اظہار حق اردو ترجمہ صیانۃ الانسان عن وسواس الشیخ دحلان

اظہار اردو صیانۃ الانسان عن وسواس الشیخ دحلان

 

مصنف : محمد بشیر سہسوانی

 

صفحات: 545

 

اسلام  کی  فلک  بوس  عمارت  عقیدہ  کی  اسا س پر قائم ہے  ۔ اگر  اس بنیاد میں  ضعف یا  کجی  پیدا ہو جائے تو کی عظیم عمارت  کا وجود  خطرے میں پڑ جاتا  ہے۔ عقائد کی تصحیح اخروی فوز و فلاح کے لیے اولین شرط ہے۔ یہی وجہ ہے کہ کی طرف سے بھیجی جانے والی برگزیدہ شخصیات سب سے پہلے کا بلند کرتے ہوئے آتی ہیں۔  اور  نبی کریم ﷺ نے  بھی مکہ معظمہ میں  تیرا سال کا طویل عرصہ  صرف اصلاح ِعقائدکی جد وجہد میں صرف کیا عقیدہ کی وتفہیم کے لیے   جہاں نبی  کریم ﷺ او رآپ  کے کرا م﷢ نے بے شمار قربانیاں دیں اور تکالیف کو برداشت کیا  وہاں نےبھی دن رات اپنی  تحریروں اور تقریروں میں اس کی اہمیت کو  خوب واضح کیا ۔ عقائد کے باب میں اب تک بہت سی کتب ہر میں شائع ہو چکی ہیں میں بھی اس موضوع پر قابل قدر تصانیف اور تراجم سامنے آئے ہیں۔ زير كتاب’’ اظہارِ اردو صیانۃ الانسان عن وسواس الشیخ دحلان ‘‘ شیخ الکل فی الکل سید نذیر حسین محدث دہلوی﷫ کے  ممتاز اولین شاگر علامہ محمد  بشیرسہسوانی﷫ کی  عقیدہ میں معرکۃ الآراء کتاب ’’صیانة الانسان عن وسوسةالشیخ دهلان کا اردو ہے ۔یہ کتاب علامہ سہسوانی ﷫ نے شافعی مفتی شیخ احمد دحلان مکی سے مسئلہ پر مناظرہ کےبعد اس کے ردّ میں  مرتب کی اور اس میں  میں عقیدے  سے متعلق نہایت اہم مباحث قلمبند کیے ہیں۔یہ پہلی مرتبہ مطبع فاروقی ، سے طبع ہوئی اس کےبعد نجد سے بھی کئی مرتبہ شائع  ہوئی۔علامہ رشید رضا ی صاحب المنار نے اس کتاب پر کرتے ہوکہا کہ: ’’ کتاب  ’’صیانۃ الانسان‘‘ صرف شیخ دحلان کاردّ ہی نہیں  ہے  اور نہ صرف ان فقہاء کاردّ ہے جن سے شیخ دحلان نے اپنے کو نقل کیا ہے…بلکہ یہ  ان کےبعد آنے والے تمام قبر پرستوں اوربدعتیوں پر ردّ ہے‘‘یہ کتاب اس قدر اہمیت کی حامل  ہےکہ پر لکھی جانے والی اکثر کتب میں اس کتاب کےبکثرت حوالے ملتے ہیں۔ حتیٰ کہ علامہ ناصر الدین البانی﷫ نےبھی اس کے حوالے اپنی متعدد تحریروں میں دیے ہیں ۔صیانۃ الانسان کی ہمہ گیر افادیت کے پیش سہوانی خاندان کے ایک صاحب شخصیت جناب عبد المعید نقوی﷾ کی خواہش پر  جناب عبد العظیم حسن زئی﷾(مدرس جامعہ ستاریہ،کراچی ) نےاسے قالب میں ڈھالا ہے۔ تعالیٰ مصنف،مترجم وناشرین کی  کاوش کو قبول فرمائے ۔(آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض مترجم 21
مقدمہ 29
آغاز کتاب 41
قبر نبوی ﷺ کی زیارت کے لیے استدلال 44
برزخی زندگی کودنیاوی زندگی پر قیاس کرنا باطل ہے 47
ان کے استعفار کےبعد ےپﷺ کے ان کے لیے استغفار کی 51
یہ کہنا کہ ہر گناہ کورسول ﷺکی قبر کے پاس آنا چاہیے 57
آپﷺکی قبر کے پاس کے 60
ہجرت کا لغوی معنی 64
مہاجرین کےلیے مکہ میں ٹھہرنا حرام ہے 67
راویان کی جرح کےمراتب 74
بن عمر العمری کے ضعف کے بارے میں 75
کسی راوی کو ثقہ کہنے کے تین معانی ہیں 76
سر میں سے متعلق 83
حفص میں ضعیف اور قراءت میں ثقہ ہے 85
احمد بن محمد بن الحجاج ، اپنےباپ دادا کی طرح ضعیف ہے 89
آپ ﷺکی قبر کےبارے میں غلو کرنے کا 100
آپﷺ کی تعظیم سے متعلق السبکی کی عبارت 101
کی طرف لے جانے والی بدعی زیارت ممنوع ہے 106
شہر بن حوشب کےبارے میں محدثین کی آراء 112
سبب بیان کیے بغیر جرح قبول کرنے کا مطلب 113
شاذ او رمنکر کس کو کہا جاتا ہے ؟ 114
متن اور سند میں شاذ کی مثالیں 120
جامع ترمذی میں متعدد معلل ہیں 141
کو صحیح قرار دینے کی دو قسمیں ہیں 143
بن صلاح المصری سےفاطمہ بنت اسد کی 146
آدم﷤ کا اپنی مغفرت کے لیے بحق النبی ﷺدعا کرنا 150
عمر﷜ کے ’’محدث‘‘ ہونے کا کیا معنی ہے ؟ 159
عمر ﷜کےاجتہاد پر اعتراض 161
معروف میں کی اطاعت 170
وسیلہ کی 171
باطل وسیلہ : میں شمار ہوتا ہے 176
اعتقادی اورعملی کفر 189
اس بات کی کہ مردوں کو پکارنا عملی اور اعتقادی کفر ہے 190
قبروں پر جانے اوران کےوسیلے کی تین حالتیں ہیں 195
کے ارادے میں کا اثر بچند وجوہ ناممکن ہے 202
کےہاں وسیلہ لینا اللہ کی تنقیص ہے 206
کے ہاں وسیلہ لینے والے کےکفر پر اجماع 208
شیخ محمد بن عبد الوہاب کے فرزند کا قول 213
وسیلہ کی اقسام ہیں 234
اعمال صالحہ 236
نبی ﷺ کی 238
صالحین کی 239
بحق فلاں و بجاھۃ کا وسیلہ 240
کسی اور کے عمل یا ذات کا وسیلہ باطل ہے 242
غیر کے پکارنے کے متعدد مراتب 244
مانعین وسیلہ کے اقولا میں وحلان کی تحریف 252
یہ تاویل کہ استغاثہ بغیر مجاز ہے 259
آپﷺ کی تعظیم کی اجازت 267
آپﷺ کی شرعی اور بدعی تنظیم 276
عمل اور استطاعت سے متعلق 287
منصور اور کے مناظرے کی روایت 299
آپﷺ اور مومنین کی قبروں کے پاس مشروع 303
قسم اورسوال میں کے نزدیک صحیح کیا ہے 310
جنہیں شرعی دلیل بنا دیا گیا 312
الطیر موضوع ہے 316
سواد بن قارب جن کے ساتھ واقعہ اور وسیلہ 326
ابن حبان کا کتاب الثقہ میں طریقہ 339
بعض لوگوں کی دعاؤں سے استدلال اور باطل قیاس 347
معصیت اور صحابی کے لیے بھی جائز نہیں 356
جماعت سے علیحدگی سے متعلق 358
حدیث ’’ماراہ المسلمون حسنات‘‘ 364
فتنوں سے متعلق 366
جہل اور کفر کے غلبہ اور ایک جماعت کا پر رہنا 377
کو بلفظہ پہنچانا ضروری ہے اور لزوم جماعت 390
قضا کے بارے میں عمر ﷜کا قاضی شریح کو 394
جنازہ ہے ، جنازہ کی ماثورہ 395
اور رمی جمارکی 425
’’واہ محمد‘‘ کے بارے میں آثار 432
فاطمہ ؓ کا اپنے والد کومخاطب کرنا 441
کسی کو بلا دلیل کافر قرار دینا 448
غرباء کون لوگ ہیں ؟ 452
کا صحیح مفہوم کیا ہے ؟ 457
کی کا خلاصہ 461
سعود نے مکہ میں و کی دی 472
ہر اپنے شیخ کی تعریف کرتا ہے 484
کی دو قسمیں ہیں ۔ توحید ربوبیت اور توحید الوہیت 489
ربوبیت اور الوہیت لازم ہیں 493
شیخ کا ان لوگوں کے نام جنہوں نے شیخ کو کافر قرار دیا 514
سلیمان بن عبد الوہاب کا جواب 516
شیخ پر الزامات لگانےوالا ایک اور گروہ اور اس کا جواب 527
خوارج کےبارے میں 535
خوارج کےبارے میں احادیث ، خوارج کی نشانیاں  ( پہچان) 539
بعض علاقوں  اور ان کے باشندوں کے بارے میں 539
شیخ دحلان کا حدیثیں گھڑنا 540
محمد بن عبد الوہاب کا تمام تنقیدوں کا جواب 542
کے بعد ذکر و اذکار 543

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
18.2 MB ڈاؤن لوڈ سائز

You might also like
Comments
Loading...