اسلامی ریاست میں عدل نافذ کرنے والے ادارے

ریاست میں عدل نافذ کرنے والے ادارے

 

مصنف : سید عبد الرحمن

 

صفحات: 67

 

ایک زندہ انسانی وجود کو جتنی ضرورت آکسیجن کی ہوتی ہے تقریبا اتنی ہی ضرورت نفاذ میں قیام عدل کی ہے۔کیونکہ قیام عدل کے بغیر نظام کا کوئی بھی جز اپنی صحیح صورت میں نشو و نما نہیں پا سکتا ہے۔اسی لئے مجید اور رسول ﷺ میں عدل کو قائم کرنے پر بہت زیادہ زور دیا گیا ہے۔ میں عدل قائم کرنے کے راستے میں بے شمار دشواریاں اور رکاوٹیں ہیں۔ان رکاوٹوں میں سے  سب سے بڑی رکاوٹ یہ ہے کہ ہمارے ملک میں ابھی تک وہ ادارے صحیح معنوں میں قائم نہیں ہو سکے ہیں جن کے توسط سے کا حقیقی نظام عدل قائم کیا جا سکے۔یہ کام قدرے صبر آزما اور دیر طلب بھی ہے ،اگر کوئی چاہتا ہے کہ چند مہینوں میں یہ کام ہو جائے تو اس کی یہ خواہش درست نہیں ہے۔تاہم اس کا یہ مطلب بھی نہیں کہ اس کا  م کو کٹھن سمجھ کر ہمت ہی ہار دی جائےاور کسی قسم کی پیش رفت ہی نہ کی جائے۔کام کرنا ہوگا اور محنت کرنا ہوگی ان شاء جلد یا بدیر کامیابی حاسل ہوگی۔ زیر کتاب ” ریاست میں عدل نافذ کرنے والے ادارے” محترم جناب سید عبد الرحمن صاحب کی تصنیف ہے ،جس میں انہوں نے ان خطوط کی نشاندہی کی ہے جن کی بنیاد پر نفاذ عدل کے اداروں کی تشکیل یا کی جا سکتی ہے۔فاضل مقالہ نگار کا یہ مقالہ پہلےدیال سنگھ لائبریری سے شائع ہونے والے  سہ ماہی مجلے منہاج  کے نظام  عدل نمبر شمارہ جنوری 1974ء میں شائع ہوا اور اہل نے اسے بہت پسند فرمایا۔لہذا مقالے کی افادیت کے پیش اسے کتابچے کی شکل میں شائع کر دیا گیا جو اس وقت آپ کے سامنے ہے۔ تعالی سے ہے کہ وہ مولف کی اس کاوشوں کو اپنی بارگاہ میں قبول فرمائے اور ان کے میزان حسنات میں اضافہ فرمائے۔آمین

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض ناشر 1
مقدمہ 3
تصور عدل کے نمایاں خدوخال 4
قیام عدل حکومت کی بنیادی ذمہ داری 8
حکومت میں نفاذ عدل کے ادارے 11
قضاء 13
افتاء 26
حوالہ جات 63

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
2.5 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...