ کی بعثت عام تھی 220
لفظ کافۃ کی صرفی  نحوی  223
223
معتزلہ کے شبہ کا ازالہ 225
کے متکلم ہونے پر کتاب و سے 226
پاک کے مخلوق ہونے پر معتزلہ کے  227
امام  عبدالعزیز مکی  بشر مریسی کا مناظرہ 228
پاک میں لفظ کل کا  استعمال 229
پاک کے مخلوق ہو نے پر دوسری دلیل 230
معتزلہ کا ایک اور استدلال 232
پاک اہل کے نزدیک غیر مخلوق ہے 234
امام کا قول 234
متاخرین حنفیہ کا قرآ ن پاک کےبارے  میں نظریہ اور  ان کا رد 237
کن معانی میں استعمال ہوتا ہے 239
 اعتراض 243
جواب 243
امام طحاوی  کا قول 245
کلام اور قول  سے کیا مراد ہے 245
شیخ  حافظ الدین  النسفی کا  قول 249

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
17.8 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...