Categories
Islam اعمال تجوید وقراءات زبان قراء

شرح طیبۃ النشر

شرح طیبۃ النشر

 

مصنف : قاری محمد ادریس العاصم

 

صفحات: 538

 

قرآن مجید نبی کریم پر نازل کی جانے والی آسمانی کتب میں سے آخری کتاب ہے۔آپﷺ نے اپنی زندگی میں صحابہ کرام ﷢ کے سامنے اس کی مکمل تشریح وتفسیر اپنی عملی زندگی ، اقوال وافعال اور اعمال کے ذریعے پیش فرمائی اور صحابہ کرام ﷢کو مختلف قراءات میں اسے پڑھنا بھی سکھایا۔ صحابہ کرام ﷢ اور ان کے بعد آئمہ فن اور قراء نے ان قراءات کو آگے منتقل کیا۔ کتبِ احادیث میں اسناد احادیث کی طرح مختلف قراءات کی اسناد بھی موجود ہیں ۔ بے شمار اہل علم اور قراء نے علوم ِقراءات کے موضو ع پرسینکڑوں کتب تصنیف فرمائی ہیں اور ہنوز یہ سلسلہ جاری وساری ہے ۔زیر نظر کتاب قراءات کے مشہور ومعروف امام محمد بن محمد الجزری﷫ کی کتاب طیبۃ النشر کی اردو زبان میں تفہیم وشرح ہے ۔علامہ جزری ﷫ نے اپنی اس کتاب میں الشاطبیہ اور الدرۃ سے زائدوجوہ اور قراءات کو اختصارکےساتھ جمع فرمادیا ہے۔ طیبۃ النشر کے شارح استاد القراء والجودین الشیخ ا لمقری محمد ادریس العاصم﷾ نے اس میں بہت تسہیلی انداز کو اختیارکیا ہے۔ شرح کی تیاری میں شاطبیہ اور درہ کی بہت سے شروحات سے استفادہ کرتے ہوئے انہوں نے کوشش کی ہےکہ اس میں کوئی علمی نکتہ یاپہلو تشنہ نہ رہے، اور بات بہت زیادہ طویل بھی نہ ہونےپائے ۔قاری صاحب نے طلباء کی سہولت کی خاطر ترجمہ میں ایسا انداز اختیار کیا ہے، جو شعروں کوحل کرنے اوران سے قراءات اخذ کرنے میں آسان ترین ہے ۔ موصوف قاری صاحب ماشاء اللہ اس کتاب کے علاوہ بھی تجوید وقراءات کے موضوع پر متعدد کتب کے مصنف اور معروف قراء کے استاد ہیں۔ دورِ حاضر میں تجوید قراءات کےمیدان میں ان کی نمایاں خدمات ہیں اور ان کی کتب مدارس وجامعات میں شامل نصاب ہیں۔ اللہ تعالی خدمت قرآن میں ان کی جہودکوشرف قبولیت سے نوازے۔آمین

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض شارح 3
مقدمہ 6
باب استعاذہ 48
باب بسملہ 50
سورہ ام القرآن 53
باب ادغام الکبیر 60
باب ھاء الکنایہ 79
باب مد و قصر 86
باب ہمزتین 109
باب ہمزہ مفرد 112
باب وقف ہمزہ 130
فصل دال قد 144
باب حروف قربت 149
باب اللامات 196
باب فرش الحروف 240
سورہ البقرہ 240
سورہ العمران 284
سورہ النساء 298
سورہ المائدہ 309
سورہ الانعام 314
سورہ الاعراف 332
سورہ الانفال 346
سورہ التوبہ 351
سورہ یونس 356
سورہ ہود 361
سورہ یوسف 369
سورہ الرعد 374
سورہ النحل 381
سورہ الاسراء 384
سورہ الکہف 392
سورہ مریم 400
سورہ طہ 404
سورہ الانبیاء 412
سورہ الحج والمومنون 415
سورہ النور و الفرقان 424
سورہ الشعراء 432
سورہ العنکبوت والروم 442
سورہ لقمان و سورہ یس 446
سورہ الصافات 463
سورہ ص سے سورہ الاحقاف تک 466
سورہ الحجرات سے سورہ الرحمن تک 488
سورہ واقعہ سے سورہ التعابن 494
سورہ التغابن سے سورہ الانسان تک 402
سورہ الانسان سے سورہ المرسلات تک 510
سورہ النباء سے سورہ التطفیف تک 517
سورہ الشمس سے آخر القرآن تک 528
باب التکبیر 528
خاتمہ 532
فہرست مضامین 535

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
16.3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam اصول حدیث تاریخ

شرح نخبۃ الفکر فی مصطلح اہل الاثر سوالاً جواباً

شرح نخبۃ الفکر فی مصطلح اہل الاثر سوالاً جواباً

 

مصنف : حافظ ابن حجر عسقلانی

 

صفحات: 130

 

اصولِ حدیث پر  حافظ ابن حجر عسقلانی﷫ کی سب سے  پہلی اور اہم  تصنیف نخبة الفکر فی مصطلح أهل الأثر  ہے  جو علمی حلقوں میں مختصر نام نخبة الفکر سے  جانی جاتی ہےاور اپنی افادیت کے  پیش نظر اکثر مدارس دینیہ   میں  شامل نصاب ہے۔ اس مختصر رسالہ میں  ابن حجر  نے  علومِ  حدیث کے تمام اہم مباحث کا احاطہ کیا ہے  ۔حدیث اوراصو ل میں  نخبۃ الفکر کو وہی مقام حاصل ہے جو علم  لغت میں خلیل بن احمد  کی  کتاب العین  کو ۔مختصر ہونے کے باوجود یہ اصول  حدیث میں اہم ترین مصدر ہے کیونکہ بعد میں  لکھی جانے والی کتب اس سے بے نیاز نہیں ۔حافظ ابن  حجر نے ہی  اس کتاب کی  شرح  نزهةالنظر فی توضیح نخبة الفکر فی مصطلح أهل الأثر کے نام سے لکھی جسے   متن کی طر ح قبول عام حاصل ہوا۔ اور پھر ان کے  بعد  کئی اہل علم  نے  نخبۃ الفکر کی شروح لکھی ۔ زير نظر كتاب شرح نخبة الفكر في مصطلح أهل الأثر کا آسان فہم  اردو ترجمہ ہے۔یہ  ترجمہ   مولانا عبد الغفار بن عبد الخالق﷾ (متعلّم مدینہ یونیورسٹی ) کی اہم کاوش ہے   یہ کتاب  اکثر مدارس   کے  نصاب میں شامل ہے    لہذااس    کوسمجھنے کے لیے یہ سوالاً جواباً اردو تلخیص طلباء کے لیے انتہائی مفید ہے۔  موصوف نے  دلچسپ  ودلنشین انداز میں دل ودماغ میں اتر جانے والے سوال وجواب کی صورت میں  اسے مرتب کیا ہے ۔ جس سے  طلبہ وطالبات کے لیے   اصل کتاب  کو  سمجھنا آسان  ہوگیا ہے ۔ موصوف نے  کتاب ہذا کے علاوہ     شرح  مائۃ عامل اور اطیب المنح ، ہدایۃ النحو، الفوز الکبیر اور نحو میر کی بھی سوالاً وجواباً تسہیل  کی  ہے جس سے طلباء کے لیے ان  دقیق کتب کو سمجھنا نہایت آسان ہوگیا ہے ۔ اللہ تعالیٰ    موصوف کی  اس کاوش کو شرفِ قبولیت سے نوازے  اوران کی   زندگی اور علم وعمل  میں برکت فرمائے  اور  انہیں اس میدان میں  مزید خدمت کی توفیق عطا فرمائے ۔۔(آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
انتساب 9
حرف تمنا 10
تقریظ: مولانا رحمت شاکر﷾ 12
تقریظ از:مولنا خواجہ محمدعدنان﷾ 13
تقریظ از: مولانا یحییٰ شاہین﷾ 14
تقریظ از: مولانا یٰسین ہزاروی﷾ 15
تقریظ از: مولانا عبداللہ بن حافظ عبد المنان نور پوری﷾ 16
مقدمہ مصنف 17
مقدمہ کتاب تاریخ واصول حدیث 19
ابتدائی اصطلاحات 21
اصول حدیث کی تعریف موضوع اور فائدہ 21
حدیث وخبر اثر اور دوسری اصطلاحات 22
حدیث قدسی 23
سند 23
متن 23
اسناد 24
مسند ومسند 24
روایت ودرایت 25
حافظ 25
خبر کی تقسیم متواتر اور آحاد کی طرف 26
خبر متواتر 26
متواتر کی اقسام 26
متواتر کی شرائط 26
متواتر کا حکم 27
اخبار آحاد 29
اخبار آحاد کی اقسام 30
خبر مشہور 30
خبر عزیز 31
خبر غریب 32
غریب کی اقسام 32
آحاد کی تقسیم مقبول اور مردود کی طرف 35
خبر مقبول اور اس کاحکم 35
خبر واحد مختف بالقرائن اور اس کی اقسام 35
مقبول کی تقسیم صحیح اور حسن کی طرف 37
صحیح لذاتہ 37
تعریف کی شرح 37
صحیح کے مراتب 38
شیخین کی شرط 40
حسن لذاتہ 42
صحیح لغیرہ 42
حسن لغیرہ 43
ترمذی وغیرہ کا قول’’حدیث حسن صحیح‘‘ہے 44
ترمذی کا قول’حدیث حسن غریب‘‘ہے 45
زیادت ثقہ اور خبر کی محفوظ وشاذ کی طرف تقسیم 45
خبر معروف ومنکر 47
متابعت اور اس کی اقسام 48
متابع شاہد اعتبار 50
خبر مقبول کی تقسیم 52
دو مقبول احادیث میں تعارض پیدا ہو جائے؟ 54
نسخ اور اس کو پہچاننے کے طریقے 55
خبر مردود ارو رد کے اسباب 57
سقط کی اقسام 57
مردود کی سقط کے اعتبار سے تقسیم 58
خبر معلق 58
تعدیل مبہم 59
خبر مرسل 59
مرسل کا حکم 60
مراسیل صحابہ 61
خبر معضل 61
خبر منقطع 61
خبر مدلس 62
تدلیس کی اقسام 62
مرسل مفی 63
تدلیس اور مرسل خفی میں فرق 63
وہ امور جن سے تدلیس اور ارسال خفی پہچانا جاتا ہے 64
راوی میں جرح وطعن کے اسباب 66

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3.3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam احکام ومسائل اہل حدیث نحو و صرف

اردو خلاصہ شرح مائتہ عامل (سوالاً جواباً)

اردو خلاصہ شرح مائتہ عامل (سوالاً جواباً)

 

مصنف : ابو محمد عبد الغفار بن عبد الخالق

 

صفحات: 96

 

علوم ِنقلیہ کی جلالت وعظمت اپنی جگہ مسلمہ ہے مگر یہ بھی حقیقت کہ ان کے اسرار ورموز اور معانی ومفاہیم تک رسائی علم نحو کے بغیر ممکن نہیں کلام الٰہی ،دقیق تفسیر ی نکات،احادیث رسول ﷺ ،اصول وقواعد ،اصولی وفقہی احکام ومسائل کا فہم وادراک اس علم کے بغیر حاصل نہیں کرسکتے یہی وہ عظیم فن ہےکہ جس کی بدولت انسان ائمہ کےمرتبے اور مجتہدین کی منزلت تک پہنچ جاتاہے ۔جوبھی شخص اپنی تقریر وتریر میں عربی دانی کو اپنانا چاہتا ہے وہ سب سے پہلے نحو کےاصول وقواعد کی معرفت کا محتاج ہوتاہے ۔عربی مقولہ ہے: النحو فی الکلام کالملح فی الطعام یعنی کلام میں نحو کا وہی مقام ہے جو کھانے میں نمک ہے ۔سلف وخلف کے تمام ائمہ کرام کااس بات پراجماع ہے کہ مرتبۂ اجتہاد تک پہنچنے کے لیے علم نحو کا حصول شرط لازم ہے قرآن وسنت اور دیگر عربی علوم سمجھنےکے لیے’’ علم نحو‘‘کلیدی حیثیت رکھتاہے اس کے بغیر علومِ اسلامیہ میں رسوخ وپختگی اور پیش قدمی کاکوئی امکان نہیں۔ قرن ِ اول سے ل کر اب تک نحو وصرف پرکئی کتب ان کی شروح لکھی کی جاچکی ہیں ہنوز یہ سلسلہ جاری ہے۔ زیر نظر کتاب ’’ اردو خلاصہ شرح مائۃ عامل سوالاً جواباً‘‘ علم نحو کےامام علامہ عبد القاہر جرجانی کی علم نحو پر مائہ ناز کتاب ’’ مائۃ عامل ‘‘کی سوالاً جواباً اردو شرح ہے جس میں نحو کے ایک سو عوامل کوبیان کیا گیا ہے یہ کتاب اکثر مدارس کے نصاب میں شامل ہے   لہذامائۃ عامل کوسمجھنے کے لیے یہ شرح طلباء کے لیے انتہائی مفید ہے۔ سوالاً جواباً اس شرح کا اہم کام مولانا عبد الغفار بن عبد الخالق﷾ (مدرس الجامعۃ الحرمین اہل حدیث ماڈل ٹاؤن،گوجرانوالہ) نے بڑ ے آسان فہم انداز میں   کیاہے۔ جس سے طلبہ وطالبات کے لیے   اصل کتاب کو سمجھنا آسان ہوگیا ہے ۔اللہ تعالیٰ   فاضل مترجم کی زندگی اور علم وعمل میں برکت فرمائے ۔(آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
مقدمہ
انتساب 9
حر ف تمنا : 11
تقریظ : رحمت اللہ شاکر صاحب 12
تقریظ از : خواجہ محمد عد نان صاحب 13
مقدمہ 14
ابتدائی باتیں 16
عوامل کی تقسیم 16
النو ح الاول : پہلی قسم ۔۔حروف جارہ 18
حرف جر: باء 18
حر ف جر :لام 20
حر ف جر : من 20
حرف جر : حتیٰ 22
حرف جر : علیٰ 23
حرف جر : عن 24
حرف جر:فی 24
حر ف جر :کان 25
حرف جر: مذ و منذ 25
حرف جر :رب 26
حرف جر :واو 26
حرف جر : تاء 27
جواب قسم 27
حرف جر : حاشا، خلا، عدا 29
النو ع الثانی : دوسری قسم ۔۔۔حروف مشبہ بالفعل 31
حرف مشبہ بالفعل : ان ،ان 32
حر ف مشبہ بالفعل : کان 33
حرف مشبہ بالفعل :لکن 33
حرف مشبہ با لفعل : لیت 34
حرف مشبہ با لفعل :لعل 34
النو ح : تیسری قسم ۔۔۔ماولا : مشابہ بہ لیس 36
النو ح الرابع : چو تھی قسم ۔۔۔حروف نا صبہ اسم 37
حرف ناصب : واو 37
حرف ناصب :الا 37
حرف ناصب :یا 38
حرف ناصب : ا یا ، ھیا 38
حرف نا صب : ا ی ، ا 38
النو ع الخا مس : پانچوں قسم ۔۔حروف نا صبہ فعل 40
حرف ناصب : ا ن 40
حرف نا صب : لن 40
حرف ناصب : کی 41
حرف باصب : اذن 41
النو ع السادس : چھٹی قسم ۔۔۔حرف جازمہ 43
حرف جازم :لم 43
حرف جازم : لما 43
حرف جازم : لا مر امر 44
حرف جازم : لا ء نہی 44
حرف جازم : ان 45
النو ع السا بع : سا تویں قسم ۔۔۔اسمائے جازمہ فعل 47
اسم جازم: من 47
اسم جازم : ما 48
اسم جازم : ای 48
اسم جازم :متی 49
اسم جازم :اینما 49
اسم جازم :ا نی 50
اسم جازم : مھما 50
اسم جاز م : حیثما 51
اسم جازم : اذما 52
مضارع کو ر فع و جزم ورفع کا جواز 52
النوع الثا من : ا ٓ ٹھو یں قسم ۔۔اسمائے ناصبہ 53
اسم ناصب :عشر 53
اسم ناصب :کم 55
اسم ناصب : کا ین 56
اسم ناصب : کذا 56
النو ع التا سع : نو یں قسم ۔۔اسمائے افعال 58
اسم فعل : روید 58
اسم فعل : بلہ 59
اسم فعل : دونک 59
اسم فعل : علیک 59
اسم فعل : حیھل 59
اسم فعل : ھا 60
آخر ی تین اسمائے افعال 60
اسم فعل : ھیھا ت 60
اسم فعل : سرعان 61
اسم فعل : شتان 61
النو ع العاشر : دسویں قسم ۔۔۔افعال نا قصہ 62
فعل نا قص : کان 62
فعل نا قص : صار 63
فعل ناقص : ا صبح ، ا مسی ، ا ضحی 64
فعل ناقص : ظل ،بات 65
فعل نا قص : مادام 66
فعل ناقص : ما زال ، مابر ح ، ما فتی ، ما انفک 66
فعل نا قص ۔ لیس 67
النو ح الحادی عشر : گیا ر ہویں قسم ۔۔افعال مقا ربہ 68
فعل مقاربہ: عسی ٰ 68
فعل مقاربہ : کاد 69
فعل مقاربہ:اوشک 71
افعال مقاربہ کی تعداد میں اختلاف 71
فعل مقاربہ : جعل ، طفق ، ا خذ 71
النو ع الثانی عشر : بار ہویں قسم ۔۔۔افعال مد ح وذم 72
فعل مد ح : نعم 72
فعل ذم : بئس 74
فعل زم : ساء 75
النو ع الثالث عشر؛ تیر ہویں قسم ۔۔۔افعال قلوب 77
فعل قلوب: حسبت، ظنت ، خلت 78
فعل قلوب: علمت، رایت ، و جدت 78
فعل شک ویقین :رعمت 79
قیا سی عوامل 82
الاول: فعل 82
الثانی : مصدر 83
الثالث: اسم فاعل 86
الر ا بع : اسم مفعول 89
الخامس : صفت مشبہ ٍ91
اسادس: مضاف 93
السابع : اس تام 94
معنوی عوامل 91
الاول : مبتد اوخبر 95
الثانی : فعل مضارع 91

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3.6 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam ادب سیرت شروحات حدیث

شرح کتاب الجامع من بلوغ المرام

شرح کتاب الجامع من بلوغ المرام

 

مصنف : ابن حجر العسقلانی

 

صفحات: 354

 

بلوغ المرام من ادلۃ الأحکام، حافظ ابن حجر عسقلانیؒ کی حدیث پر لکھی گئی مشہور و متداول کتاب ہے۔ یہ مختصر اور جامع مجموعہ احادیث ہے۔ جس میں طہارت، نماز، روزہ، حج، زکاۃ، خرید و فروخت، جہاد و قتال غرض تمام ضروری احکام و مسائل پر احادیث کو فقہی انداز پر جمع کر دیا گیا ہے۔ ’’کتاب الجامع‘‘ اسی کتاب کا ہی ایک حصہ ہے جس میں آداب و اخلاق سے متعلق احادیث نبویہ کو جمع کیا گیا ہے۔ زیر نظر کتاب شیخ الحدیث حافظ عبد السلام بن محمد بھٹوی حفظہ اللہ نے لکھی ہے جو ’’کتاب الجامع‘‘ کے ترجمے تخریج احادیث اور تشریح احادیث پر مشتمل ہے۔ کتاب ھذا کا ترجمہ و تشریح، سادگی و سلاست کا بہترین مرقع ہے۔ کتاب میں انسان کی اصلاح سے تعلق رکھنے والے چھ ابواب جمع کئے گئے ہیں جن سے نفس انسانی کی صحیح تربیت ہوتی ہے۔ جن میں ادب کے بیان، نیکی کرنے اور رشتہ داری ملانے کے بیان، دنیا سے بے رغبتی اور پرہیزگاری کے بیان، برے اخلاق سے ڈرانے کے بیان، اچھے اخلاق کی ترغیب کے بیان اور ذکر و دعاء کے بیان پر مشتمل ابواب شامل ہیں۔ یہ کتاب اِس لائق ہے کہ اس کو مدارس ‎،کلیات اور جامعات کے ابتدا کی کلاسوں میں شامل نصاب کیا جائے تاکہ تعمیر سیرت کردار کی تکمیل ہو سکے اور مسلمانوں کی کامیابی و کامرانی کا خواب شرمندۂ تعبیر ہو سکے۔
 

عناوین صفحہ نمبر
عرض ناشر 13
مقدمہ 14
ادب کا بیان 18
نیکی اور (رشتہ داری)ملانے کا بیان 65
دنیا سے بے رغبتی اور پرہیز گاری کا بیان 101
برے اخلاق سے ڈرانے کا بیان 129
اچھے اخلاق کی ترغیب کا بیان 235
ذکر اور دعا کا باب 279
اللہ تعالیٰ کو محبوب دو کلمات 347

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
6.5 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam اسلام حلال و حرام زبان سنت سود شروحات حدیث علوم حدیث محدثین معاملات

شرح اربعین نووی 40 احادیث ) عبد المجید سوہدروی )

شرح اربعین نووی 40 احادیث ) عبد المجید سوہدروی )

 

مصنف : عبد المجید سوہدروی

 

صفحات: 105

 

کتاب اللہ اور سنت رسول ﷺدینِ اسلامی کے بنیادی مآخذ ہیں۔ احادیث رسول ﷺ کو محفوظ کرنے کے لیے کئی پہلوؤں اور اعتبارات سے اہل علم نے خدمات انجام دیں۔ تدوینِ حدیث کا آغاز عہد نبوی ﷺ سے ہوا صحابہ وتابعین کے دور میں پروان چڑھا او ر ائمہ محدثین کےدور میں خوب پھلا پھولا ۔مختلف ائمہ محدثین نے احادیث کے کئی مجموعے مرتب کئے او رپھر بعدمیں اہل علم نے ان مجموعات کے اختصار اور شروح ،تحقیق وتخریج او رحواشی کا کام کیا۔مجموعاتِ حدیث میں اربعین نویسی، علوم حدیث کی علمی دلچسپیوں کا ایک مستقل باب ہے ۔عبداللہ بن مبارک﷫ وہ پہلے محدث ہیں جنہوں نے اس فن پر پہلی اربعین مرتب کرنے کی سعادت حاصل کی ۔بعد ازاں علم حدیث ،حفاظت حدیث، حفظ حدیث اورعمل بالحدیث کی علمی او رعملی ترغیبات نے اربعین نویسی کو ایک مستقل شعبۂ حدیث بنادیا۔ اس ضمن میں کی جانے والی کوششوں کے نتیجے میں اربعین کے سینکڑوں مجموعے اصول دین، عبادات، آداب زندگی، زہد وتقویٰ او رخطبات و جہاد جیسے موضوعات پر مرتب ہوتے رہے ۔اس سلسلۂ سعادت میں سے ایک معتبر اور نمایاں نام ابو زکریا یحییٰ بن شرف النووی کا ہے جن کی اربعین اس سلسلے کی سب سے ممتاز تصنیف ہے۔امام نووی نے اپنی اربعین میں اس بات کا التزام کیا ہے کہ تمام تر منتخب احادیث روایت اور سند کے اعتبار سے درست ہوں۔اس کے علاوہ اس امر کی بھی کوشش کی ہے کہ بیشتر احادیث صحیح بخاری اور صحیح مسلم سے ماخوذ ہوں ۔اپنی حسن ترتیب اور مذکورہ امتیازات کے باعث یہ مجموعۂ اربعین عوام وخواص میں قبولیت کا حامل ہے انہی خصائص کی بناپر اہل علم نے اس کی متعدد شروحات، حواشی اور تراجم کیے ہیں ۔عربی زبان میں اربعین نووی کی شروحات کی ایک طویل فہرست ہے ۔ اردوزبان میں بھی اس کے کئی تراجم وتشریحات پاک وہند میں شائع ہوچکی ہیں زیر تبصرہ کتاب ’’شرح اربعین نووی‘‘ مولانا حکیم عبدالمجید سوہدروی ﷫ کی ہے۔انہوں نے کتبِ احادیث کا ترجمہ کرنے کا آغاز اربعین نووی سے ہی کیا اور ساتھ ہی بڑی آسان ، معاشرتی اوراخلاقی پہلوؤں پر مشتمل اور بہت سے نکات کی حامل شرح لکھی۔ جو پہلی بار 1955ء میں شائع ہوئی۔اس کےبعد اب جناب مولانا محمد نعمان فاروقی صاحب (مدیر مسلم پبلی کیشنز )نےاسے بڑی عمدہ طباعت سے آراستہ کیا ہے۔اپنی افادیت کےباعث یہ کتاب اس قابل ہے کہ اسے خواتین کےمدارس میں عمومی طور پر اور بچوں کے مدارس کی ابتدائی کلاسوں میں اور دینی سکولوں کےنصاب میں شامل کیا جائے ۔جن احباب نےبھی کتاب کوطباعت کےلیےتیار کرنےمیں حصہ لیا ہے اللہ تعالیٰ ان کی کاوشوں کو قبول فرمائے (آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض ناشر 9
پیش لفظ 11
سیرت امام نووی  13
نیت اور ارادے کی اہمیت 15
ایمان ، اسلام اور احسان کیا ہیں 17
ارکان اسلام 22
انسان کی ولادت اور اس کے بعد سعادت یا شقاوت 24
دین میں نئے امور 27
حلال و حرام اور ان کے درمیان مشتبہ معاملات 29
دین خیر خواہی کا نام ہے 32
جہاد و قتال کا ایک مقصد 34
بال کی کھال اتارنے والے سوالوں سے اجتناب 36
حرام کے استعمال سے دعائیں قبول نہیں ہوتیں 38
مشکوک معاملات سے کنارہ کشی 40
اسلام کا حسن 41
دوسرے کے لیے وہی کچھ پسند کریں جو اپنے لیے کرتے ہیں 42
قتل مسلم کی تین وجوہات 44
اللہ اور آخرت پر ایمان کے چند تقاضے 46
غصہ نہ کیا کرو 48
انسان تو کیا حیوانوں کے ساتھ بھی احسان 49
اللہ تعالی کا ڈر اور لوگوں سے اچھا برتاؤ 51
نصیحت نبوی کے گراں مایہ پہلو 53
شرم و حیا کی اہمیت 57
استقامت 59
نماز ، روزے کا اہتمام اور حلال و حرام کی تمیز 61
صفائی کی اہمیت اور کلمات کی فضیلت 63
جامع ترین حدیث قدسی 66
نیکی میں مقابلہ 69
صدقے کے مفہوم کی وسعت 72
نیکی اور برائی کی تعریف 74
نبی کریم ﷺ کا ایک وعظ 76
جہنم سے نجات اور جنت میں داخلہ مگر کیسے 79
احکام و حدود کی پاسداری 82
اللہ کا محبوب اور لوگوں کا پیارا بننے کے لیے 84
نقصان نہ اپنا نہ دوسروں کا 86
دلیل کے بغیر دعوے بے سود ہیں 87
برائی سے روکنے کے تین مراتب 88
مسلم معاشرے کے چند ضابطے 90
درد دل اور جذبہ حصول علم 93
اعمال نامے میں نیکی اور برائی لکھنے کا ضابطہ 96
قرب الہٰی کی جستجو 98
بھول چوک اور مجبوری قابل گرفت نہیں 100
جگہ جی لگانے کی دنیا نہیں ہے 101

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
3 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam پاکستان زبان فہم قرآن ، قواعد و لغات قرآن

شرح تیسیر القرآن

شرح تیسیر القرآن

 

مصنف : ڈاکٹر طارق ہمایوں شیخ

 

صفحات: 482

 

قرآن مجید کا فہم حاصل کرکے اس پر عمل کرنا ہر مسلمان پر فرض ہے۔کیونکہ اس میں زندگی بسر کرنے کے راہنماء اصول وضوابط  اور تزکیہ نفس کے ذرائع بیان کءے گءے ہیں۔ یہ راہنما اصول  وضوابط  قرآن مجید کے ترجمہ سے اس وقت تک حاصل نہیں ہوسکتے،جب تک عربی زبان کے ابتدائی قواعد سیکھ کر براہ راست قرآن مجید کا مفہوم سمجھنے کی کوشش نہ کی جائے۔زیر نظر کتاب ’’ شرح تیسیر القرآن‘‘ پروفیسر عطاء الرحمٰن ثاقب ؒ کی قرآنی /عربی گرائمر ’’ تیسیرالقرآن ‘‘ کے لیکچرز سے ماخوذ  ہے۔ جس کو فہم قرآن انسٹیٹیوٹ لاہور والوں نے شائع کیا ہے۔پروفیسر صاحب وہ عظیم شخصیت  تھے جنہوں نے پاکستان میں1995  میں فہم قرآن کورس کا بلا معاوضہ  آغاز کیا اور فہم قرآن طلباء کےلیے   ایک ایسی بے مثال اور مختصر آسان قرآنی/ عربی گرائمر پر مشتمل کتاب 1996 میں  ’’ تیسیر القرآن ‘‘ کے نام سے تالیف کی جس سے  مدارس اور قرآن کے دیگر طلباء ہزاروں کی تعداد میں استفادہ کرکے اپنی زندگیوں کو قرآن وسنت کے مطابق  بنا رہے ہیں۔ پروفیسر صاحب کی کتاب ’’ تیسیرالقرآن‘‘ کے  توضیح طلب مقامات کو  مزید واضح کرنے کے ساتھ، اسی کتاب کے اسباق کی ترتیب بحال رکھتے ہوئے  محترم ڈاکٹر طارق ہمایوں شیخ نے  از سر نو اس کتاب کو ’’ شرح تیسرالقرآن ‘‘ کے نام سے پیش کیا ہے۔جس میں ڈاکٹر صاحب نے قواعد عربیہ کی وضاحت کرتے ہوئے  نہایت سادہ انداز بیان اختیار کیا ہے۔کتاب میں تمام امثلہ قرآن وحدیث سے دی گئی ہیں اور ہر سبق کے آخر میں تفصیل سے مشقیں اور ان کا حل بھی دیا گیا ہے۔ اور فہم قرآن کورس کو آسان تر بنانے کی کوشش کی گئی ہے تاکہ کم پڑھے لکھے حضرات بھی قرآن کا فہم حاصل کرکے اپنی زندگیوں کو قرآن وسنت کے مطابق ڈھال سکیں۔اللہ تعالیٰ تمام مسلمانوں کو قرآن کا فہم کرنے کرکے اس پر عمل کرنے کی توفیق دے۔ آمین
 

عناوین صفحہ نمبر
سبق نمبر 1 لفظ ، کلمہ اور ان کی اقسام 1
سبق نمبر 2 اسم کے متعلق معلومات نمبر 1 جنس 9
سبق نمبر 3 اسم کے متعلق معلومات نمبر 2 عدد 15
سبق نمبر 4 اسم کے متعلق معلومات نمبر 3 وسعت 25
سبق نمبر 5 اسم کے متعلق معلومات نمبر 4 اعراب 34
سبق نمبر 6 مرکبات 42
سبق نمبر 6۔1 مرکب توصیفی 45
سبق نمبر 7 مرکب اضافی 52
سبق نمبر 8 مرکب اشاری، مرکب جاری 61
سبق نمبر 9 مرکب تام 68
سبق نمبر 10 ضمائر 80
سبق نمبر 11 اسم کو حالت نصب میں لے جانےوالے حروف 92
سبق نمبر 12 معرب ، ۔مبنی ۔ غیر منصرف 100
سبق نمبر 13 فعل او رجملہ فعلیہ کی ’’بناوٹ‘‘ 117
سبق نمبر 14 فعل لازم اور فعل متعدی 135
سبق نمبر 15 جملہ فعلیہ کو جملہ اسمیہ میں تبدیل کرنا ، فعل مضارع 151
سبق نمبر 16 ثلاثی مجرد کے چھ ابواب 182
سبق نمبر 17 معلوم اور مجہول 192
سبق نمبر 18 ثلاثی مزیدفیہ 228
سبق نمبر 19 خاصیات الابواب 268
سبق نمبر 20 مجہول (ثلاثی مزیدفیہ) 275
سبق نمبر 21 فعل امر ۔ فعل نہی 282
سبق نمبر 22 فعل مضارع کی اعرابی حالتیں 307
سبق نمبر 23 اسمائے مشتقہ 339
سبق نمبر 24 منصوبات 357
سبق نمبر 25 تعلیلات 370
سبق نمبر 26 تخفیف ثقل + مطابقت 389
سبق نمبر 27 معتل افعال سےفعل امر۔ فعل نہی 403
سبق نمبر 28 چند استثنائی صورتیں 417
سبق نمبر 29 ادغام ومہموز 429

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
12.6 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam اسلام بدعت سنت عقیدہ و منہج علماء

صحیح اسلامی عقائد شرح العقیدۃ الواسطیہ کا اردو ترجمہ

صحیح اسلامی عقائد شرح العقیدۃ الواسطیہ کا اردو ترجمہ

 

مصنف : امام ابن تیمیہ

 

صفحات: 208

 

عقیدے کی بنیاد توحید باری تعالیٰ ہے اور اسی دعوت توحید کے لیے اللہ تعالیٰ نے ہر دور میں انبیاء کو مبعوث کیا حتی کہ ختم المرسلین محمدﷺ کی بعثت ہوئی ۔عقیدہ توحید کی تعلیم وتفہیم کے لیے   جہاں نبی کریم ﷺ او رآپ کے صحابہ کرا م﷢ نے بے شمار قربانیاں دیں اور تکالیف کو برداشت کیا وہاں علماء اسلام نےبھی دن رات اپنی تحریروں اور تقریروں میں اس کی اہمیت کو خوب واضح کیا ۔گزشتہ صدیوں میں عقیدۂ توحید کو واضح کرنے کے لیے بہت سی جید کتب ورسائل تحریر کیے گئے ہیں شیخ الاسلام امام ابن تیمیہ ﷫ کی کتاب ’’عقیدہ واسطیہ‘‘بھی اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے   امام ابن تیمیہ﷫ کی اس کتاب کے مفہوم ومطلب کو واضح کرنے کے لیے الشیخ محمد خلیل ہراس،الشیخ صالح الفوزان، الشیخ صالح العثیمین کی شروح قابل ذکر ہیں ۔ الشیخ خلیل ہراس کی شرح العقیدۃ الواسطیۃ پاک و ہند کےاکثر مدارس وجامعات کے نصاب میں شامل ہے ۔ اس کتاب میں   عقیدۂ سلف کو قرآن وصحیح احادیث کی روشنی میں واضح کیاگیا ہے ساتھ ہی ساتھ باطل فرقوں کے اعتقادات کا دلائل کی روشنی میں رد بھی کیاگیا ہے۔ زیر تبصرہ کتاب ’’ صحیح اسلامی عقائد اردو ترجمہ شرح العقیدۃ الواسطیۃ‘‘ فضیلۃ الشیخ خلیل ہراس کی تالیف کردہ شرح عقیدہ واسطیہ کا   اردو ترجمہ ہے ۔یہ ترجمہ انڈیا کے ایک عالم مولوی جاوید عمری   کی کاوش ہے ۔شیخ خلیل ہراس کی یہ شرح عقیدہ سے متعلق تقریباً تمام ہی پہلوؤں کو محیط ومتوسط حجم کی ایک جامع شرح ہے اس شرح کا یہ اردو ترجمہ اردو داں طبقہ بالخصوص مدارس کے اساتذہ وطلباء کے لیے بیش قیمت تحفہ ہے ۔ اللہ تعالیٰ مترجم وناشرین کی اس کاوش کوقبول فرمائے اور اسے   قارئین کے لیے نفع بخش بنائے (آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض ناشر 3
پیش لفظ 5
تسمیہ 9
حمد کی تحقیق 13
حمد ومدح کےمابین فرق 14
رسول 15
رسول ونبی کےمابین فرق 15
ھدی کامفہوم 15
کلمہ توحید کامفہوم 15
عبادات 19
فرقہ ناجیہ 21
سنت اورجماعت کامعنی 24
مفہوم صلاۃ کی تعیین 21
چھ ایمانیاتی امور :ایمان باللہ 24
ذات باری تعالی اوراسکےصفات کےتعلق اہل سنت کاموقف 29
تحریف وتعطیل اوردونوں کےمابین فرق 30
الحاد کامفہوم 32
اللہ کی ذات کواس کو مخلوق پر قیاس کرنا 35
قیاس تمثیل 35
قیاس شمول 36
قیاس اولی 36
صفات کے باب میں وارنصوص کی حیثیت 37
باب صفات میں نفی واثبات 40
صراط مستقیم 43
سورہ اخلاص 44
آیۃ الکرسی 47
اللہ تعالی کی چار صفات الاول والاخر وظاہر والباطن 52
صفت علم اور بعض صفات 54
اللہ تعالی کے صفت علم کےساتھ متصف ہونےپر عقلی دلائل 57
صفت سمع وبصرہ کااثبات 60
مشیت دااردہ کی توضیح ارادہ کونیہ داردہ شرعیہ 62
اللہ تعالی کی اپنے بندوں سےمحبت کابیان 65
اللہ تعالی کاصفت رحمت سےمتصف ہونا 70
صفت رضاغضب 73
صفت مجی کااثبات اورمنکرین کارد 76
اثبات وجہ اورمنکرین کارد 78
اثبات صفت عین 83
اثبات صفت سمع وبصرہ 85
اللہ تعالی کی طرف مکروکید کی نسبت 88
اللہ تعالی کی چند صفات عفوقدرت رحمت ومغفرت اورعزت وغیرہ کااثبات 90
بعض سلبی وتزیہی صفات کابیان 93
تعددالہ کاابطال 98
اللہ تعالی کے علووبلند ہونےکابیان 107
اللہ تعالی کی معیت کی نوعیت کابیان ۔معیت عامہ معیت خاصہ 110
اللہ تعالی کی صفت کلام کےسلسلے میں اہل سنت کاموقف 113
قرآن کلام الہی ہےجوکہ اللہ کی صفت وغیر مخلوق ہے 117
رویت بار ی تعالی کابیان اورمنکرین کارد 120
آیات صفات کےسلسلے میں عام مباحث 124
سنت نبوی سے اسماء وصفات کااثبات 127
سنت کی تعریف اوراس کاحکم 128
سماءدنیاپر باری تعالی کےنزول فرمانے کابیان 130
صفت فرح (خوش ہونا)کابیان 132
صفت مخک (ہنسنا )کابیان 134
صفت عجیب 136
اللہ تعالی کےلئے رجل وقدم کاثبات 138
اثبات قول نداوکلام 139
صفت علوکےبیان 140
صفت معیت کابیان 143
بعض اسماء حسنیٰ 145
اللہ تعالی کی اپنے بندوں سےقربت 146
رویت باری تعالی 147
سنت سےثابت صفات کےسلسلے میں اہل سنت کاموقف 149
صفات کےباب میں اہل سنت کامتفق علیہ عقیدہ 151
بندوں کی جانب سےصادر ہونے والے افعال صحیح موقف 153
جزاوسز 155
اسماء ایمان ودین 157
صحابہ کرام کےمتعلق اہل سنت ودیگر فرق کےعقائد 159
اللہ تعالی کےاستواعلی العرش پر ایمان 161
معیت الہی اسکےعلو کےغیر منافی ہے 163
قرآن مجید کےمتعلق اہل سنت کاموقف اوردیگر فرق کےمواقف 164
رویت عامہ 166
ایمان بالاآخرۃ 167
قیامت کبری کابیان 169
کفار کےاعمال 172
حوض کوثر کابیان 173
پل صراط کابیان 174
نبی اکرم ﷺ کےچندخصائص 174
شفاعت کابیان اورمنکرین کارد 175
تقدیرپر ایمان رکھنے کابیان اوراس کےدرجات 179
تقدیر کےمنکرین 185
ایمان کےباب میں اہل سنت کاموقف 187
فضائل صحابہ اوران کےمراتب 191
اہل بیت 195
ازواج مطہرات 196
اہل سنت والجماعت کاصحابہ کی شان میں اہل بدعت کےاقوال سےاظہار براءت 197
مشاجرات صحابہ اوراہل سنت والجماعت 198
کرامات اولیاء کےباب میں اہل سنت کاعقیدہ 200
کرامات کی مصلحت اوران کی حکمتیں 200
منہج اہل سنت والجماعت 202
اہل سنت والجماعت کے اوصاف واخلاق 203

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2
4.7 MB ڈاؤن لوڈ سائز

Categories
Islam اسلام اہل بیت زبان سلفی سنت عقیدہ و منہج علماء وسیلہ

صحیح اسلامی عقیدہ حصہ 6

صحیح اسلامی عقیدہ حصہ 6

 

مصنف : مختلف اہل علم

 

صفحات: 143

 

اسلام  کی  فلک  بوس  عمارت  عقیدہ  کی  اسا س پر قائم ہے  ۔ اگر  اس بنیاد میں  ضعف یا  کجی  پیدا ہو جائے تو دین کی عظیم عمارت  کا وجود  خطرے میں پڑ جاتا  ہے۔ عقائد کی تصحیح اخروی فوزو فلاح کے لیے اولین شرط ہے۔ یہی وجہ ہے کہ اللہ کی طرف سے بھیجی جانے والی برگزیدہ شخصیات سب سے پہلے توحید کا علم بلند کرتے ہوئے نظر آتی ہیں۔  اور  نبی کریم ﷺ نے  بھی مکہ معظمہ میں  تیرا سال کا طویل عرصہ  صرف اصلاح ِعقائدکی جد وجہد میں صرف کیا عقیدہ توحید کی تعلیم وتفہیم کے لیے   جہاں نبی  کریم ﷺ او رآپ  کے صحابہ کرا م﷢ نے بے شمار قربانیاں دیں اور تکالیف کو برداشت کیا  وہاں علماء اسلام نےبھی دن رات اپنی  تحریروں اور تقریروں میں اس کی اہمیت کو  خوب واضح کیا ۔ عقائد کے باب میں اب تک بہت سی کتب ہر زبان میں شائع ہو چکی ہیں اردو زبان میں بھی اس موضوع پر قابل قدر تصانیف اور تراجم سامنے آئے ہیں اور ہنوز یہ سلسلہ جاری  ہے زیر نظر کتاب ’’ صحیح اسلامی عقیدہ‘‘ مدینہ یونیورسٹی  اور جامعۃالامام  محمد بن سعود ،الریاض کے  اساتذہ  کی ٹیم کی   تیار کردہ کتاب کا اردو ترجمہ ہے  جوکہ چھ حصوں پر مشتمل ہے ۔ یہ  کتاب جامعہ سلفیہ ،بنارس  اور ہندوستان کے کئی سلفی مدارس میں شامل نصاب ہے۔یہ کتاب اسلامی عقیدہ سیکھنے اور  مسلمانوں کےحالات کی اصلاح کے لیے بہترین کتاب ہے ۔مصنفین نے اس کتاب میں شامل تمام موضوعات کو  عمدہ اور ایسے سادہ عبارت  واسلوب میں بیان کیا ہے کہ جن سے عقائد کے مسئلہ میں پڑھنے والے کو پوری تشفی حاصل ہوجاتی ہے ۔ صحیح عقیدہ کی تعلیم واشاعت کے سلسلہ میں  مصنفین کےاخلاص کا پتہ اس بات  سے بھی چلتا ہے کہ کتاب کی تیاری  کے بعد انہوں نے اسےبراعظم افریقہ کے بعض مدارس اور وہاں منعقد ہونے والے تدریبی دوروں میں پڑھانے کاانتطام کراکر اس بات کا اطمینان حاصل کیا  ہےکہ کتاب اپنے مقصد میں کامیاب ہے۔اللہ  تعالیٰ اس کتاب کے مصنفین ،مترجم وناشرین  کی اس عمدہ کاوش کوقبول فرمائے ۔(آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
1۔توسل 3
اس کے شرعی معنی 3
قرآن میں وسیلہ کے معنی 3
توسل کے اقسام 6
توسل شرعی 6
اعمال صالحہ کے ذریعہ اللہ کی طرف توسل 7
صالح مسلمان کی دعا کے ذریعہ اللہ کی طرف توسل 8
قسم ثانی بدعی توسل 9
توسل کے متعلق شبہات اور ان کا رد 9
پہلا شبہ 10
دوسرا شبہ 16
غلو اور اس کی خطرناکی 20
غلو کی تعریف 20
غلو عالم میں شرک کا سبب ہے 20
غلو کی مثالیں 22
غلو کی تحریم کے دلائل 23
غلو کا حکم 23
اسلام میں ولی اور ولایت 25
ولایت کی تعریف 25
ولایت کسی انسان کے ساتھ خاص نہیں 26
اولیاء کے اوصاف 27
انبیاء تمام  اولیاء سے افضل ہیں 28
شفاعت 30
اس کی تعریف 30
اس کے انواع 30
مثبت شفاعت اور اس کےشروط 31
غیر اللہ سے طلب شفاعت کی تحریم 32
مثبت شفاعت کے اقسام 33
شفاعت کبری 33
دوستی اور دشمنی 38
تعریف 38
دین میں ولاء اور براء کا مقام 38
ولاء اور براء توحید کے حقوق میں سے ہیں 39
مداہنت اور موالاۃ سے اس کا تعلق 40
مدارات اور اس کا حکم اور ولاء و براء کا اس کا اثر 41
ولاء اور براء کا نمونہ 43
نافرمانوں اور بدعتیوں سے موالاۃ کا حکم 44
تکفیر کے شروط و ضوابط 47
تکفیر کی خطرناکی 47
تکفیر سے ڈرانے کے متعلق اقوال سلف 49
تکفیر کے ضوابط 50
تکفیر کے شروط اور موانع 52
تکفیر کے شروط 52
حکم تکفیر کے موانع 52
گناہ کبیرہ اور اس کے ضوابط 56
کبیرہ کی تعریف 56
صغیرہ کی تعریف 57
کبائر و صغائر کی تقسیم کے دلائل 57
اہل سنت کے دلائل کہ مرتکب کبیرہ کافر نہیں ہے ہے 59
بدعت اور دین پر اس کا خطرہ 65
بدعت کی تعریف 65
بدعت کا خطرہ 65
بدعت کے اسباب 69
بدعت کا حکم اور اس کے انواع 69
اہل سنت والجماعت کے خصائص 72
اہل سنت کے نمایاں خصائص 73
اسلام میں عقل کا مقام 79
عقل اللہ کی نعمت ہے 79
عقل کے متعلق لوگوں کے موقف 80
عقل کے متعلق سلف کا مؤقف 81
صرف عقل پر اعتماد سے غیبیات کے انکار کی راہ کھلتی ہے 82
خبر کی صحت ثابت ہو جانے پر عقل کے لیے کوئی گنجائش نہیں 83
وجوب محبت رسول اور اس کے معنی اور اس کی کیفیت 87
وجوب محبت رسول 87
محبت رسول کی حقیقت 89
مسلمانوں کے نزدیک رسول کا مرتبہ 90
صحابہ کے حقوق 94
صحابہ کی تعریف 94
صحابہ کی فضیلت اور حقوق 94
صحابہ کو برا کہنے کا حکم 98
صحابہ کے متعلق اہل سنت کا مذہب 99
خلفاء راشدین کے لیے ہمارا فریضہ 102
خلفاء راشدین کون ہیں ؟ 102
ان کا مرتبہ اور ان کی اتباع کا وجوب 102
خلافت راشدہ کی مدت 103
ان کے درمیان فرق مراتب 103
عشرہ مبشرہ 107
صحابہ میں افضل تر عشرہ مبشرہ بالجنۃ ہیں 107
اہل بیت نبی 110
اہل بیت کون ہیں ؟ 110
اہل بیت کی فضیلت کے دلائل 110
ازواج النبی کا آپ کے اہل بیت میں داخل ہونا 110
اہل بیت سے متعلق وصیت 113
مسلمانوں کے ائمہ اور عام لوگوں کے متعلق مسلمانوں کا فریضہ 116
حاکم کی اطاعت کا حکم 117
تفرق کی خطرناکی 123
تفرق سےر وکنے والے نصوص کتاب وسنت 125
سابقہ امتوں کی ہلاکت کا سبب اختلاف و تفرق ہے 128
کیا اختلاف رحمت ہے ؟ 130
اختلاف و افتراق سے نجات کا راستہ 131

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2

Categories
Islam اسلام اعمال زبان سلفی عقیدہ و منہج علماء نفاق

صحیح اسلامی عقیدہ حصہ 5

صحیح اسلامی عقیدہ حصہ 5

 

مصنف : مختلف اہل علم

 

صفحات: 101

 

اسلام  کی  فلک  بوس  عمارت  عقیدہ  کی  اسا س پر قائم ہے  ۔ اگر  اس بنیاد میں  ضعف یا  کجی  پیدا ہو جائے تو دین کی عظیم عمارت  کا وجود  خطرے میں پڑ جاتا  ہے۔ عقائد کی تصحیح اخروی فوزو فلاح کے لیے اولین شرط ہے۔ یہی وجہ ہے کہ اللہ کی طرف سے بھیجی جانے والی برگزیدہ شخصیات سب سے پہلے توحید کا علم بلند کرتے ہوئے نظر آتی ہیں۔  اور  نبی کریم ﷺ نے  بھی مکہ معظمہ میں  تیرا سال کا طویل عرصہ  صرف اصلاح ِعقائدکی جد وجہد میں صرف کیا عقیدہ توحید کی تعلیم وتفہیم کے لیے   جہاں نبی  کریم ﷺ او رآپ  کے صحابہ کرا م﷢ نے بے شمار قربانیاں دیں اور تکالیف کو برداشت کیا  وہاں علماء اسلام نےبھی دن رات اپنی  تحریروں اور تقریروں میں اس کی اہمیت کو  خوب واضح کیا ۔ عقائد کے باب میں اب تک بہت سی کتب ہر زبان میں شائع ہو چکی ہیں اردو زبان میں بھی اس موضوع پر قابل قدر تصانیف اور تراجم سامنے آئے ہیں اور ہنوز یہ سلسلہ جاری  ہے زیر نظر کتاب ’’ صحیح اسلامی عقیدہ‘‘ مدینہ یونیورسٹی  اور جامعۃالامام  محمد بن سعود ،الریاض کے  اساتذہ  کی ٹیم کی   تیار کردہ کتاب کا اردو ترجمہ ہے  جوکہ چھ حصوں پر مشتمل ہے ۔ یہ  کتاب جامعہ سلفیہ ،بنارس  اور ہندوستان کے کئی سلفی مدارس میں شامل نصاب ہے۔یہ کتاب اسلامی عقیدہ سیکھنے اور  مسلمانوں کےحالات کی اصلاح کے لیے بہترین کتاب ہے ۔مصنفین نے اس کتاب میں شامل تمام موضوعات کو  عمدہ اور ایسے سادہ عبارت  واسلوب میں بیان کیا ہے کہ جن سے عقائد کے مسئلہ میں پڑھنے والے کو پوری تشفی حاصل ہوجاتی ہے ۔ صحیح عقیدہ کی تعلیم واشاعت کے سلسلہ میں  مصنفین کےاخلاص کا پتہ اس بات  سے بھی چلتا ہے کہ کتاب کی تیاری  کے بعد انہوں نے اسےبراعظم افریقہ کے بعض مدارس اور وہاں منعقد ہونے والے تدریبی دوروں میں پڑھانے کاانتطام کراکر اس بات کا اطمینان حاصل کیا  ہےکہ کتاب اپنے مقصد میں کامیاب ہے۔اللہ  تعالیٰ اس کتاب کے مصنفین ،مترجم وناشرین  کی اس عمدہ کاوش کوقبول فرمائے ۔(آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
کفر 3
اس کی تعریف 4
اس کے انواع 4
کفر اکبر کے اقسام 4
1۔ کفر تکذیب 4
2۔تصدیق کے ساتھ کفر انکار و تکبر 5
3۔ کفر شک 5
4۔کفر اعراض 6
5۔کفر نفاق 7
کفر اصغر 8
ایسے الفاظ وافعال کی مثالین جو کفر ہیں 11
الفاظ کفر کی مثالیں 12
افعال کفر کی مثالیں 13
کفر اکبر اور کفر اصغر میں فرق 14
ارتداد  اس کے احکام اور اقسام 16
ارتداد کے معنی 16
ارتداد کے اقسام 17
ارتداد پر مرتب ہونےوالے احکام 18
نفاق 22
نفاق کی تعریف 22
نفاق کے انواع 23
1۔ نفاق اعتقادی اور اس کے انواع 23
2۔ نفاق عملی 24
3۔ نفاق اعتقادی و عملی کی مثالیں 24
4۔ نفاق اکبر اور نفاق اصغر میں فرق 25
5۔فرد اور معاشرہ میں نفاق کا اثر 26
شرک 29
اس کی تعریف 29
ہم شرک کو کیوں پڑھتے ہیں ؟ 29
شرک کے واقع ہونے کا سبب 30
کیا ا س امت میں بھی شرک واقع ہوتا ہے ؟ 31
شرک کے انواع 32
شرک اکبر 32
اس کے معنی 32
شرک اکبر کے اقسام 33
1۔شرک دعاء 33
2۔ شرک نیت و ارادہ و قصد 35
3۔ شرک اطاعت 36
شرک اصغر : اس کے اقسام 38
1۔ شرک ظاہر 38
2۔ شرک خفی 40
شرک اکبر اور شرک اصغر میں فرق 42
فرد اور معاشرہ پر شرک کے برے اثرات 43
کچھ شرکیہ اعمال کی صورتوں پر کلام جوبعض اسلامی معاشروں میں موجود ہیں 46
تمہید 47
جھاڑ پھونک (رقی) 48
رقیۃ کے معنی 48
اس کے انواع اور ہر نوع کا حکم 48
1۔مشروع دم 48
شرعی رقیہ کے شروط 49
اس کی کیفیت 49
2۔ ممنوع جھاڑ پھونک 50
تعویذ گنڈے ( تمائم ) 52
اس کے معنی 52
اس کے انواع او رہر نوع کا حکم 52
نوع اول 52
نوع ثانی 53
وہ انواع جن کا باندھنا اسلام نے باطل ٹھہرایا ہے 54
شرکیہ جھاڑ پھونک اورتعویذ گنڈے سے متعلق مسلمان کا مؤقف 55
رفع ودفع بلاء کے لیے کڑے اور دھاگے پہننا 57
الحلقۃ اور الخیط کے معنی 57
کڑے اور دھاگے پہننے کاحکم 57
غیر اللہ سے دل کے متعلق کرنے کے آثار 57
نافع اور ضار صرف اللہ ہے 58
شجر و حجر وغیرہ سے تبرک 60
تبرک کے معنی 60
تبرک کا حکم 60
نبی ﷺکے آثار سے صحابہ کے تبرک کی حقیقت 60
بدشگونی( الطیرۃ) 63
الطیرۃ کے معنی 63
اس کا حکم 64
توکل بدشگونی(طیرۃ) کو ختم کر دیتا ہے 64
بدشگونی کا کفارہ 65
بدشگونی کی تحریم کے اسباب 66
علم غیب کا دعوی 68
غیب سے مراد 68
علم غیب کے دعویٰ کا حکم 69
دعویٰ علم غیب کی صورتیں 69
جادو 71
جادو کی تعریف 71
جادو کا حکم 72
جادو کا کشف و ازالہ ( النشرۃ ) 73
کہانت و عرافت 74
کہانت و عرافت کی تعریف 74
کہانت و عرافت کا حکم 75
معاشرہ پر کاہنوں ، جادوگروں اور عرافوں کے خطرناک اثرات 75
جادو ، کہانت اور عرافت کا شرک سے تعلق 76
علم نجوم 78
علم نجوم کی تعریف 78
نجومیوں اوران کے پاس جانے والوں کاحکم 78
شمس و قمر کے منازل سیکھنے کا حکم 79
مقابر و مزارات کی تعظیم اوران کا تقرب 81
الاضرحۃ  اور المزارات کے معنی 81
قبروں اور مزارات کی تعظیم اور ان سے تقرب کا حکم 81
ان بدعات کے بعض خطرناک اثرات 84
قبروں کی زیارت 86
زیارت قبور کا حکم 86
کیا زیارت قبور کا استحباب مردوں کے لیے خاص ہے ؟ 87
زیارت قبور کی مشروعیت کی علت 88
زیارت قبور کی دعا 88
زیارت قبور کے لیے سفر کا حکم 89
قبروں کو بلند اور پختہ بنانے وغیرہ کا حکم 90

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2

Categories
Islam اسلام توحید ربوبیت زبان سلفی سنت عقیدہ و منہج علماء

صحیح اسلامی عقیدہ حصہ 4

صحیح اسلامی عقیدہ حصہ 4

 

مصنف : مختلف اہل علم

 

صفحات: 165

اسلام  کی  فلک  بوس  عمارت  عقیدہ  کی  اسا س پر قائم ہے  ۔ اگر  اس بنیاد میں  ضعف یا  کجی  پیدا ہو جائے تو دین کی عظیم عمارت  کا وجود  خطرے میں پڑ جاتا  ہے۔ عقائد کی تصحیح اخروی فوزو فلاح کے لیے اولین شرط ہے۔ یہی وجہ ہے کہ اللہ کی طرف سے بھیجی جانے والی برگزیدہ شخصیات سب سے پہلے توحید کا علم بلند کرتے ہوئے نظر آتی ہیں۔  اور  نبی کریم ﷺ نے  بھی مکہ معظمہ میں  تیرا سال کا طویل عرصہ  صرف اصلاح ِعقائدکی جد وجہد میں صرف کیا عقیدہ توحید کی تعلیم وتفہیم کے لیے   جہاں نبی  کریم ﷺ او رآپ  کے صحابہ کرا م﷢ نے بے شمار قربانیاں دیں اور تکالیف کو برداشت کیا  وہاں علماء اسلام نےبھی دن رات اپنی  تحریروں اور تقریروں میں اس کی اہمیت کو  خوب واضح کیا ۔ عقائد کے باب میں اب تک بہت سی کتب ہر زبان میں شائع ہو چکی ہیں اردو زبان میں بھی اس موضوع پر قابل قدر تصانیف اور تراجم سامنے آئے ہیں اور ہنوز یہ سلسلہ جاری  ہے زیر نظر کتاب ’’ صحیح اسلامی عقیدہ‘‘ مدینہ یونیورسٹی  اور جامعۃالامام  محمد بن سعود ،الریاض کے  اساتذہ  کی ٹیم کی   تیار کردہ کتاب کا اردو ترجمہ ہے  جوکہ چھ حصوں پر مشتمل ہے ۔ یہ  کتاب جامعہ سلفیہ ،بنارس  اور ہندوستان کے کئی سلفی مدارس میں شامل نصاب ہے۔یہ کتاب اسلامی عقیدہ سیکھنے اور  مسلمانوں کےحالات کی اصلاح کے لیے بہترین کتاب ہے ۔مصنفین نے اس کتاب میں شامل تمام موضوعات کو  عمدہ اور ایسے سادہ عبارت  واسلوب میں بیان کیا ہے کہ جن سے عقائد کے مسئلہ میں پڑھنے والے کو پوری تشفی حاصل ہوجاتی ہے ۔ صحیح عقیدہ کی تعلیم واشاعت کے سلسلہ میں  مصنفین کےاخلاص کا پتہ اس بات  سے بھی چلتا ہے کہ کتاب کی تیاری  کے بعد انہوں نے اسےبراعظم افریقہ کے بعض مدارس اور وہاں منعقد ہونے والے تدریبی دوروں میں پڑھانے کاانتطام کراکر اس بات کا اطمینان حاصل کیا  ہےکہ کتاب اپنے مقصد میں کامیاب ہے۔اللہ  تعالیٰ اس کتاب کے مصنفین ،مترجم وناشرین  کی اس عمدہ کاوش کوقبول فرمائے ۔(آمین)

 

عناوین صفحہ نمبر
عرض ناشر 3
مقدمہ 7
عام مقاصد 9
ہدایات 10
تمہید 11
توحید اورعقیدہ کی تعریف 11
عقیدہ صحیحہ کی اہمیت اور امتوں کو ان کی ضرورت 11
انسانیت کی اصل توحید ہے 13
اہل سنت والجماعت کے نزدیک دین کا مصدر 16
عقائد میں احادیث آحاد کو دلیل بنانا 17
عقیدہ صحیحہ سے انحراف کے اسباب 18
عقیدہ صحیحہ کے دفاع میں مصلحین کی مساعی کانمونہ 19
ایمان اور اس کا مسمی 23
ایمان کے ارکان 25
رکن اول اللہ پر ایمان 29
1۔توحید ربوبیت 29
1۔اس کی تعریف 29
2۔اللہ نے لوگوں کوتوحید پر پیدا کیا 30
اللہ کےوجود کے منکر ملحدین کا رد 31
مشرکین کا توحید ربوبیت کا اقرار انہیں اسلام میں داخل نہیں کر سکتا 32
2۔توحید الوہیت 35
اس کی تعریف 35
انسان اور جن کی تخلیق کی حکمت 35
توحید ربوبیت کی اہمیت 35
کلمہ توحید کے معنی اور اس کے مشروط 37
اس کے دو ارکان 37
اس کے شروط 38
لا الا الہ اللہ کی فضیلت 41
3۔توحید اسماء و صفات 45
نصوص صفات کے متعلق فریضہ 46
اللہ تعالیٰ کی بعض صفات کا ذکر 49
اللہ تعالیٰ کے اسماء حسنیٰ 51
اللہ تعالیٰ کے اسماء و صفات پر ایمان کا اثر 53
عبادت اوراس کی تعریف 56
عمل کی قبولیت کےشروط 57
ایک اللہ کی عبادت کا وجود 58
عبادت کے بعض انواع 60
مخلوق سے استغاثہ کب جائز ہے ؟ 66
خوف، خشیت اور ہسبت 68
خوف کے اقسام 69
امید اور رغبت 71
خوف اورامید کو جمع کرنا 73
محبت 75
محبت کے اقسام 75
محبت مشترک کے تین انواع ہیں 75
محبت خاص 76
بندہ کے اپنے رب سے محبت کی علامت 76
اللہ کی محبت حاصل کرنے کے اسباب 78
توکل 78
غیر اللہ پرتوکل کے اقسام 80
اسباب اختیار کرنا توکل کے منافی نہیں 80
استعاذہ 82
استعانت 83
ذبح 84
نذر 84
انابت 86
خشوع وخضوع 87
رکن دوم ملائکہ پر ایمان 89
ملائکہ سے مراد 89
ملائکہ پر ایمان 90
ملائکہ کے نام 90
ملائکہ کے صفات 91
ملائکہ پر ایمان کے فوائد 93
رکن سوم اللہ کی نازل کی ہوئی کتابوں پر ایمان 95
کتابوں  اور ان پر ایمان سے کیا مراد ہے ؟ 95
کتابوں کی تعداد اور ان کے نام 96
سابقہ کتب کی تحریف 96
سابقہ کتب کی تحریف کے دلائل 97
سابقہ کتب سے متعلق مسلمانوں کا مؤقف 98
قرآن پر ایمان 99
کتابوں پر ایمان کے فوائد 100
رکن چہارم رسولوں پر ایمان 102
رسول کی تعریف 102
رسولوں پر ایمان 102
رسالت انتخاب ہے 103
ان کی تعداد اور ان کے نام 104
رسولوں کی رسالت کا موضوع 105
رسولوں سے متعلق ہمارا فریضہ 105
محمد ﷺپرایمان 108
اس شہادت کا تقاضا 108
آپﷺکے حقوق 108
آپﷺکی رسالت کا عموم 109
ختم نبوت 111
آپﷺکی فضیلت اور آپ کے بعض معجزات 112
رسولوں پر ایمان کے فوائد 113
رکن پنجم آخرت پر ایمان 115
یوم آخر سے کیا مراد ہے ؟ 115
یوم آخر پر ایمان کے معنی 115
منکرین بعث کا رد 116
یوم آخر پر ایمان کن باتوں کو شامل ہے 120
علامات قیامت 120
علامات صغری 120
علامات کبری 123
قبر کی آزمائش 125
قبر کی نعمتیں اوراس کا عذاب 126
مومن کے لیے عذاب قبر کےا سباب 129
بعث و حشر 131
محشر میں لوگوں کے احوال 134
جزا اور حساب 136
حوض 138
میزان 139
صراط 141
جنت اور جہنم 144
یوم آخر پر ایمان کے فوائد 147
رکن ششم تقدیر پر ایمان 148
تقدیر اور اس پر ایمان سے مراد 148
تقدیر کے مراتب 149
بندے کی مشیت اور اس کا اختیار 150
اسباب اختیار کرنا 153
تقدیر میں بےجا غور و خوض سے ممانعت 153
تقدیر پر ایمان کے فوائد 154
مشق 156
فہرست 157

ڈاؤن لوڈ 1
ڈاؤن لوڈ 2